உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: اب پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے کی پاکستانی عدلیہ کی تعریف، کہی یہ بڑی بات

    J&K News: اب پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے کی پاکستانی عدلیہ کی تعریف، کہی یہ بڑی بات

    J&K News: اب پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے کی پاکستانی عدلیہ کی تعریف، کہی یہ بڑی بات

    Jammu and Kashmir : پی ڈی پی صدر محبوبہ مفی نے مزید کہا کہ جموں و کشمیر کو لیباریٹری مت بناو۔ انہوں نے نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ بندوق کا راستہ ترک کریں اور امن کے ذریعہ اپنے مسائل کو اجاگر کریں ۔

    • Share this:
    کولگام: جموں و کشمیر کی سابق وزیر اعلی اور پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے پاکستانی عدلیہ کے رول کی تعریف کی ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ وہاں فسادات میں مارے جانے والے بے گناہوں کو جلد انصاف فراہم کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے پاکستان کے شہر میں سری لنکا کے شہری کی لنچنگ کے بعد ہوئی موت میں قصوروار قرار دئے گئے ملزمین کو دی گئی سزا سے متعلق اپنے تاثرات بیان کئے۔  محبوبہ مفتی نے مزید کہا کہ ملک میں نفرت کی سیاست کے ذریعہ ہندوملسم طبقوں کو آپس میں لڑانے کی کوشش کی جا رہی ہے جبکہ مرکزی سرکار مہنگائی بے روزگاری اور دیگر اہم مسائل کو دبانے کے لیے ایسے حربے استمعال کر رہی ہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: Baramulla Encounter میں فوج نے 3 پاکستانی دہشت گردوں کو مار گرایا، ایک جوان شہید


    محبوبہ مفتی نے کہا کہ ریاست میں امن قائم کرنے کا ڈھونڈورا پیٹا جا رہا ہے اور دوسری طرف ٹارگیٹ کلنگ کا سلسلہ جاری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر کشمیری پنڈتوں کو یہاں کوئی پُرامن ماحول کی فضاء میں رہنے کے لیے تیار کرے گا تو وہ یہاں کا نوجوان اور یہاں کے مسلمان ہیں ۔

     

    یہ بھی پڑھئے: دہشت گردوں نے کی تمام حدیں پار، کمسن بچی پر چلائی گولی، جلد دیا جائے گا جواب: IGP کشمیر


    یاسین ملک کے کیس کے حوالے سے محبوبہ مفتی نے کہا کہ کشمیر ایک سیاسی مسئلہ ہے اور اس کو لے کر اب تک کئی لوگ پھانسی چڑھ گئے، جبکہ مسئلہ کا حل جوں کا توں ہے ۔ چولگام کولگام میں آج پارٹی کا ایک روزہ ورکرس کنونشن منعقد ہوا، جس میں سینئر لیڈر ڈاکٹر محبوب بیگ ، سرتاج مدنی ، سہیل بخاری ، محمد امین ڈار سمیت کئی لیڈران اور ورکروں نے شرکت کی۔

    اس موقعہ پی ڈی پی صدر نے کہا کہ جموں و کشمیر کو لیباریٹری مت بناو۔ انہوں نے نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ بندوق کا راستہ ترک کریں اور امن کے ذریعہ اپنے مسائل کو اجاگر کریں ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: