உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر میں 19فروری سے پہلی بار تین زبانوں میں لینڈ پاس بک کئے جائیں گے جاری

    اس تاریخی فیصلے کے تحت محکمہ مال انیس فروری دوہزار بائیس سے زمین مالکان کو اردو، ہندی اور انگریزی میں سہ زبانی لینڈ پاس بک جاری کرے گا۔

    اس تاریخی فیصلے کے تحت محکمہ مال انیس فروری دوہزار بائیس سے زمین مالکان کو اردو، ہندی اور انگریزی میں سہ زبانی لینڈ پاس بک جاری کرے گا۔

    اس تاریخی فیصلے کے تحت محکمہ مال انیس فروری دوہزار بائیس سے زمین مالکان کو اردو، ہندی اور انگریزی میں سہ زبانی لینڈ پاس بک جاری کرے گا۔

    • Share this:
    عوام کو بہتر طرز نظام فراہم کرنے کے ایک اور اقدام کے طور پر یوٹی انتظامیہ نے زمین مالکان کو سہ زبانی لینڈ پاس بک اجراء کرنے کی ایک بڑی پہل کا آغاز کرنے کا فیصلہ لیا ہے۔ اس تاریخی فیصلے کے تحت محکمہ مال انیس فروری دوہزار بائیس سے زمین مالکان کو اردو، ہندی اور انگریزی میں سہ زبانی لینڈ پاس بک جاری کرے گا۔ اس مہم کا آغازجموں اور سرینگر ضلعے سے کیاجائے گا۔ اس پہل کے ابتداء میں  ضلع سری نگر کی 7 تحصیلیں اور جموں ضلع کی 21 تحصیلیں PRIs، زمینداروں، کسانوں، مالیاتی اداروں اور لائن ڈپارٹمنٹ کے نمائندوں کی شرکت کے ساتھ 28 مقامات پر زمینی پاس بکس تقسیم کئے جائیں گے۔

    اہم بات یہ ہے کہ اس پاس بک میں  زمیندار کے پاس پائی جانے والی زمین اور ریونیو اسٹیٹ میں جمع بندی کے خدوخال پر مشتمل تمام تفصیلات درج رہیں گی۔ تاکہ اسے کریڈٹ کی سہولیات اور اس سے منسلک یا اسے متعلق دیگر معاملات کے لیے استعمال کرنے کے قابل بنایا جا سکے۔ محکمہ مال کی طرف سے تجویز کردہ لینڈ پاس بک ریکارڈ آن لائن ہوگا اور زمیندار کسی پٹواری یا تحصیلدار یا کسی بھی ریونیو آفس کا دورہ کیے بغیر آن لائن اپنا پاس بک تیار کر سکتا ہے۔ شہریوں کی سہولت کے لیے اور بہتر نظام حکومت کی پہل کے تحت زمینی ریکارڈ کی اسکیننگ اور ڈیجیٹائزیشن کا عمل پہلے ہی شروع کیاجاچکاہے۔

    محکمہ نے وضع کردہ قانون کے مطابق لینڈ پاس بک کے آن لائن اجراء کے لیے جموں و کشمیر لینڈ پاس بک رولز 2022 بھی ترتیب دیاہے۔ لینڈ پاس بک ای گورننس کے مطابق ہےاور شہریوں کی سہولت کے لیے سہ زبانی شکل میں جاری کئے جانے والے اس لینڈ پاس بک سے زمین مالکان کو کافی راحت مل سکتی ہے کیونکہ ہر لینڈ پاس بک میں ایک منفرد آئی ڈی اور QR کوڈ ایک اضافی سیکورٹی فیچر کے طور پر شامل کیاگیا ہے۔ کیو آر کوڈ کی مدد سے کوئی بھی ادارہ، فرد یا کوئی ایجنسی لینڈ پاس بک کی اسناد اور صداقت کی تصدیق کر سکتی ہے۔ یہ مختلف فورمز پر شکایات، قانونی چارہ جوئی، تنازعات کے ازالے اور ریفرنس کے لیے ایک سند کے طور پر استعمال کیا جاسکتا ہے۔واضح رہے کہ پانچ اگست دوہزار انیس سے قبل جموں وکشمیر میں اراضی سے متعلق تمام ریکارڈ اردو زبان میں ہی دستیاب ہوتے تھے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: