உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر: پلوامہ میں دہشت گردوں نے پولیس اہلکار پر حملہ کر دیا

    جموں وکشمیر کے پلوامہ میں مبینہ دہشت گردوں کے حملے میں پولیس اہلکار شدید زخمی ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق، ضلع پلوامہ کے بنڈزوہ علاقے میں مشتاق احمد وگے نامی پولیس اہلکار کےگھرمیں دہشت گرد زبردستی گھس گئے اور مکان کے صحن میں موجود مشتاق احمد پر تین گولیوں کے راونڈ چلائے جس سے مشتاق شدید طور پر زخمی ہوا۔

    جموں وکشمیر کے پلوامہ میں مبینہ دہشت گردوں کے حملے میں پولیس اہلکار شدید زخمی ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق، ضلع پلوامہ کے بنڈزوہ علاقے میں مشتاق احمد وگے نامی پولیس اہلکار کےگھرمیں دہشت گرد زبردستی گھس گئے اور مکان کے صحن میں موجود مشتاق احمد پر تین گولیوں کے راونڈ چلائے جس سے مشتاق شدید طور پر زخمی ہوا۔

    جموں وکشمیر کے پلوامہ میں مبینہ دہشت گردوں کے حملے میں پولیس اہلکار شدید زخمی ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق، ضلع پلوامہ کے بنڈزوہ علاقے میں مشتاق احمد وگے نامی پولیس اہلکار کےگھرمیں دہشت گرد زبردستی گھس گئے اور مکان کے صحن میں موجود مشتاق احمد پر تین گولیوں کے راونڈ چلائے جس سے مشتاق شدید طور پر زخمی ہوا۔

    • Share this:
    پلوامہ: جموں وکشمیر کے پلوامہ میں مبینہ دہشت گردوں کے حملے میں پولیس اہلکار شدید زخمی ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق، ضلع پلوامہ کے بنڈزوہ علاقے میں مشتاق احمد وگے نامی پولیس اہلیکار کے گھر میں ملیٹنٹ زبردستی گس گیے اور مکان کے صحن میں موجود مشتاق احمد پر تین گولیوں کے راونڈ چلائے جس سے مشتاق شدید طور پر زخمی ہوا۔

    پولیس اہلیکار مشتاق کو زخمی حالت میں پلوامہ ڈسٹرکٹ اسپتال میں داخل کیا گیا، جہاں پر ڈاکٹروں نے اس کی مرہم پٹی کرکے زخمی اہلکار کو بہتر علاج ومعالجہ کے لئے سری نگر کے ایس ایم ایچ ایس اسپتال منتقل کیا گیا۔ اس واقعہ کے بعد فوج اور پولیس کے علاوہ سی آر پی ایف نے مشترکہ طور پر علاقے کا محاصرہ کرکے حملہ آور ملی ٹنٹوں کی تلاش شروع کردی ہے۔ مشتاق احمد وگے آجکل پولیس لائنز پلوامہ میں بطور فالوور تعینات تھا اور چھٹی پرگھرگیا تھا۔ مشتاق کافی عرصہ قبل جموں وکشمیر پولیس میں بطور ایس پی او تعینات ہوا تھا۔ اس کی بہترین کارکردگی پر اسے 2017 میں مشتاق کو مستقل کرکے اسے جموں وکشمیر پولیس میں فالوور بنایا گیا تھا اور پلوامہ میں ہی اس کی تعیناتی عمل میں لائی گئی تھی۔ ملیٹنٹوں کی جانب سے پولیس اہلکار مشتاق احمد پر ہوے حملے کے بعد گرچہ سیکورٹی فورسیز نے پورے علاقے کا محاصرہ کردیا ہے۔ تاہم اس واقعہ سے بنڈزوہ علاقے میں کافی خوف وہراس کا ماحول پیدا ہوگیا ہے۔
    قومی، بین الااقوامی، جموں و کشمیر کی تازہ ترین خبروں کے علاوہ  تعلیم و روزگار اور بزنس  کی خبروں کے لیے  نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: