ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر: لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے زخمی پولیس اہلکاروں کی عیادت کی، ان کی ہمت اور شجاعت کو سراہا

لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے ہسپتال میں زیر علاج زخمی پولیس جوانوں کو یقین دلایا کہ ان کے علاج و معالجہ کی ہر ممکن سہولیت بہم رکھی جائے گی اور اُن کی مثالی ہمت اور شجاعت کو سراہا۔ انہوں نے کہا کہ میں حفاطتی دستوں کی مثالی ہمت اور بہادری کو سلام پیش کرتا ہوں۔

  • Share this:
جموں و کشمیر: لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے زخمی پولیس اہلکاروں کی عیادت کی، ان کی ہمت اور شجاعت کو سراہا
جموں و کشمیر: لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے زخمی پولیس اہلکاروں کی عیادت کی، ان کی ہمت اور شجاعت کو سراہا

جموں: لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے گورنمنٹ میڈیکل کالج جموں کا دورہ کیا اور وہاں جموں و کشمیر پولیس کے زخمی جوانوں کی عیادت کی جو آج نگروٹہ میں جنگجوئوں کے ساتھ ایک تصادم میں زخمی ہوئے۔ لیفٹیننٹ گورنر نے ہسپتال میں زیر علاج زخمی پولیس جوانوں کو یقین دلایا کہ ان کے علاج و معالجہ کی ہر ممکن سہولیت بہم رکھی جائے گی اور اُن کی مثالی ہمت اور شجاعت کو سراہا۔

انہوں نے کہا کہ میں حفاطتی دستوں کی مثالی ہمت اور بہادری کو سلام پیش کرتا ہوں۔ انہوں نے مزید کہا کہ قوم کو ان کے پیشہ وارانہ مہارت اور ملک کی سالمیت کے تحفظ کے عزم پر فخر ہے۔ جموں وکشمیر کے عوام کے لئے پیغام میں لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ حفاظتی عملہ ایک ترقی پسند اور پُرامن مستقبل کی بنیاد رکھنے کے لئے دن رات کوشاں ہے اور کسی بھی بیرونی طاقت ہمارے مشن کو گزند نہیں پہنچا سکتی۔

دریں اثنا لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر راجیو رائے بھٹناگر نے بھی گورنمنٹ میڈیکل کالج جموں کا دورہ کر کے زخمی اہلکاروں سے ملاقات کی۔ دورے کے دوران مشیر بھٹناگر نے میڈیکل آفیسروں سے دونوں جوانوں کی حالت کے بارے میں دریافت کیا اور انہیں بتایا گیا کہ ان دونوں کی صحت مستحکم ہیں۔ مشیر بھٹناگر نے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کو ہدایت دی کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ زخمی بہادر جوانوں کو بہتر طبی نگہداشت کی فراہمی میں کوئی دقیقہ فروگذاشت نہ کریں اور جوانوں کی مستقل نگرانی کی ہدایت دی۔ انہوں نے زخمی اہلکاروں کی بہادری کی تعریف کی اور یقین دلایا کہ انہیں ہر طرح کی مدد فراہم کی جائے گی۔




جموں۔ سری نگر قومی شاہراہ پر نگروٹہ کے بان علاقے میں ٹول پلازا کے پاس صبح 5 بجے سے گولہ باری شروع ہو گئی۔ اس تصادم میں اب تک 4 دہشت گردوں کے مارے جانے کی تصدیق ہوئی ہے۔ تصویر: اے این آئی
جموں۔ سری نگر قومی شاہراہ پر نگروٹہ کے بان علاقے میں ٹول پلازا کے پاس صبح 5 بجے سے گولہ باری شروع ہو گئی۔ اس تصادم میں اب تک 4 دہشت گردوں کے مارے جانے کی تصدیق ہوئی ہے۔ تصویر: اے این آئی

سلامتی دستوں نے مار گرائے جیش محمد کے 4 دہشت گرد 


واضح رہے کہ جموں وکشمیر (Jammu Kashmir) کے نگروٹہ (Nagrota) علاقے میں جمعرات کی صبح دہشت گردوں اور سلامتی دستوں کے درمیان تصادم شروع ہو گیا۔ بتایا گیا کہ تصادم صبح 5 بجے شروع ہوا۔ جموں۔ سری نگر قومی شاہراہ پر نگروٹہ کے بان علاقے میں ٹول پلازا کے پاس صبح 5 بجے سے گولہ باری شروع ہو گئی۔ اس تصادم میں اب تک 4 دہشت گردوں کے مارے جانے کی تصدیق ہوئی ہے۔ جموں کے ضلع پولیس سربراہ ایس ایس پی شری دھر پاٹل نے کہا ' تقریبا 5 بجے کچھ دہشت گردوں نے نگروٹہ علاقے میں بان ٹول پلازا کے پاس سلامتی دستوں پر گولیاں چلائیں۔ وہ ایک گاڑی میں روپوش تھے'۔ حفاظتی اسباب سے پولیس نے نگروٹہ کا قومی شاہراہ بند کر دیا ہے۔ اس کارروائی میں سی آر پی ایف اور ایس او جی شامل ہیں۔ تصادم کے درمیان اودھم پور میں سیکورٹی سخت کر دی گئی ہے۔ ڈی جی پی دلباغ سنگھ نے کہا کہ اس تصادم میں چار دہشت گرد مار گرائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سبھی دہشت گرد جیش محمد سے وابستہ تھے۔






دو گھنٹے تک چلا تصادم

تصادم شروع ہونے کے تقریبا دو گھنٹے بعد چاروں دہشت گردوں کو مار گرایا گیا۔ فی الحال پورے علاقے میں تلاشی کارروائی جاری ہے۔ سی آر پی ایف، جموں وکشمیر پولیس اور ہندستانی فوج کی ٹیمیں جائے حادثہ پر تعینات ہیں۔ جموں کشمیر پولیس کا ایک جوان زخمی ہوا ہے جسے اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ کوٹہ کے اطراف کے پورے علاقے میں ابھی بھی سرچ آپریشن جاری ہے۔





 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 19, 2020 09:42 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading