உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اس سال کی Amarnath Yatra توڑ سکتی ہے پرانے سبھی ریکارڈ، یاترا کے مدنظر شرین بورڈ و سرکاری محکمے ہوگئے ہیں محترک

    Shri Amarnath Yatra 2022:   اس سال مقدس گوفہ کے درشن کے لیے یاتریوں کی ریکارڈ تعداد میں آٹھ لاکھ یاتریوں کی آمد متوقع ہے۔ اس کو مدنظر رکھتے ہوئے، شری امرناتھ شرائن بورڈ اور دیگر ایجنسیوں نے آنے والے یاتریوں کے لیے مناسب رہائش، طبی، پینے کے پانی اور دیگر متعلقہ سہولیات کو یقینی بنانے کے لیے پوری طرح تیاریاں کر لی ہیں۔

    Shri Amarnath Yatra 2022: اس سال مقدس گوفہ کے درشن کے لیے یاتریوں کی ریکارڈ تعداد میں آٹھ لاکھ یاتریوں کی آمد متوقع ہے۔ اس کو مدنظر رکھتے ہوئے، شری امرناتھ شرائن بورڈ اور دیگر ایجنسیوں نے آنے والے یاتریوں کے لیے مناسب رہائش، طبی، پینے کے پانی اور دیگر متعلقہ سہولیات کو یقینی بنانے کے لیے پوری طرح تیاریاں کر لی ہیں۔

    Shri Amarnath Yatra 2022: اس سال مقدس گوفہ کے درشن کے لیے یاتریوں کی ریکارڈ تعداد میں آٹھ لاکھ یاتریوں کی آمد متوقع ہے۔ اس کو مدنظر رکھتے ہوئے، شری امرناتھ شرائن بورڈ اور دیگر ایجنسیوں نے آنے والے یاتریوں کے لیے مناسب رہائش، طبی، پینے کے پانی اور دیگر متعلقہ سہولیات کو یقینی بنانے کے لیے پوری طرح تیاریاں کر لی ہیں۔

    • Share this:
    جموں: سالانہ شری امرناتھ یاترا Shri Amarnath Yatra 2022 اس سال 30 جون سے شروع ہوگی۔ اس سال مقدس گوفہ کے درشن کے لیے یاتریوں کی ریکارڈ تعداد میں آٹھ لاکھ یاتریوں کی آمد متوقع ہے۔ اس کو مدنظر رکھتے ہوئے، شری امرناتھ شرائن بورڈ اور دیگر ایجنسیوں نے آنے والے یاتریوں کے لیے مناسب رہائش، طبی، پینے کے پانی اور دیگر متعلقہ سہولیات کو یقینی بنانے کے لیے پوری طرح تیاریاں کر لی ہیں۔ مرکزی حکومت عہدیداروں نے حال ہی میں دعویٰ کیا ہے کہ 43 دن طویل چلنےبوالی شری امرناتھ جی یاترا کے دوران آٹھ لاکھ سے زیادہ یاتری آئیں گے جو 30 جون سے یہ یاترا شروع ہوگی اور اس سال 11 اگست تک جاری رہے گی۔ شری امرناتھ شرائن بورڈ نے اس بات کو یقینی بنانے کے لیے پہلے ہی کئی اقدامات کیے ہیں کہ آنے والے تمام یاتریوں کو یاترا کے دوران ہر طرح کی سہولیات میسر ہوں۔  یاتری نواس جو جموں میں یاتریوں کے لیے پہلا بیس کیمپ ہے، ان دنوں ایک نئی شکل اختیار کر رہا ہے جس میں اضافی بیت الخلاء کی تعمیر کے لیے مزدوروں کو ہر طرف تعینات کیا گیا ہے۔ اسی طرح ایجنسیوں کو پوری یاتری نواس اور اس کے اطراف کو صاف ستھرا رکھنے کے لیے کام میں لگایا گیا ہے۔

    قابل ذکر بات یہ ہے کہ رامبن ضلع کے چندر کوٹ میں شری امرناتھ جی شرائن بورڈ (SASB) کی طرف سے پہلے ہی ایک یاتری نواس تعمیر کیا جا چکا ہے جسے یاتری اس سال یاترا کے دوران استعمال کریں گے۔ یہ کمپلیکس سنٹرل پاور ورکس ڈپارٹمنٹ (سی پی ڈبلیو ڈی) کی طرف سے بگلیہار ہائیڈرو الیکٹرک پروجیکٹ کے قریب دریائے چناب کے کنارے تقریباً 24 کنال اراضی پر 32.16 کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر کیا جا رہا ہے۔



    یاتری نواس میں پہلے سے من گھڑت انجینئرنگ ڈھانچے سے بنی سترہ 3 منزلہ (G 2) ہوسٹل ہوں گے۔ ضرورت یا کسی ہنگامی صورت حال میں اس یاتری نواس میں ایک وقت میں 3600 یاتری ٹھہر سکیں گے، شری امرناتھ جی کے عقیدت مند یاترا کے ہموار انعقاد کے لیے بڑے قدم اٹھانے پر بورڈ سے خوش ہیں۔ جے اینڈ کے کے ایل جی منوج سنہا پہلے ہی تمام متعلقہ ایجنسیوں جیسے شری امرناتھ شرائن بورڈ، محکمہ سیاحت، جے ایم سی، کے ساتھ رابطے میں ہیں۔ اس سال کی سالانہ امرناتھ جی یاترا پر امن طور سے چلنے کے لیے محکمہ صحت اور سیکورٹی ایجنسیاں۔ اب یہ سب کوویڈ کی صورتحال پر منحصر ہوگا۔ اگر یہ برقرار رہا تو امید ہے کہ یاتریوں کا زبردست رش دیکھنے کو ملے گا، ورنہ یاترا پچھلے دو سالوں کی طرح متاثر ہو سکتی ہے۔

    Kashmir Valley کے مختلف اضلاع میں ژالہ باری، میوہ صنعت کو پہنچا شدید نقصان،



    جانوروں سے انسانوں میں پھیل رہاہے RVFوائرس، Kashmir Scientis کی کھوج سے اس کے علاج کی امید

    دوسری جانب کاروبار سے وابستہ  اس سال کافی خوش نظر آرہے ہیں کچھ کاروباریوں نے نیوز ایٹین اردو کو بتایا کہ پچھلے دو سال میں کویڈ کی وجہ سے یاترا معطل رہی تھی جس کی وجہ سے انہیں باری مالی نقصان سے دوچار ہونا پڑا تھا تاہم اس سال انہیں یاترا پرامن اور خوش اسلوبی سے چلنے کی امید ہے تاکہ ان کے کاروبار کو وسط ملے گی۔۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: