உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: شمالی کشمیر کے پٹن میں سرپنچ کے قتل کا معاملہ حل، تین ملی ٹینٹس گرفتار، اسلحہ و گولہ بارود برآمد

    J&K News: شمالی کشمیر کے پٹن میں سرپنچ کے قتل کا معاملہ حل، تین ملی ٹینٹس گرفتار، اسلحہ و گولہ بارود برآمد

    J&K News: شمالی کشمیر کے پٹن میں سرپنچ کے قتل کا معاملہ حل، تین ملی ٹینٹس گرفتار، اسلحہ و گولہ بارود برآمد

    Jammu and Kashmir : پستول کلچر سے متعلق ایک سوال کے جواب میں ایس ایس پی نے کہا کہ چھوٹے سائز کے اسلحے خاص کر پستول پاکستان سے آرہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس زنجیر کو ختم کرنے کو لے کر سیکورٹی فورسیز اپنا کام کررہی ہیں۔

    • Share this:
    بارہمولہ : شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے پٹن گوشہ بگ علاقے میں 15 اپریل کوملی ٹینٹوں کی طرف سے ایک مقامی سرپنچ منظور احمد بنگو کو ہلاک کرنے کے ایک ماہ بعد پولیس نے معاملہ کو حل کرتے ہوئے تین ملی ٹینٹوں کو ہتھیار سمیت گرفتارکیا۔ ایس ایس پی بارہمولہ رئیس محمد بھٹ نے پٹن میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے تینوں ملی ٹینٹوں کی شناخت نور محمد یتو، محمد رفیق پرے اور عاشق حسین پرے گوشہ بگ پٹن کے طور پر کی ۔ ان کے قبضہ سے تین پستول، دو دستی بم، تین میگزین اور بتیس گولیاں برآمد کی گئی ہیں۔

    ایس ایس پی نے بتایا کہ گرفتار ملی ٹینٹوں نے انکشاف کیا کہ وہ لشکر طیبہ کے ایک او جی ڈبلیو محمد افضل لون سے رابطے میں تھے، جو اس وقت حراست میں ہے ۔ ایس ایس پی نے بتایا کہ افضل لون نے اپنے قریبی معاون نور محمد یتو کو اپنے علاقے کے دو افراد  محمد رفیق پرے اور عاشق حسین پرے کو ملی ٹینٹوں کی صفوں میں شامل ہونے کی ترغیب دینے کی ہدایت کی تھی ۔ جبکہ نور محمد یتو نے معراج الدین ڈار ساکن گنڈ جہانگیر حاجن بانڈی پورہ کے ساتھ دونوں کو ذاتی طور پر لون سے ملنے کی ہدایت کی جبکہ کچھ دنوں کے بعد لون نے معراج الدین ڈار کے ذریعے رفیق پرے اور عاشق پرے کے لیے اسلحہ اور گولہ بارود (دو پستول، دو دستی بم اور دو میگزین) بھیجے، جن میں سیاسی وابستگی رکھنے والے افراد خاص طور پر پٹن کے علاقے کے سرپنچوں کو قتل کرنے کی ہدایت دی گئی۔

     

    یہ بھی پڑھئے: کشمیری پنڈت ملازمین کا احتجاج جاری، اب مظاہرین نے اپنایا یہ نیا طریقہ


    پولیس نے لون اور اس کے دیگر تین ساتھیوں کو پلہالن گرینیڈ دھماکہ کیس کے سلسلے میں گرفتار کیا گیا تھا، جبکہ ان کی گرفتاری سے تینوں کی کارروائیوں میں تاخیر ہوئی اور وہ اس وقت تک خاموش رہے جب تک کہ دو مقامی ملی ٹینٹ عمر لون اور گلزار گنائی ساکن ووسن پٹن، جو حال ہی میں (پاکستان) سے اسلحہ اور گولہ بارود کی تربیت حاصل کرنے کے بعد واپس لوٹ آیا تھا، اور گلزار نے ان تینوں سے رابطہ کرکے کام مکمل کرنے کی ہدایت نہ دی۔

     

    یہ بھی پڑھئے: آرمی نے دہائیوں کے بعد حیدربیگ پٹن میں طلبہ کیلئے سنیما دوبارہ کھول دیا


    اس کے بعد عاشق نے ملی ٹینٹ عمر لون سے فیس بک میسنجر کے ذریعہ بات کرکے سرپنچ منظور احمد بنگو کو مارنے کی سازش تیار کرکے 15 اپریل کو چندر ہامہ باغات میں سرپنچ کو قتل کردیا۔ پریس کانفرنس کے حاشیہ پر ایس ایس پی نے نیوز18 اردو کے نمائندے سے بات چیت کرتے ہوئے کہا:" ضلع بارہمولہ اب کچھ ہی ملی ٹینٹ بچے ہیں اور انہیں  بہت جلد کیفر کردار تک پہنچایا جائےگا"۔

    پستول کلچر سے متعلق نیوز18 اردو کے نمائندے کے  ایک سوال کے جواب میں ایس ایس پی نے کہا کہ چھوٹے سائز کے اسلحے خاص کر پستول پاکستان سے آرہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس زنجیر کو ختم کرنے کو لے کر سیکورٹی فورسیز اپنا کام کررہی ہیں اور بہت جلد ضلع بارہمولہ کو ملی ٹینسی سے صاف و پاک کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ گوشہ بگ معاملہ میں مزید تفتیش جاری ہے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: