اپنا ضلع منتخب کریں۔

    محبوبہ مفتی نےہایبرڈملیٹینٹ قراردیئے گئےعمران کی ہلاکت کی مخالفت کی،میڈیا کی خاموشی پر اٹھائے سوال

    محبوبہ مفتی نے پھر ایک بار پولیس کی جانب سے ہایبرڈ ملیٹینٹ قرار دیئے گئے  عارف کی ہلاکت کی مخالفت کی ہے

    محبوبہ مفتی نے پھر ایک بار پولیس کی جانب سے ہایبرڈ ملیٹینٹ قرار دیئے گئے عارف کی ہلاکت کی مخالفت کی ہے

    محبوبہ مفتی نے میڈیا پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ انکی رہائش گاہ کو لے کر ٹیلی ویژن چینلوں پر ڈیبیٹ کئے گئے اور میڈیا نے اسے بڑی خبر کے طور پر پیش کیا۔ لیکن انہیں حیرت اس بات کی ہے کہ شوپیاں میں مارے گئےعمران گنائی نامی 19 سالہ نوجوان کی ہلاکت کو میڈیا نے یکسر نظر انداز کیا اور اس پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir | Anantnag | Srinagar
    • Share this:
    پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی ( پی ڈی پی) کی سربراہ محبوبہ مفتی نے پھر ایک بار پولیس کی جانب سے ہایبرڈ ملیٹینٹ قرار دیئے گئے عمران کی ہلاکت کی مخالفت کی ہے۔ اننت ناگ کے بجبہاڑہ میں اپنے دورے کے دوران محبوبہ مفتی نے انکی رہائش گاہ چھوڑنے کا سرکاری نوٹس کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں کہا کہ انہیں اپنی رہائش گاہ چھوڑنے کی کوئی فکر نہیں ہے اور نا ہی یہ کوئی بڑا مسئلہ ہے۔

    انہوں نے کہا کہ وہ اپنی رہائش گاہ چھوڑنے کےلیے تیار ہے کیونکہ سرکار کو انکی سیکورٹی و دیگر امورات کی کوئی فکر نہیں ہے اور اس میں انہیں کوئی حیرت نہیں ہے۔ تاہم محبوبہ مفتی نے میڈیا پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ انکی رہائش گاہ کو لے کر ٹیلی ویژن چینلوں پر ڈیبیٹ کئے گئے اور میڈیا نے اسے بڑی خبر کے طور پر پیش کیا۔ لیکن انہیں حیرت اس بات کی ہے کہ شوپیاں میں مارے گئے عمران گنائی نامی 19 سالہ نوجوان کی ہلاکت کو میڈیا نے یکسر نظر انداز کیا اور اس پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔

    یہ بھی پڑپھیں

    انہوں نے کہا کہ عمران صرف ایک ملزم تھا اور ابھی اس پر کوئی جرم ثابت نہیں ہوا تھا لیکن جسطرح سےعمران کو ہلاک کیا گیا وہ قابل مزمت ہے۔ واضح رہے کہ عمران کو پولیس نے شوپیاں میں دو غیر مقامی افراد پر گرینڈ پھینکنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا اور اسے ہایبرڈ ملیٹینٹ قرار دیا تھا۔ تاہم عمران کی گرفتاری کے دوسرے دن ہی پولیس نے دعویٰ کیا کہ ایک آپریشن کے دوران عمران دوسرے ملیٹینٹ کی گولی کا شکار بنا۔

    محبوبہ مفتی نے کہا کہ انہیں اپنی رہائش گاہ چھوڑنے کی کوئی فکر نہیں ہے اور وہ رہائش گاہ چھوڑنے کےلیے بالکل تیار نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ انکی رہائش گاہ سے بڑے اور بھی کئ مسائل ہیں جو اس وقت درپیش ہیں۔ محبوبہ مفتی نے اپنی دختر کے ہمراہ بجبہاڑہ کا دورہ کیا۔ اس دوران انہوں نے اپنے والد اور پی ڈی پی کے بانی و سابق وزیر اعلیٰ مفتی محمد سعید کے مقبرے پر حاضری دی اور وہاں پر فاتح خوانی بھی کی۔ محبوبہ مفتی نے مقبرے پر کافی وقت گزارا اور اپنے والد کو خراج عقیدت بھی پیش کیا۔
    Published by:Mirzaghani Baig
    First published: