ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں۔کشمیر: شوپیاں کے جَن محلہ میں کل شروع ہوئے انکاؤنٹر میں 5 ملیٹنٹ ڈھیر

شوپیاں کے جَن محلہ میں ملی ٹنٹوں اور سکیورٹی فورسز کے بیچ انکاؤنٹر ختم ہوچکا ہے۔پانچ ملی ٹنٹ مارے گئے ہیں۔ملی ٹنٹوں نے ایک رہائشی مکان سے سکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی تھی ۔سکیورٹی کے چار جوان بھی زخمی بتائے جارہے ہیں۔ ۔۔

  • Share this:

شوپیاں کے جَن محلہ میں ملی ٹنٹوں اور سکیورٹی فورسز کے بیچ انکاؤنٹر ختم ہوچکا ہے۔پ انچ ملیٹنٹ مارے گئے ہیں۔ ملیٹنٹوں نے ایک رہائشی مکان سے سکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی تھی ۔سکیورٹی کے چار جوان بھی زخمی بتائے جارہے ہیں۔ وہیں جنوبی کشمیر کے بجبہاڑہ علاقہ میں ملیٹینٹوں نے  ٹیریٹوریل آرمی کے ایک جوان پر اندھادھند فائرنگ کردی ، جس میں جوان وہ شدید طور پر زخمی ہو گیا ۔ فوجی جوان کو بجبہاڑہ کے سب ضلع اسپتال میں فوری طور پر داخل کرایا ، لیکن تشویشناک حالت کے مدنظر اسے وہاں سے گورنمنٹ میڈیکل کالج اننت ناگ منتقل کردیا گیا ۔ تاہم وہاں پہنچتے ہی وہ زخموں کی تاب نہ لاکر چل بسا ۔


شہید فوجی اہلکار کی شناخت محمد سلیم آخوند ساکنہ گوریوان بجبہاڑہ کے طور پر ہوئی ہے ۔ حملہ کے فوری بعد پولیس ، فوج اور سی آر پی ایف نے پورے علاقہ کا محاصرہ کرلیا ۔ تاہم حملہ آور ملیٹینٹ وہاں سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا ۔ مفرور ملیٹینٹوں کو پکڑنے اور اس کا سراغ لگانے کیلئے پولیس اور سیکورٹی فورسز نے بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کردیا ہے ۔


شہید فوجی جوان اننت ناگ میں ہی ٹیریٹوریل آرمی میں تعینات تھے اور وہ کچھ دن قبل چھٹی لے کر اپنے گھر آئے تھے ۔ ذرائع کے مطابق اس کی اطلاع ملیٹینٹوں کو لگی تھی کہ وہ گھر میں ہی موجود ہیں اور پہلے سے ہی ملیٹینٹ اس کے گھر کے نزدیک ہی طاق میں بیٹھے تھے ۔ اس دوران جوں ہی سلیم کا گزر وہاں سے ہوا ، تو پہلے سے ہی وہاں پر موجود ملیٹینٹوں نے سلیم پر حملہ کرکے اس پر کافی نزدیک سے اندھادھند گولیاں چلائیں ۔ فائرنگ کی آواز سے پورے علاقہ میں افراتفری مچ گئی اور لوگ دہشت کے ماحول میں اپنی جان بچانے کیلئے محفوظ مقامات کی جانب دوڑتے نظر آئے ۔

Published by: Sana Naeem
First published: Apr 09, 2021 11:09 PM IST