உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر: بارہمولہ میں شراب کی دکان پرگرنیڈ حملہ، ایک ملازم کی موت، تین دیگر زخمی

    جموں وکشمیر کے بارہمولہ میں آج شام گرینیڈ حملہ میں ایک شخص کی موت ہوگئی جبکہ تین دیگر زخمی ہوگئے۔ دہشت گردوں نے بارہمولہ کے دیوان باغ میں ہائی سیکورٹی زون کے قریب واقع ایک شراب کی دوکان کے اندر گرینیڈ پھینکا گیا، جس میں دوکان کے اندر موجود چار افراد زخمی ہوئے۔

    جموں وکشمیر کے بارہمولہ میں آج شام گرینیڈ حملہ میں ایک شخص کی موت ہوگئی جبکہ تین دیگر زخمی ہوگئے۔ دہشت گردوں نے بارہمولہ کے دیوان باغ میں ہائی سیکورٹی زون کے قریب واقع ایک شراب کی دوکان کے اندر گرینیڈ پھینکا گیا، جس میں دوکان کے اندر موجود چار افراد زخمی ہوئے۔

    جموں وکشمیر کے بارہمولہ میں آج شام گرینیڈ حملہ میں ایک شخص کی موت ہوگئی جبکہ تین دیگر زخمی ہوگئے۔ دہشت گردوں نے بارہمولہ کے دیوان باغ میں ہائی سیکورٹی زون کے قریب واقع ایک شراب کی دوکان کے اندر گرینیڈ پھینکا گیا، جس میں دوکان کے اندر موجود چار افراد زخمی ہوئے۔

    • Share this:
    سری نگر: جموں وکشمیر کے بارہمولہ میں آج شام گرینیڈ حملہ میں ایک شخص کی موت ہوگئی جبکہ تین دیگر زخمی ہوگئے۔ دہشت گردوں نے بارہمولہ کے دیوان باغ میں ہائی سیکورٹی زون کے قریب واقع ایک شراب کی دوکان کے اندر گرینیڈ پھینکا گیا، جس میں دوکان کے اندر موجود چار افراد زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو اسپتال تو پہنچایا گیا، لیکن بعد میں ان میں سے ایک کی موت واقع ہوگئی۔

    مہلوک شخص کی پہچان رنجیت سنگھ ولدکشن لال کے طور ہوئی ہے۔ اس  شخص کا تعلق باکرا راجوری سے بتائی گئی ہے۔ دیگر تین افراد بھی شراب کی دوکان کے ملازم بتائے جارہے ہیں۔ زخمیوں کی پہچان گووردھن سنگھ، روی کمار اور گووند سنگھ کے طور کی گئی ہے۔ پولیس کے مطابق شام گئے دو دہشت گرد ایک موٹر سائیکل پر سوار ہوکر شراب کی دوکان کے پاس پہنچے۔ ایک دہشت گرد، جس نے برقعہ پہن رکھا تھا، دوکان کی کھڑکی کے پاس آیا اور گرینیڈ داغ دیا اور بعد میں دونوں وہاں سے فرار ہوگئے۔

     مہلوک شخص کی پہچان رنجیت سنگھ ولدکشن لال کے طور ہوئی ہے۔ اس  شخص کا تعلق باکرا راجوری سے بتائی گئی ہے۔

    مہلوک شخص کی پہچان رنجیت سنگھ ولدکشن لال کے طور ہوئی ہے۔ اس شخص کا تعلق باکرا راجوری سے بتائی گئی ہے۔


    واضح رہےکہ یہ شراب کی دوکان چار روز قبل ہی بارہمولہ میں کھولی گئی تھی۔ گرینیڈ حملہ کے فوری بعد پولیس افسران موقعہ واردات پر پہنچے اور پولیس اور سی آر پی ایف نے علاقے کا محاصرہ کرکے حملہ آوروں کی تلاش شروع کردی، لیکن آخری خبریں آنے تک کوئی کامیابی ہاتھ نہیں لگی تھی۔
    جموں کشمیر میں پچھلے سال ہی کئی نئی شراب کی دوکانیں کھولی گئی ہیں۔ جموں صوبہ اور کشمیر وادی میں یہ نئی شراب کی دوکانیں کھولی گئی ہیں اور کئی مقامات پر ان دوکانوں کے کھولے جانے پر احتجاج بھی ہوا۔ حال ہی میں کشمیر میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ پھر سے شروع ہوا ہے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: