உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    حکومت نے جموں۔کشمیر کے کئی دیہاتوں کو ٹورزم زمرے میں لانے کا کیا فیصلہ، لوگوں میں خوشی کی لہر

     ان دیہاتوں کو ٹورزم ولیجس کا درجہ دینے کے فیصلے کا عام لوگوں نے خیر مقدم کیا ہے۔ اس اقدام سے نہ صرف سیاحت اور روزگار کو فروغ ملنے کی امید ہے، بلکہ جموں کشمیر کے تمدن اور ثقافت کا تحفظ بھی ممکن ہوگا۔

    ان دیہاتوں کو ٹورزم ولیجس کا درجہ دینے کے فیصلے کا عام لوگوں نے خیر مقدم کیا ہے۔ اس اقدام سے نہ صرف سیاحت اور روزگار کو فروغ ملنے کی امید ہے، بلکہ جموں کشمیر کے تمدن اور ثقافت کا تحفظ بھی ممکن ہوگا۔

    ان دیہاتوں کو ٹورزم ولیجس کا درجہ دینے کے فیصلے کا عام لوگوں نے خیر مقدم کیا ہے۔ اس اقدام سے نہ صرف سیاحت اور روزگار کو فروغ ملنے کی امید ہے، بلکہ جموں کشمیر کے تمدن اور ثقافت کا تحفظ بھی ممکن ہوگا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir, India
    • Share this:
    اننت ناگ:- حکومت نے دیہی سیاحت کو فروغ دینے کی غرض سے حال ہی میں کئ دیہاتوں کو سیاحتی نقشے پر لانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان دیہاتوں کو ٹورزم ولیجس کا درجہ دینے کے فیصلے کا عام لوگوں نے خیر مقدم کیا ہے۔ اس اقدام سے نہ صرف سیاحت اور روزگار کو فروغ ملنے کی امید ہے، بلکہ جموں کشمیر کے تمدن اور ثقافت کا تحفظ بھی ممکن ہوگا۔
    جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع میں واقع پانزتھ قاضی گنڈ کا علاقہ قدرتی خوبصورتی کا ایک عظیم شاہکار ہے۔ لوگوں کے مطابق یہاں سے 500 چھوٹے چھوٹے چشموں کا سنگم ایک بڑے تالاب نما چشمے میں ہوتا ہے اور ایک دلکش منظر پیش ہوتا ہے۔۔ حال ہی میں سرکار نے پانزتھ کو ولیج ٹورازم کے زمرے میں لاکر علاقے کو سیاحتی نقشے پر لانے کا فیصلہ کیا۔ جسے یہاں کے لوگوں میں خوشی کی لہر پیدا ہو گئ ہے۔ پانزتھ کے اوقاف کمیٹی کے صدر عبدالسلام کا کہنا ہے کہ یہ علاقے کے لوگوں کی ایک دیرینہ مانگ تھی جو آج پوری ہوگئ۔ انہوں نے کہا کہ پانزتھ علاقے میں وہ ہر ایک جز موجود ہے جو قدرتی سیاحتی مقامات کےلیے درکار ہیں اور انہیں امید ہے ولیج ٹورازم میں پانزتھ سرفہرست ہوگا اور سیاحتی نقشے پر یقینی طور پر پانزتھ کا نام ایک دن ضرور چمکے گا۔
    دیہی ترقیات کو عملی جامہ پہنانے اور دیہی سطح پر لوگوں بالخصوص نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنے کی غرض سے سرکار کا یہ فیصلہ بھی اہم مانا جا رہا ہے۔ نہ صرف پانزتھ بلکہ سرکار نے جموں کشمیر کے 20 اضلاع میں سینکڑوں دیہات کو ولیج ٹورازم ڈیولپمنٹ زمرے میں لاکر انہیں ٹورازم ولیجس کا درجہ دیا۔ اس اقدام سے روزگار اور تعمیر و ترقی کی راہیں بھی ہموار ہونگی۔

    دنیا میں موجود ہے طیاروں کا خوفناک قبرستان، لاش بن کر پڑے ہیں اربوں کے Aeroplane


    نوکری ہو تو ایسی! جل پری بننے کیلئے اس خاتون کو ملتے ہیں ہر ماہ اتنے لاکھ روپے اور۔۔۔


    زاہد مختار نامی ایک مقامی ادیب کا کہنا ہے کہ جموں کشمیر واقعی طور پر ہندوستان کی سیاحت کا تاج ہے اور اگر ولیج ٹورازم کے تحت یہاں کے نۓ نۓ مقامات کو سیاحتی نقشے پر لایا جاۓ گا تو اسے نہ صرف یہاں کی سیاحت کو فروغ ملے گا بلکہ سیاحتی صنعت روزگار پیدا کرنے والے شعبوں میں سب سے آگے ہوگی۔ زاہد مختار نے مزید کہا کہ گاؤں دیہات کو سیاحتی اعتبار سے مزید خوبصورت بنانے کے اس پروگرام سے جموں کشمیر کی دیہی صورت اور پرانے تہزیب و تمدن کا تحفظ بھی یقینی ہوگا۔ جبکہ ہیریٹیج ٹورازم کو بھی مزید تقویت حاصل ہوگی۔

    واضح رہے کہ جموں کشمیر میں قدرتی اعتبار سے ایسے کئ مقامات ہیں جو سیاحتی اعتبار سے کافی ذرخیز ہیں۔ تاہم نامناسب تشہیر کی وجہ سے ایسے مقامات عام نظروں سے اوجھل ہیں۔ تاہم ولیج ٹورازم کو فروغ دینے کے سرکاری پروگرام ایسے مقامات کی تشہیر کےلیے بھی کافی سود مند ثابت ہونگے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: