உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹایا جانا جموں وکشمیر کے لئے سب سے بڑی بھول: عمر عبداللہ کی بی جے پی پر تنقید

    آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹایا جانا جموں وکشمیر کے لئے سب سے بڑی بھول: عمر عبداللہ کی بی جے پی پر تنقید

    آرٹیکل 370 (Article 370) اور 35 اے (Article 35 A) ہٹائے جانے کے بعد سے ہی سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ (Omar Abdullah) کو نظر بند کردیا گیا تھا۔ ان کے ساتھ نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ (Farooq Abdullah) کو بھی نظربند کیا گیا تھا۔

    • Share this:
    سری نگر: نیشنل کانفرنس (National Conference) کے لیڈر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ (Omar Abdullah) نے جمعہ کو آرٹیکل 370 اور 35 اے (Article 370 & 35A) کو لےکر بی جے پی پر جم کر تنقید کی۔ ایک پروگرام کے دوران انہوں نے بی جے پی کا نام لئے بغیر کہا کہ یہ جموں وکشمیر سے متعلق سب سے بڑی بھول ہے۔ ایک دن پہلے بھی عمر عبداللہ نے ٹوئٹ کے ذریعہ اپنی حراست کا ذکر کرتے ہوئے رولنگ پارٹی پر الزام لگایا تھا۔

    حالات مزید بگڑنے کا الزام

    آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹائے جانے کے بعد سے ہی سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ کو نظر بندکردیا گیا تھا۔ ان کے ساتھ نیشنل کانفرنس کے صدر اور سابق مرکزی وزیر فاروق عبداللہ کو بھی نظر بند کیا گیا تھا۔ پروگرام کے دوران عمر عبداللہ نے اسٹیج سے کہا ’وہ کہتے تھے کہ آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹانے سے بھی ہندوستانی انتظامیہ سے الگ رہ رہے لوگ پوری طرح ملک کے ساتھ شامل ہوجائیں گے۔ تاہم میں انہیں یہ اعتماد کے ساتھ کہنا چاہوں گا کہ ایسا کرنے سے لوگ پہلے سے بھی زیادہ الگ تھلگ ہوگئے ہیں’۔

    آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹائے جانے کے بعد سے ہی سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ کو نظر بند کردیا گیا تھا۔ ان کے ساتھ نیشنل کانفرنس کے صدر اور سابق مرکزی وزیر فاروق عبداللہ کو بھی نظر بند کیا گیا تھا۔
    آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹائے جانے کے بعد سے ہی سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ کو نظر بند کردیا گیا تھا۔ ان کے ساتھ نیشنل کانفرنس کے صدر اور سابق مرکزی وزیر فاروق عبداللہ کو بھی نظر بند کیا گیا تھا۔


    ہم اپنی زمین پر ہی محفوظ نہیں ہیں

    خطاب کے دوران انہوں نے علاقے میں ترقیاتی کاموں پر بھی سوال اٹھائے۔ عمر عبداللہ نے کہا، ’کہاں ہیں ترقیاتی کام؟ ایسے کاموں کے شروع ہونے کے لئے ایک سال تین ماہ کا وقت کافی ہوتا ہے’۔ انہوں نے کہا، ’ہم ہمیشہ یہی کہیں گے کہ اس غلط فہمی میں نہ رہیں کہ آرٹیکل 370 اور 35 اے کو ہٹایا جانا ساری پریشانیوں کو دور کردے گا۔ یہ جموں وکشمیر کے لئے اٹھایا گیا سب سے غلط قدم ہے’۔ انہوں نے بولا ’ہم ہماری زمینوں پر محفوظ نہیں ہیں’۔

    یہ بی جے پی کا نہیں گاندھی کا ہندوستان ہے: فاروق عبداللہ

    پروگرام میں پہنچے نیشنل کانفرنس کے صدر فاروق عبداللہ نے بھی بی جے پی کی جم کر تنقید کی۔ فاروق عبداللہ نے کہا، ’اگر جموں وکشمیر پاکستان جانا چاہتا، تو انہوں نے یہ 1947 میں ہی کرلیا ہوتا۔ کوئی انہیں نہیں روک سکتا تھا’۔ انہوں نے کہا ’ہمارا ملک مہاتما گاندھی کا ملک ہے، نہ کہ بی جے پی کا ہندوستان ہے’۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: