உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں میں مقیم کشمیری پنڈت مہاجرین کے لئے ریلیف ڈپارٹمنٹ نے منقعد کئے کیمپ

    جموں میں مقیم کشمیری پنڈت مہاجرین کے لئے ریلیف ڈپارٹمنٹ نے منقعد کئے کیمپ

    جموں میں مقیم کشمیری پنڈت مہاجرین کے لئے ریلیف ڈپارٹمنٹ نے منقعد کئے کیمپ

    جموں و کشمیرحکومت نے جموں میں مقیم مہاجر پنڈتوں کے لئے بہت ایسے کیمپ قائم کئے ہیں، جن کا مقصد انہیں دستاویزات جمع کرانے کے بعد آدھے گھنٹے کے اندر اندر گھر پر ڈومیسائل سرٹیفکیٹ جاری کرنا ہے۔

    • Share this:
    جموں: جموں و کشمیرحکومت نے جموں میں مقیم مہاجر پنڈتوں کے لئے بہت ایسے کیمپ قائم کئے ہیں، جن کا مقصد انہیں دستاویزات جمع کرانے کے بعد آدھے گھنٹے کے اندر اندر گھر پر ڈومیسائل سرٹیفکیٹ جاری کرنا ہے۔ مہاجرین خاص طور پر بزرگ اور بیمار لوگ جو کووڈ اور دیگر وجوہات کی وجہ سے RC کے دفتر میں یہ ڈومیسائل حاصل نہیں کر سکتے تھے۔ ایک مہاجر پنڈت بوشکر ناتھ نے نیوز ایٹین اردو کو بتایا کہ وہ ہجرت کے بعد اس وقت جموں کے باہری علاقے میں سرسوتی وہار  میں مقیم ہیں، نے کہا کہ سکونت کرنے والے مہاجرین  اس کیمپ میں آئےہیں اور انہیں یہاں محکمہ کی طرف ڈومیسائل سرٹیفکیٹ جاری کئے جارہے ہیں۔

    انہوں نے بتایا کہ اس سے پہلے انہیں دور دور تک کے علاقوں کا رخ کرنا پڑتا تھا۔ بیمار پشکھر ناتھ پیدل ہی کیمپ کے مقام پر پہنچے کیونکہ اسے حکومت نے ان کی دہلیز کے قریب قائم کیا ہے اور وہ بہت خوش تھے اور انہیں کاغذات جمع کرانے کے بعد آدھے گھنٹے میں اسے ڈومیسائل سرٹیفکیٹ مل گیی تھی۔ بھٹ نے کہا کہ وہ گزشتہ دو سالوں کے دوران کووڈ کی وجہ سے گھر سے باہر نہیں آ سکے تھے، لیکن اب یہ اطلاع ملنے کے بعد کہ یہ کیمپ ان کی دہلیز پر قائم کیا گیا ہے، اسے حاصل کرنے میں کامیاب ہو گئے۔

    کشمیری مہاجرین میں ڈومیسائل سرٹیفکیٹ جاری کرنے کے لئے ریلیف ڈپارٹمنٹ کے ملازمین کو بڑی تعداد میں تعینات کیا گیا ہے۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ آر سی نے ان کیمپوں کو قائم کرنے کا فیصلہ کیا تاکہ ان لوگوں میں یہ سرٹیفکیٹ جاری کئے جاسکیں جو کووڈ کی وجہ سے آر سی کے دفتر نہیں جا سکے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ جموں اور ملک کے دیگر حصوں میں جہاں کشمیری پنڈت مہاجر مقیم ہیں، اس طرح کے کیمپ قائم کئے جائیں۔ تاکہ واسی کشمیر سے سکونت کرنے والے پنڈتوں کو دستاویزات جمع کروانے کے بعد بہت ہی مختصر مدت میں سرٹیفکیٹ حاصل ہوسکے۔ وہ تارکین وطن سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ اس اقدام سے فائدہ اٹھائیں اور ایسے کیمپوں کا دورہ کرنے کے بعد ڈومیسائل سرٹیفکیٹ حاصل کریں۔

    کورونا وائرس کی موجودہ لہر کو مدنظر رکھتے ہوئے، ایسے کیمپوں میں سماجی فاصلے کو یقینی بنانے پر بہت زیادہ توجہ دی جا رہی ہے۔ پنڈت برادری کو اب امید ہے کہ مستقبل میں بھی ایسے اقدامات ہوتے رہیں گے تاکہ انہیں جلاوطنی کے دور میں کچھ راحت ملے۔ دوسری جانب زونل آفیسر ریلیف ڑپارٹمنٹٹ برائے کشمیری مہاجرین کمار جی رینا نے بتایا کہ یہ اقدام محکمہ نے اس لئے اٹھایا ہے کہ کشمیری مہاجر پنڈتوں کو کووڈ کے اس دور میں کوئی پریشانی درپیش نہ ہو، اس لئے ایسے کیمپ کئے جارہے ہیں اور مستقبل میں بھی یہ جاری رہیں گے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: