உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کشمیر میں دہشت گردی کا گراف ہورہا ہے کم، اب کشمیر کا ہر شخص کرتا ہے بندوق سے نفرت

    پانڈے نے کہا کہ عوام کے تعاون سے اب کشمیر میں حالات بدل رہے ہیں اور زمینی سطح پر مثبت اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔

    پانڈے نے کہا کہ عوام کے تعاون سے اب کشمیر میں حالات بدل رہے ہیں اور زمینی سطح پر مثبت اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔

    پانڈے نے کہا کہ عوام کے تعاون سے اب کشمیر میں حالات بدل رہے ہیں اور زمینی سطح پر مثبت اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
    فوج کے پندرھویں کور کے جنرل افسر کمانڈنگ لیفٹننٹ جنرل ڈے پی پانڈے نے کہا۔کہ کشمیر میں ملیٹنٹسی کا گراف دن بہ دن کم ہورہا ہے ۔اور یہاں کے لوگ اب ملیٹنٹسی کا ساتھ نہیں دے رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اب کشمیر کا ہر شخص بندوق سے نفرت کرتا ہے اور وہ صرف اپنے بچوں کو صحیح تعلیم دینے چاہیے ہیں اور گن کلچر سے نفرت کررہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر میں اس دو سو ملیٹنٹ سرگرم ہیں اور ان کی سرگرمیوں پر فوج کڑی نگاہ رکھی ہوئی ہے ۔ پانڈے کا کہنا ہے کہ اب کشمیر میں ہر گزرتے دن کے ساتھ دہشت گردی کا گراف کم ہورہا ہے ۔اور چونکہ اسے پہلے کشمیر میں تین سے چار سو ملیٹنٹ سرگرم ہوا کرتے تھے ۔لکین اب یہ تعداد دو سو تک پہچ گئی ہے ۔پانڈے کا کہنا ہے ۔کہ اب لوگ امن کو ترجیی دے رہے ہیں اور تشدد کا راستہ لوگ خود ترک کررہے ہیں ۔

    پانڈے نے کہا کہ عوام کے تعاون سے اب کشمیر میں حالات بدل رہے ہیں اور زمینی سطح پر مثبت اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ فوج کی کوشش ہے کہ نوجوان تشدد کے بجاے اپنے مستقبل سنوانے کی طرف دھیان دیں ۔انہوں نے والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کو صیح راستہ اپنانے کی تربیت دیں تاکہ امن امان برقرار رہے ۔ پانڈے کا کہنا ہے کشمیر میں حالات تیزی سے بدل رہے ہیں اور نہی نسل اب گن کلچر سے نفرت کررہے ہیں اور وہ امن کے ماحول میں اپنا مستقبل بنانے کی کوشش کررہے ہیں ۔

    انہوں نے کہا کہ یہی وجہ ہے کہ اب دہشت گردی کا گراف کم ہورہا ہے کیونکہ اب کشمیر کا ہر نوجوان تشدد کے بجاے امن کے ماحول میں زندگی گزارنا چاہتے ہیں ۔جنرل پانڈے نے تقریب پر بولتے ہوے نوجوانوں سے اپیل کی وہ غلط کاموں سے پرہیز کریں اور تشدد کا راستہ ترک کرکے قومی دایرے میں شامل ہوجائیں میں حالات تیزی سے بدل رہے ہیں اور نہی نسل اب گن کلچر سے نفرت کررہے ہیں اور وہ امن کے ماحول  میں اپنا مستقبل بنانے کی کوشش کررہے ہیں ۔

    انہوں نے کہا کہ یہی وجہ ہے کہ اب دہشت گردی کا گراف کم ہورہا ہے  کیونکہ اب کشمیر کا ہر نوجوان تشدد کے بجاے امن کے ماحول میں زندگی گزارنا چاہتے ہیں ۔جنرل پانڈے نے تقریب پر بولتے ہوے نوجوانوں سے اپیل کی وہ غلط کاموں سے پرہیز کریں اور تشدد کا راستہ ترک کرکے قومی دایرے میں شامل ہوجائیں۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: