உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کشمیر میں سرما کے دوران بڑے پیمانے پر کی جائے گی شجرکاری، ڈائریکٹر جموں کشمیر سوشل فاریسٹری روشن جگی کا بیان

     ڈائریکٹر سوشل فاریسٹری روشن جگی کا کہنا ہے کہ محکمہ جنگلاتی رقبے کو بڑھانے کےلیے بڑے پیمانے پر اقدامات اٹھا رہا ہے جبکہ لوگوں کو بھی مختلف اقسام کے پودے فراہم کئے جا رہے ہیں۔

    ڈائریکٹر سوشل فاریسٹری روشن جگی کا کہنا ہے کہ محکمہ جنگلاتی رقبے کو بڑھانے کےلیے بڑے پیمانے پر اقدامات اٹھا رہا ہے جبکہ لوگوں کو بھی مختلف اقسام کے پودے فراہم کئے جا رہے ہیں۔

    ڈائریکٹر سوشل فاریسٹری روشن جگی کا کہنا ہے کہ محکمہ جنگلاتی رقبے کو بڑھانے کےلیے بڑے پیمانے پر اقدامات اٹھا رہا ہے جبکہ لوگوں کو بھی مختلف اقسام کے پودے فراہم کئے جا رہے ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir, India
    • Share this:
    جموں کشمیر:- سوشل فاریسٹری کے جموں کشمیر کے ڈایریکٹر، روشن جگی نے کہا ہے کہ یونین ٹیریٹوری کا جنگلاتی رقبہ بڑھانے کے لیے محکمہ سوشل فاریسٹری کوشاں ہے اور اس کےلیے جموں کشمیر میں موسم سرما کے دوران بڑے پیمانے پر شجرکاری کی جا رہی ہے۔

    ڈائریکٹر سوشل فاریسٹری روشن جگی کا کہنا ہے کہ محکمہ جنگلاتی رقبے کو بڑھانے کےلیے بڑے پیمانے پر اقدامات اٹھا رہا ہے جبکہ لوگوں کو بھی مختلف اقسام کے پودے فراہم کئے جا رہے ہیں۔ انہوں نے پہلگام میں سوشل فاریسٹری کی جانب سے ایک میگا پلانٹیشن مہم کا افتتاح کرنے کے دوران کہا کہ جنگلات کا تحفظ سب کےلیے ایک اہم ترجیح ہونی چاہیے۔ شجر کاری مہم میں ڈی ایف او سوشل فاریسٹری شمع روحی، تحصیلدار پہلگام ڈاکٹر محمد حسین کے علاوہ زندگی کے مختلف شعبوں سے منسلک افراد و اسکولی بچوں نے حصہ لیا۔ اس موقع پر پہلگام کے ایک بڑے رقبے پر شجر کاری کی گئی اور لوگوں کےلیے ماحولیاتی بیداری کا پیغام بھی عام کیا گیا۔




    روشن جگی نے کہا کہ محکمہ میں کام کر رہے عارضی اور یومیہ اجرتوں پر کام کرنے والے ملازمین محکمہ کی ریڈ کی ہڈی ہیں اور انہیں ہر طرح کا تعاون و امداد فراہم کرنے کےلیے کوششیں کی جا رہی ہیں۔ روشن جگی نے کہا کہ سرکار عارضی ملازمین کے مسائل حل کرنے کی کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے اور روزانہ اجرتوں میں اضافہ سرکار کا ایک خوش آئند فیصلہ تھا۔ روشن جگی نے مزید کہا کہ جنگلات کو تحفظ فراہم کرانے کےلیے بھی اقدامات مزید سخت کۓ جا رہے ہیں تاہم عام لوگوں کو بھی اس حوالے سے کلیدی رول فراہم کرنا ہوگا۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: