ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر: جب تک ہمیں واپس نہیں ملےگا اپنا جھنڈا، نہیں پھہرائیں گے ترنگا: محبوبہ مفتی

محبوبہ مفتی نے مودی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ہر فرنٹ پر ناکام ہے اور اپنی ناکامی چھپانے کے لئے جموں وکشمیر اور آرٹکل 370 کا سہورا لیا جاتا ہے۔ انہوں نے کئی موضوع پر اپنی رائے پیش کی ہے۔

  • Share this:
جموں وکشمیر: جب تک ہمیں واپس نہیں ملےگا اپنا جھنڈا، نہیں پھہرائیں گے ترنگا: محبوبہ مفتی
جب تک ہمیں واپس نہیں ملے گا اپنا جھنڈا، نہیں پھہرائیں گے ترنگا: محبوبہ مفتی

سری نگر: تقریباً 14 ماہ کی حراست کے بعد رہا ہوئیں جموں وکشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ اور پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی نے مرکز کی مودی حکومت پر کئی الزامات عائد کئے ہیں۔ ایک پریس کانفرنس ے دوران انہوں نے اپنے ہاتھ میں جموں وکشمیر کا جھنڈا دکھاتے ہوئے کہا کہ میرا جھنڈا یہ ہے، جب یہ جھنڈا واپس آئے گا تب ہم ترنگا بھی پھہرائیں گے، جب تک ہم ہمیں اپنا جھنڈا واپس نہیں ملتا تب تک ہم کوئی جھنڈا نہیں پھہرائیں گے۔ ہمارا جھنڈا ہی ترنگا کے ساتھ ہمارے تعلقات کو قائم کرتا ہے۔


میڈیا سے بات چیت میں جموں وکشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ اقتصادی طور پر بنگلہ دیش سے بھی پچھڑ چکے ہیں۔ چاہے وہ روزگار کا موضوع ہو یا کچھ اور، ہر فرنٹ پر یہ حکومت ناکام ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس حکومت کے پاس کوئی ایسا کام نہیں ہے، جسے دکھا کر وہ ووٹ مانگ سکے۔ یہ لوگ کہتے ہیں کہ اب جموں وکشمیر میں زمین خریدی جاسکےگی، پھرکہتے ہیں کہ مفت ویکسین تقسیم کریں گے۔ آج وزیر اعظم نریندر مودی کو ووٹ کے لئے آرٹیکل 370 پر بات کرنے کی ضرورت پڑتی ہے۔




چین کو لے کر محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ یہ سچ ہے کہ چین نے ہماری 1000 اسکوائر کلو میٹر زمین پرقبضہ کرلیا۔ مجھے لگتا ہے کہ ہم کسی طرح 40 کلو میٹر زمن واپس پانے میں کامیاب رہے۔ آرٹیکل 370 ہٹائے جانے کے بعد جموں وکشمیر پر بین الاقوامی طور پر جتنی چرچا ہوئی، اتنی کبھی نہیں ہوئی۔ واضح رہے کہ محبوبہ مفتی کی رہائی کے بعد جموں وکشمیر کی سبھی سیاسی جماعتوں نے مل کر ایک فرنٹ بنایا ہے۔ محبوبہ مفتی کی رہائی کے بعد نیشنل کانفرنس کے صدر اور سابق مرکزی وزیر فاروق عبداللہ اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے بھی ان سے ملاقات کی تھی۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Oct 23, 2020 05:28 PM IST