ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں پاکستان نے کی بھاری گولہ باری ، پانچ سیکورٹی اہلکاروں سمیت 11 کی موت

Pakistan ceasefile voilation in Jammu kashmir : ہندوستانی فوج نے بھی جوابی کارروائی کرتے ہوئے پاکستانی فوج کے ڈھانچے کو بڑا نقصان پہنچایا ۔ پاکستان کی گولہ باری میں فوج کے چار اہلکار اور بارڈر سیکورٹی فورسیز کا ایک جوان شہید ہوگیا۔

  • Share this:
جموں و کشمیر میں پاکستان نے کی بھاری گولہ باری ، پانچ سیکورٹی اہلکاروں سمیت 11 کی موت
جموں و کشمیر میں پاکستان نے کی بھاری گولہ باری ، پانچ سیکورٹی اہلکاروں سمیت 11 کی موت

پاکستانی فوج نے جمعہ کو جموں و کشمیر میں لائن آف کنٹرول سے متصل کئی سیکٹروں میں بلا اشتعال گولہ باری کی ، جس میں جان و مال کا بڑا نقصان ہوا ہے ۔ جموں و کشمیر کے گریز اور اری سیکٹروں کے درمیان لائن آف کنٹرول کے پاس پاکستان نے کئی مرتبہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی ، جس میں پانچ سیکورٹی اہلکاروں سمیت گیارہ افراد کی موت ہوگئی ہے ۔


ہندوستانی فوج نے بھی جوابی کارروائی کرتے ہوئے پاکستانی فوج کے ڈھانچے کو بڑا نقصان پہنچایا ۔ پاکستان کی گولہ باری سے فوج کے چار اہلکار اور بارڈر سیکورٹی فورسیز کے ایک جوان شہید ہوگئے اور چھ دیگر شہری بھی جاں بحق ہوگئے ۔ بی ایس ایف کے انسپکٹر جنرل ( کشمیر ) راجیش مشرا نے کہا کہ پاکستان نے کسی اکساوے کے بغیر بھاری گولہ باری کی ، لیکن فوج اور بی ایس ایف نے بہادری سے ان کا مقابلہ کیا اور انہیں منہ توڑ جواب دیا ۔ پاکستان کی کئی سیکورٹی چوکیوں کو نیست و نابود کردیا گیا ۔


وہ بی ایس ایف کے سب انسپکٹر راکیش ڈوبھال کو خراج عقیدت پیش کرنے کے پروگرام کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کررہے تھے ۔ ڈوبھال پاکستانی گولہ باری میں شہید ہوگئے تھے ۔ مشرا نے کہا کہ پاکستانی گولہ باری کی وجہ سے ہندوستانی علاقہ میں جان و مال کا بڑا نقصان ہوا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گولہ باری میں زخمی ہونے کے بعد بھی ڈوبھال نے ڈٹ کر مقابلہ کیا ۔


انہوں نے کہا کہ ہندوستانی علاقہ میں دراندازی کرنے کیلئے لائن آف کنٹرول کے اس پار تقریبا ڈھائی سو سے تین سو دہشت گرد تیار تھے ۔ انہوں نے کہا کہ بی ایس ایف سمیت سیکورٹی فورسیز ان کے ناپاک ارادوں کو ناکام بنانے میں کامیاب رہی ہیں اور ہم ایسا کرتے رہیں گے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 15, 2020 04:42 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading