உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر میں پھر نظر آئے دو مشتبہ ڈرون، پونچھ میں ملا پی آئی اے لکھا غبارہ

    جموں وکشمیر میں پھر نظر آئے دو مشتبہ ڈرون، پونچھ میں ملا پی آئی اے لکھا غبارہ

    جموں وکشمیر میں پھر نظر آئے دو مشتبہ ڈرون، پونچھ میں ملا پی آئی اے لکھا غبارہ

    جموں وکشمیر (Jammu-Kashmir) میں 27 جون کو ہندوستانی ایئر بیس اسٹیشن پر ہوئے حملے میں ڈرون (Drone) کے استعمال کے بعد سے مسلسل سرحد پر ڈرون دیکھے جا رہے ہیں۔ واضح رہے کہ پہلا مشتبہ ڈرون جموں کے کالوچک علاقے میں دیکھا گیا جبکہ دوسرا ڈرون کٹھوعہ میں دکھائی دیا۔

    • Share this:
      سری نگر: جموں وکشمیر (Jammu-Kashmir) کے انخور سیکٹر (Akhnoor Sector) میں جمعہ کی صبح مار گرائے گئے ڈرون کے بعد شام کو جموں میں دو مزید ڈرون دکھائی دیئے۔ ان دو مشتبہ ڈرون کے علاوہ لائن آف کنٹرول کے پاس پونچھ سیکٹر میں پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنس (پی آئی اے) لکھا ہوا ایک غبارہ بھی ملا ہے۔ اس غبارہ میں پاکستان (Pakistan) کا پرچم بنا ہوا ہے۔ جموں وکشمیر میں 27 جون کو ہندوستانی ایئر فورس اسٹیشن پر ہوئے حملے میں ڈرون کے استعمال کے بعد سے مسلسل سرحد پر ڈرون دیکھے جا رہے ہیں۔

      اطلاعات کے مطابق، سیکورٹی اہلکاروں کو جموں ڈویژن میں جمعہ کی شام کو دو ڈرون دکھائی دیئے۔ پہلا مشتبہ ڈرون جموں کے کالوچک علاقے میں دیکھا گیا جبکہ دوسرا ڈرون کٹھوعہ میں دکھائی دیا۔ جموں میں مسلسل ڈرون دکھائی دینے کے بعد سے سیکورٹی اہلکاروں کو الرٹ کر دیا گیا ہے۔

      جموں وکشمیر میں جمعہ کی صبح ہندوستانی سیکورٹی اہلکاروں کو اس وقت بڑی کامیابی ہاتھ لگی، جب انہوں نے انخور سیکٹر میں ایک ڈرون کو مار گرایا۔ جموں وکشمیر پولیس کی طرف سے کی گئی فائرنگ کے بعد ڈرون زمین پر گر پڑا۔ ڈرون سے پولیس نے 5 کلو گرام آئی ای ڈی برآمد کیا ہے۔ آئی ای ڈی کو ڈرون کی مدد سے دہشت گردوں تک پہنچانے کی کوشش کی۔ ڈرون کا وزن 17 کلو گرام بتایا جا رہا ہے جبکہ اس کا ڈائے میٹر 6 فٹ ہے۔

      ابھی تک موصولہ اطلاعات کے مابق، انخور سیکٹر میں جس آئی ای ڈی کو ڈرون سے گرایا گیا تھا، اس کے تار ہندوستانی ایئر بیس اسٹیشن کے ہوائی اڈے سے میل کھاتے ہیں۔ ان آئی ای ڈی کو دیکھنے کے بعد اس بات کے واضح اشارے ملے ہیں کہ ہوائی اڈے پر آئی ای ڈی گرانے کے لئے ڈرون کا ہی استعمال کیا گیا تھا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: