உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کشمیر میں نہیں رک رہا Target Killing کا سلسلہ، ملیٹنٹوں نے گولی مار کر سرپنچ کا کیا قتل

    Target Killing:  کسی نہ کسی روز دہشت گردوں کے حملے میں کوئی نہ کوئی شخص زندگی سے ہاتھ دو بیٹھتا ہے۔ یہاں کبھی اقلیتی طبقہ، کبھی غیر ریاستی مزدور اور کبھی اکثریتی طبقہ نشانے پر رہتا ہے۔ ایسا ہی گوشہ بگ پٹن میں پیش آیا جہاں جمعے کی شام مشتبہ دہشت گردوں نے ایک سرپنچ کو گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔

    Target Killing: کسی نہ کسی روز دہشت گردوں کے حملے میں کوئی نہ کوئی شخص زندگی سے ہاتھ دو بیٹھتا ہے۔ یہاں کبھی اقلیتی طبقہ، کبھی غیر ریاستی مزدور اور کبھی اکثریتی طبقہ نشانے پر رہتا ہے۔ ایسا ہی گوشہ بگ پٹن میں پیش آیا جہاں جمعے کی شام مشتبہ دہشت گردوں نے ایک سرپنچ کو گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔

    Target Killing: کسی نہ کسی روز دہشت گردوں کے حملے میں کوئی نہ کوئی شخص زندگی سے ہاتھ دو بیٹھتا ہے۔ یہاں کبھی اقلیتی طبقہ، کبھی غیر ریاستی مزدور اور کبھی اکثریتی طبقہ نشانے پر رہتا ہے۔ ایسا ہی گوشہ بگ پٹن میں پیش آیا جہاں جمعے کی شام مشتبہ دہشت گردوں نے ایک سرپنچ کو گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔

    • Share this:
    وادی کشمیر میں لوگوں کی ٹارگیٹ کلنگ کا نہ تھمنے والا سلسلہ جاری ہے۔ کسی نہ کسی روز دہشت گردوں کے حملے میں کوئی نہ کوئی شخص زندگی سے ہاتھ دو بیٹھتا ہے۔ یہاں کبھی اقلیتی طبقہ، کبھی غیر ریاستی مزدور اور کبھی اکثریتی طبقہ نشانے پر رہتا ہے۔ ایسا ہی گوشہ بگ پٹن میں پیش آیا جہاں جمعے کی شام مشتبہ دہشت گردوں نے ایک سرپنچ کو گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔

    مشتبہ ملی ٹنٹنوں نے جمعے کی شام کو نمازمغرب کے بعد گوشہ بوگ پٹن میں سرپنچ منظور احمد بنگرو پر نزدیک سے گولیاں چلائیں جس کے نتیجے میں وہ شدید طور پر زخمی ہوا۔ زخمی سرپنچ کو فوری طورپر نزدیکی ہسپتال لے جایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اُنہیں مردہ قرار دیا۔ منظور کی ہلاکت کے بعد علاقے میں خوف ودہشت پائی جارہی ہے۔ واقعے کے فوراً بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن شروع کیا۔

    یہ بھی پڑھیں: امریکی فوج کے چھوڑے ہتھیار کو Pakistan بھیج رہا ہے طالبان، ہندستان کے خلاف استعمال کا خطرہتاہم بظاہر حملہ آور ملی ٹنٹ فرار ہونے میں کامیاب ہوچکے ہیں۔ منظور احمد بنگرو کی ہلاکت پرگوشہ بگ میں ہر آنکھ نم ہے۔ گھر والوں کاکہناہے کہ منظور کاکیا قصور تھاکہ انہیں ہلاک کیاگیا۔ لوگ کہتے ہیں کہ کشمیر میں اب تک بہت خون بہایا گیا اب یہ قتل و غارتگری کا سلسلہ بند ہونا چاہیے۔ وادی کشمیر میں مختلف سیاسی جماعتوں کے لیڈران نے اس واقعے کی مذمت کی۔ جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے بھی سرپنچ کی ہلاکت پر گہرے رنج وغم کا اظہار کیا۔اب ضرورت اس بات کہ کشمیر میں نہتے لوگوں کی ہلاکت کا سلسلہ بند ہونا چاہیے اور امن وامان کی فضا قائم ہو۔

    Published by:Sana Naeem
    First published: