உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu and Kashmir: ٹنگمرگ کی ماہ رخ مجید آرٹ کی دنیا میں منوا رہی ہے اپنا لوہا، ان کے آرٹ کی ہو رہی ہے ستائش

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ کے دیو دگر گاؤں سے تعلق رکھنے والی ماہ رخ مجید آرٹ کی دنیا میں اپنا نام کما رہی ہیں۔ بلکہ اپنے تخلیقی ہنر کے جادو بکھیرنے سے لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کر رہی ہیں اورلوگ بھی انہیں خوب داد دیتے ہیں۔

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ کے دیو دگر گاؤں سے تعلق رکھنے والی ماہ رخ مجید آرٹ کی دنیا میں اپنا نام کما رہی ہیں۔ بلکہ اپنے تخلیقی ہنر کے جادو بکھیرنے سے لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کر رہی ہیں اورلوگ بھی انہیں خوب داد دیتے ہیں۔

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ کے دیو دگر گاؤں سے تعلق رکھنے والی ماہ رخ مجید آرٹ کی دنیا میں اپنا نام کما رہی ہیں۔ بلکہ اپنے تخلیقی ہنر کے جادو بکھیرنے سے لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کر رہی ہیں اورلوگ بھی انہیں خوب داد دیتے ہیں۔

    • Share this:
    کشمیر: شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ کے دیو دگر گاؤں سے تعلق رکھنے والی ماہ رخ مجید آرٹ کی دنیا میں اپنا نام کما رہی ہیں۔بلکہ اپنے تخلیقی ہنر کے جادو بکھیرنے سے لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کر رہی ہیں اورلوگ بھی انہیں خوب داد دیتے ہیں۔ کہا جا رہا ہے کہ ایک تصویر کہانی کو آسانی سے بیان کرتی ہے بلکہ الفاظ کے ذریعہ ایسا ناممکن ہے۔یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ ایک تصویر ہزار الفاظ بیان کرتی ہے۔ گیارہویں جماعت کی طالبہ ماہ رخ مجید ان باتوں کو حقائق سے تبدیل کر رہی ہیں۔

    گیارہویں جماعت میں زیر تعلیم ماہ رخ مجید ایک نظرمیں ہی کسی بھی شخص یا کسی بھی چیزکی تصویر کھینچتی ہیں، جو سب کو حیران کر دیتی ہیں۔ ماہ رخ مجید اپنی ہاتھوں کی صلاحیتوں سے سب کو متاثرکرتی ہیں۔ ماہ رخ مجید کا کہنا ہے کہ انہیں بچپن سے ہی آرٹ بنانے کا شوق تھا اور بچپن سے ہی وہ لکیروں سے کوئی بھی واقعہ اورتصویرکو کھینچتی ہیں۔

    ماہ رخ مجید ایک نظرمیں ہی کسی بھی شخص یا کسی بھی چیزکی تصویر کھینچتی ہیں، جو سب کو حیران کر دیتی ہیں۔
    ماہ رخ مجید ایک نظرمیں ہی کسی بھی شخص یا کسی بھی چیزکی تصویر کھینچتی ہیں، جو سب کو حیران کر دیتی ہیں۔


    ماہ رخ نے نیوز 18 اردو کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا،"میں نے بچپن سے ہی آرٹ سیکھا ہے، اس کے بعد میں اس کام کو چھوڑا نہیں۔ بلکہ اس رفتار کو جاری رکھا، مجھے معاشرے میں خوب داد حاصل ہوتی ہے۔" ماہ رخ مجید کہتی ہیں کہ انہیں کسی بھی میدان میں جانے کی دلچسپی نہیں ہے، سوائے آرٹ کے یعنی وہ ایک آرٹسٹ بننا چاہتی ہیں۔ وہ اسی میں ڈگری حاصل کرنا چاہتی ہیں۔ اسی میں اپنے جذبات و احساسات کی ترجمانی کرنا چاہتی ہیں تاکہ اس میدان میں وہ جموں وکشمیر اور خاص طور پر ملک کا نام روشن کرسکیں۔ ماہ رخ نے کئی ایوارڈ بھی جیتے ہیں۔

    ماہ رخ اب وزیراعظم نریندر مودی اور امت شاہ کی تصویر بھی بنا رہی ہیں۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ وادی کشمیر میں اسیے ہونہار طالب علموں کو پلیٹ فارم فراہم کرنے کی ضرورت ہے اور ساتھ ان کے اندر چھپی صلاحیتوں کو نکھارا جائے تاکہ اس سے ملک کا نام روشن ہوسکے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: