ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

حد بندی کمیشن کے مجوزہ جموں و کشمیر دورہ کو لے کر زیادہ تر سیاسی جماعتیں پُر جوش

Jammua and Kashmir News : حد بندی کمیشن چھ جولائی کو چار روزہ دورے پر جموں و کشمیر پہنچے گا ۔ کیمشن کے ارکان تمام سیاسی جماعتوں کے لیڈراں سے ملیں گے ۔ بھارتیہ جنتا پارٹی اورکانگریس اس پہل سے کافی خوش ہیں اور کمیشن کے دورے کا خیرمقدم کررہی ہیں ۔

  • Share this:
حد بندی کمیشن کے مجوزہ جموں و کشمیر دورہ کو لے کر زیادہ تر سیاسی جماعتیں پُر جوش
حد بندی کمیشن کے مجوزہ جموں و کشمیر دورہ کو لے کر زیادہ تر سیاسی جماعتیں پُر جوش

جموں : گزشتہ سال جموں و کشمیر اسمبلی حلقوں کی از سر نو حد بندی کے لیے فروری میں مرکز نے حد بندی کمیشن تشکیل دیا تھا ۔ کوڈ کے سبب کمیشن کے ممبراں جموں و کشمیر کا دورہ کرنے سے قاصر رہے ۔ اب حد بندی کمیشن چھ جولائی کو چار روزہ دورے پر جموں و کشمیر پہنچے گا ۔ کیمشن کے ارکان تمام سیاسی جماعتوں کے لیڈراں سے ملیں گے ۔ بھارتیہ جنتا پارٹی اورکانگریس اس پہل سے کافی خوش ہیں اور کمیشن کے دورے کا خیرمقدم کررہی ہیں ۔ انہیں کشمیر اور جموں میں برابر اسمبلی نشستیں تشکیل پانے کی امید ہے ۔


بی جے پی کے کویندر نے کہا کہ جموں کی سبھی سیاسی جماعتوں کو چاہئے کہ وہ کمیشن سے ملے اورجموں کو کشمیر کے مقابلہ میں آبادی اور ایریا زیادہ ہونے کے باوجود اسمبلی نشستیں کم تھی ، ان سبھی چیزوں کو مدنظر رکھتے ہوئے فیصلہ ہونا چاہئے ۔ کانگریس لیڈر یوگیش سہنی کا کہنا ہے کہ جموں کو اپنا برابر حق ملنا چاہئے ۔ دونوں خطوں میں اسمبلی نشستوں کو لے کر جو عدم توازن ہے وہ ختم ہونا چاہئے ۔


نیشنل کانفرنس اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی جیسی کشمیر پر توجہ مرکوز رکھنے والی کچھ سیاسی جماعیتں حد بندی کمیشن کے ارادوں پر شکوک و شہبات ظاہرکررہی ہیں ۔ ان کا الزام ہے کہ کمیشن مرکز کی بی جے پی حکومت کے دباو میں کام کررہا ہے ۔ ان کے مطابق مفادات کو پورے کرنے کی کمیشن کو ہدایت دی گئی ہے ۔


ان سیاسی پارٹیوں نے کہا کہ کمیشن نے طے شدہ ضابطوں پر عمل نہیں کیا ہے ، اسی لئے شک پیدا ہوگیا ہے ۔ این سی کے لیڈر شیخ بشیر احمد نے کہا کہ جلد بازی میں کام ہورہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 2011 کی مردم شماری پر حد بندی نہیں ہوسکتی ہے ۔ تازہ مردم شماری کے بعد ہی حدبندی ہونی چاہئے ۔ کچھ سیاسی ماہرین حد بندی کمیشن کا جموں و کشمیر دورے کا خیرمقدم کرتے ہیں ۔

بتادیں کہ حال ہی میں دہلی میں منعقد ہوئی آل پارٹی میٹنگ میں وزیراعظم نریندر مودی نے جموں و کشمیر کے سیاسی لیڈران کو یہ یقین دہانی کرائی کہ ان کی حکومت حد بندی سے متعلق مشق کو جلد ہی ختم کرے گی ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ جموں و کشمیر میں جلد اسمبلی انتخابات ہوں گے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 04, 2021 11:35 PM IST