ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

کشمیر کے اسپتال میں خاص انتظام کینسر میں مبتلا بچوں کے چہرے پراس طرح لائی مُسکان

اسکمز میں ماہر سرطان ڈاکٹر فیصل گورو کا کہنا ہے کہ سرطان میں مبتلا ان بچوں کو کیمو تھیرپی کے دوران سخت تکلیف سے گذرنا پڑتا ہے اور اسپتال کے کمروں میں یہ تکلیف اور زیادہ بڑھ جاتی ہے لیکن اس خاص کمرے میں ایک ایسا ماحول پیدا کرنے کی کوشش کی گئی ہئے جس میں بچوں کا درد کچھ کم ہوسکے۔

  • Share this:
کشمیر کے اسپتال میں خاص انتظام کینسر میں مبتلا بچوں کے چہرے پراس طرح لائی مُسکان
اسکمز میں ماہر سرطان ڈاکٹر فیصل گورو کا کہنا ہے کہ سرطان میں مبتلا ان بچوں کو کیمو تھیرپی کے دوران سخت تکلیف سے گذرنا پڑتا ہے اور اسپتال کے کمروں میں یہ تکلیف اور زیادہ بڑھ جاتی ہے لیکن اس خاص کمرے میں ایک ایسا ماحول پیدا کرنے کی کوشش کی گئی ہئے جس میں بچوں کا درد کچھ کم ہوسکے۔

کشمیر کے سب سے بڑے اسپتال شیر کشمیر انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل ساینسز میں کینسر سے متاثرہ بچوں کے لئے ایک خصوصی انتظام کیا گیا ہے ۔اسپتال میں ایک خاص کمرہ بنایا گیا ہئے جس میں رنگا رنگ کھلونے، کتابیں اور دیگر ایسی اشیاء رکھی گئی ہیں جس سے تکلیف میں مبتلا ان معصوم بچوں کے چہرے پر مسکان آسکے۔ اسکمز میں ماہر سرطان ڈاکٹر فیصل گورو کا کہنا ہے کہ سرطان میں مبتلا ان بچوں کو کیمو تھیرپی کے دوران سخت تکلیف سے گذرنا پڑتا ہے اور اسپتال کے کمروں میں یہ تکلیف اور زیادہ بڑھ جاتی ہے لیکن اس خاص کمرے میں ایک ایسا ماحول پیدا کرنے کی کوشش کی گئی ہئے جس میں بچوں کا درد کچھ کم ہوسکے۔


ڈاکٹر فیصل کہتے ہیں کہ علاج کے دوران جب سُویاں ان کے نازک جسم میں پیوست ہوجاتی ہیں تو ان کے ساتھ ساتھ انکے والدین کا دل بھی چھلنی ہوجاتا ہے ۔
ڈاکٹر فیصل کہتے ہیں کہ علاج کے دوران جب سُویاں ان کے نازک جسم میں پیوست ہوجاتی ہیں تو ان کے ساتھ ساتھ انکے والدین کا دل بھی چھلنی ہوجاتا ہے ۔


ڈاکٹر فیصل کہتے ہیں کہ علاج کے دوران جب سُویاں ان کے نازک جسم میں پیوست ہوجاتی ہیں تو ان کے ساتھ ساتھ انکے والدین کا دل بھی چھلنی ہوجاتا ہے ۔کھلونوں اور دل بہلانے والی دوسری چیزوں کے بیچ یہ درد ذرا کم محسوس ہوتا ہے۔ اسی غرض سے یہ خاص کمرہ تیار کیا گیا ۔کینسر سے متاثر ان بچوں کے لئے اس خاص کمرے کا قیام ہسبرو انڈیا اور نرگس دت فاونڈیشن کے اشتراک سے کیا گیا ہئے جنہوں نے کھلونے اور دیگر اشیا فراہم کرائے۔ اسپتال انتظامیہ کا کہنا ہئے کہ انھیں اندازہ ہی نہیں تھا کہ اس خالی جگہ کا اس قدر بہتر استعمال ہوگا۔


اسپتال میں ایک خاص کمرہ بنایا گیا ہے جس میں رنگا رنگ کھلونے، کتابیں اور دیگر ایسی اشیاء رکھی گئی ہیں جس سے تکلیف میں مبتلا ان معصوم بچوں کے چہرے پر مسکان آسکے۔
اسپتال میں ایک خاص کمرہ بنایا گیا ہے جس میں رنگا رنگ کھلونے، کتابیں اور دیگر ایسی اشیاء رکھی گئی ہیں جس سے تکلیف میں مبتلا ان معصوم بچوں کے چہرے پر مسکان آسکے۔


اسکمز انتظامیہ نے ڈاکٹر فیصل کی پہل پر انکا بھر پور ساتھ دیا۔ اسکمز کی پی آر او کلثوم نظام کہتی ہیں کہ جب انہوں نے اس کمرے میں درد میں ڈوبے ان بچوں کی آنکھوں میں خوشی کی چمک دیکھی ، وہ جذباتی ہوگیں۔ انہوں نے کہا کہ ایک ڈاکٹر جب مریض کے چہرے پر مسکان دیکھتا ہئے تو وہ اُس کے لئے سب سے بڑی خوشی ہوتی ہے۔
Published by: Mirzaghani Baig
First published: May 16, 2021 07:28 AM IST