اپنا ضلع منتخب کریں۔

    پلوامہ CRPF حملہ: جیش محمد کے 5 دہشت گردوں کو عمر قید کی سزا، 40جوان ہوئے تھے شہید

    عدالت نے یہ سزا پلوامہ میں سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر حملہ کرنے اور اس کی منصوبہ بندی کرنے پر دہشت گردوں کے خلاف سنائی ہے۔

    عدالت نے یہ سزا پلوامہ میں سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر حملہ کرنے اور اس کی منصوبہ بندی کرنے پر دہشت گردوں کے خلاف سنائی ہے۔

    عدالت نے یہ سزا پلوامہ میں سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر حملہ کرنے اور اس کی منصوبہ بندی کرنے پر دہشت گردوں کے خلاف سنائی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir, India
    • Share this:
      نئی دہلی. دہشت گرد تنظیم جیش محمد کے پانچ دہشت گردوں کو دہلی کی پٹیالہ ہاؤس کورٹ نے پیر کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔ عدالت نے یہ سزا پلوامہ میں سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر حملہ کرنے اور اس کی منصوبہ بندی کرنے پر دہشت گردوں کے خلاف سنائی ہے۔

      ان پانچ دہشت گردوں میں سجاد احمد خان کا نام بھی شامل ہے جنہوں نے پلوامہ میں سی آر پی ایف کے قافلے پر حملے کے دوران سیکورٹی فورسز کی نقل و حرکت کے بارے میں معلومات دی تھیں۔ 2019 میں، جموں و کشمیر کے پلوامہ ضلع میں سی آر پی ایف کے قافلے پر دہشت گردانہ حملے میں 40 فوجی مارے گئے تھے۔

      عدالت نے کہا کہ تمام مجرموں نے مل کر ہندوستان کے خلاف جنگ چھیڑنے کی سازش کی تھی۔ اس میں کہا گیا ہے کہ مجرم نہ صرف جیش  محمد کے رکن تھے بلکہ وہ دہشت گردوں کو اسلحہ، گولہ بارود اور رسد فراہم کرکے ان کے ساتھ تعاون کرتے تھے۔ ان پانچ دہشت گردوں میں سجاد احمد خان کا نام بھی شامل ہے، جنہوں نے پلوامہ میں سی آر پی ایف کے قافلے پر حملے کے دوران سیکورٹی فورسز کی نقل و حرکت کے بارے میں معلومات دی تھیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: