உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: پوش کریری اننت ناگ میں انکاونٹر کے دوران حزب المجاہدین کے دو دہشت گرد ہلاک

    J&K News: پوش کریری اننت ناگ میں انکاونٹر کے دوران حزب المجاہدین کے دو دہشت گرد ہلاک

    J&K News: پوش کریری اننت ناگ میں انکاونٹر کے دوران حزب المجاہدین کے دو دہشت گرد ہلاک

    Jammu and Kashmir : جموں و کشمیر پولیس نے 2021 میں محمد سلیم نامی ٹیریٹوریل آرمی جوان کے قتل میں ملوث حزب المجاہدین کے دو ملی ٹینٹوں کو مار گرایا ہے ۔ پولیس نے کافی وقت سے سرگرم ان دونوں دہشت گردوں کی ہلاکت کو ایک بڑی کامیابی قرار دیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir | Jammu | Srinagar | Anantnag
    • Share this:
    جنوبی کشمیر: جموں و کشمیر پولیس نے 2021 میں محمد سلیم نامی ٹیریٹوریل آرمی جوان کے قتل میں ملوث حزب المجاہدین کے دو ملی ٹینٹوں کو مار گرایا ہے ۔ پولیس نے کافی وقت سے سرگرم ان دونوں دہشت گردوں کی ہلاکت کو ایک بڑی کامیابی قرار دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق اننت ناگ پولیس، فوج کی 3 راشٹریہ رائفلز اور سی آر پی ایف نے ملی ٹینٹوں کی موجودگی کی ایک مصدقہ اطلاع کی بنا پر پوش کریری علاقے کا محاصرہ کیا اور اس دوران وہاں پر چھپے ہوئے ملی ٹینٹوں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کی اور جوابی فائرنگ کے بعد ایک مختصر سے انکاونٹر کے دوران دونوں دہشت گردوں کو مار گرایا گیا۔ مارے گئے ملی ٹینٹوں کی شناخت دانش بٹ عرف کوکب دری اور بشارت نبی کے طور پر ہوئی ہے۔

    پولیس کے مطابق دونوں دہشت گرد عام شہریوں اور ٹیریٹوریل آرمی کے ایک جوان محمد سلیم کے قتل میں ملوث تھے۔ پولیس نے اے ڈی جی پی کا حوالہ دیتے ہوئے ٹویٹ میں اس بات کی جانکاری دی کہ دونوں ملی ٹینٹ بجبہاڑہ اننت ناگ میں 9 اپریل 2021 کو فوج کی ٹی اے ونگ کے ایک فوجی محمد سلیم پر نزدیک سے حملہ کرنے اور اسے قتل کرنے میں ملوث تھے۔ پولیس نے اس بات کی بھی جانکاری دی کہ کافی وقت سے جنوبی کشمیر میں سرگرم یہ دونوں ملی ٹینٹ دیگر تخریب کار کاروائیوں کے علاوہ 29 مئی 2021 کو جبلی پورہ بجبہاڑہ میں دو عام شہریوں کے قتل میں بھی ملوث تھے جبکہ دونوں ملیٹینٹ کافی عرصہ سے پولیس اور دیگر سیکورٹی فورسز کو مطلوب تھے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: PoK سے دراندازی کیلئے ISI نے بنائے ہیں 9 لانچنگ پیڈس، 150 دہشت گردوں کو کیا تیار


    پولیس نے دونوں کی ہلاکت کو بڑی کامیابی اور معنی خیز قرار دیا ، کیونکہ انکاونٹر بجبہاڑہ -پہلگام سڑک پر رونما ہوا ، جو سیکورٹی کے اعتبار سے کافی حساس تصور کی جاتی ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق دونوں ملی ٹینٹ اسی علاقے میں ایک بڑی تخریبی کارروائی انجام دینے کی کوشش میں تھے۔ واضح رہے کہ انکاونٹر کے بعد کافی دیر تک پولیس اور سیکورٹی افواج نے علاقے میں کامبنگ آپریشن چلایا اور اس بات کو یقینی بنایا کہ علاقے میں اور کوئی ملیٹینٹ موجود نہیں ہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: 20 سال میں پہلی مرتبہ پاکستان نے لشکر دہشت گرد کی لاش کو قبول کیا


    سیکورٹی فورسز نے اس علاقے کی جانب لوگوں کو نقل و حمل نہ کرنے کی ہدایت دی ہے تاکہ علاقہ کو مکمل طور پر سینیٹائز کیا جا سکے۔ اس سے قبل بھی گزشتہ دنوں جنوبی کشمیر میں کئی انکاونٹر رونما ہوئے۔ جبکہ حال ہی میں جموں و کشمیر کے ڈی جی پی  دلباغ سنگھ نے پولیس کو ملیٹینسی کے خاتمے کیلئے آخری مراحل طے کرنے کی سخت ہدایت دی تھی۔

    ڈی جی پی نے کہا تھا کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ ملیٹینسی کا مکمل طور پر خاتمہ ہو۔ جبکہ پولیس کو یہ بھی ہدایت دی گئی کہ فوج اور دیگر سیکورٹی فورسیز کے ساتھ مشترکہ حکمت عملی کو مزید مستحکم بنایا جائے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: