உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: قومی ترانہ گانے کے مقابلے کو جموں و کشمیر کے شہریوں کی جانب سے مل رہاہے مثبت ردعمل

    J&K News: قومی ترانہ گانے کے مقابلے کو جموں و کشمیر کے شہریوں کی جانب سے مل رہاہے مثبت ردعمل

    J&K News: قومی ترانہ گانے کے مقابلے کو جموں و کشمیر کے شہریوں کی جانب سے مل رہاہے مثبت ردعمل

    Jammu and Kashmir : ڈائریکٹر اطلاعات اور تعلقات عامہ اکشے لابرو نے کہا کہ اس مقابلے کے تحت جموں و کشمیر کے مختلف حصوں سے تقریباً 9000 اندراجات موصول ہوئے، جن میں تقریباً 50،000 شرکاء شامل تھے جو کہ گزشتہ سال موصول ہونے والی اندراجات سے چار گنا زیادہ ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir | Jammu | Srinagar
    • Share this:
    جموں وکشمیر : ملک کی آزادی کے 75برس مکمل ہونے پر قومی سطح پر آزادی کا امرت مہااتسو پروگرام کے تحت کئی تقریبات اور پروگرام عمل میں لائے جارہے ہیں ۔ رواں برس کی شروعات سے ہی ملک کے دیگر حصوں کے ساتھ ساتھ جموں وکشمیر میں بھی اس تاریخی دن کے حوالے سے کئی پروگرام منعقد کئے جارہے ہیں۔ہر گھر ترنگا پروگرام کے تحت جموں وکشمیر کے اکناف واطراف میں ترنگا لہرانے کی تیاریاں زوروں پر ہیں اور اس عمل میں سیاسی وسماجی اور رضاکار تنظیمیں بڑھ چڑھ کر سرگرم عمل ہیں۔ آزادی کا امرت مہااتسو پروگرام کے تحت ملک کی آزادی سے متعلق مفصل جانکاری اور مجاہدین آزادی کی قربانیوں کو اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ اس تاریخی دن کے بارے میں عام لوگوں خصوصاً نوجوان نسل کو آگاہ کرنے کے لیے پروگرام چلائے گئے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: جموں کے ویئر ہاوس ہول سیل نے کیا مفت قومی پرچم تقسیم کرنے کا علان


    نوجوان نسل کو اس عظیم دن میں عملی طور پر شریک کرنے کے لئے یوٹی انتظامیہ نے قومی ترانہ مقابلے کے لئے آن لائن اندراجات طلب کئے۔اس مقابلے کے تحت حکومت نے جموں و کشمیر کے شہریوں سے کہا تھا کہ وہ گوگل لنک کے ذریعے اپنے اندراجات جمع کر کے قومی ترانہ گانے کے مقابلے میں حصہ لیں۔ اندراجات انفرادی اور گروپ زمروں کے تحت بھی کرانے کی سہولت دستیاب رکھی گئی تھی۔ انفرادی زمرے کے تحت دو ذیلی زمروں کے لوگ جن میں 13-18 سال اور 18 سال سے زیادہ عمر کے افراد کو مقابلے میں حصہ لینے کی اجازت دی گئی جہاں گروپ کیٹیگری کے لیے عمر کی کوئی پابندی نہیں رکھی گئی تھی۔

     

    یہ بھی پڑھئے: جموں و کشمیر میں دنیا کے بلند ترین ریلوے پل کا اوورارک ڈیک تکمیل کے قریب


    اس پہل پر بات کرتے ہوئے ڈائریکٹر اطلاعات اور تعلقات عامہ اکشے لابرو نے کہا کہ اس مقابلے کے تحت جموں و کشمیر کے مختلف حصوں سے تقریباً 9000 اندراجات موصول ہوئے، جن میں تقریباً 50،000 شرکاء شامل تھے جو کہ گزشتہ سال موصول ہونے والی اندراجات سے چار گنا زیادہ ہیں۔ جموں اور کشمیر دونوں ڈویژنوں سے اندراجات موصول ہوئیں ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ سب سے زیادہ اندراجات جنوبی کشمیر کے چار اضلاع سے موصول ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ موصول ہونے والی اندراجات شرکاء کے متعلقہ ڈپٹی کمشنرز کو بھی بھیجی جائیں گی جو ہر زمرے میں سے بہترین تین کا انتخاب کریں گے۔ ہر ضلع سے جیتنے والےفرد یا گروپ یوم آزادی پر اپنے اپنے ضلعی ہیڈکوارٹر میں قومی ترانہ گائیں گے۔

    ضلعی سطح کے فاتحین کی فہرست ڈویژنل کمشنروں کو بھیجی جائے گی جوبعد میں کامیاب ہونے والے شرکاء کی فہرست کو حتمی شکل دیں گے۔مقابلے کے فاتح افراد کو بالترتیب پہلے، دوسرے اور تیسرے انعامات کے لیے 25,000 روپے، 11,000 روپے اور 5,000 روپے کے نقد انعامات کے علاوہ ڈویژنل سطح پر یوم آزادی کی تقریبات میں قومی ترانہ پیش کرنے کا موقع بھی ملے گا۔ ڈیڈ لائن میں توسیع کے لیے موصول ہونے والی درخواستوں کی تعداد کو دیکھتے ہوئے DIPR ’آزادی کا امرت مہوتسو‘ کے تحت مقابلے کا ایک اور دور شروع کرنے کے بارے میں بھی غور کررہا ہے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: