உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

     جموں۔کشمیر میں صحافی بن گیا تھا Terrorist، سکیورٹی فورسز نے ساتھی سنگ کیا ڈھیر، برآمد ہوا پریس کارڈ!

    Youtube Video

    Encounter in Srinagar: مارے گئے دو ملی ٹنٹوں میں سے ایک کے پاس سے صحافتی شناختی کارڈ برآمد کیا گیا ہے۔ وہ ایک سال پہلے مقامی ویب پورٹل چلاتا تھا اور بعد میں  ملی ٹنٹ صفوں میں شامل ہوا تھا۔

    • Share this:
    jammu and kashmir: سرینگر کے رعناواری علاقہ میں آج صبح ایک انکاؤنٹر میں دو ملی ٹنٹ مارے گئے۔ مارے گئے دونوں ملی ٹنٹوں کا تعلق لشکر سے بتایا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق ملی ٹنٹوں کی موجودگی کی خبر کے بعد پولیس نے رات کو پورے علاقہ کو گھیرے میں لے لیا اور جو ہی سیکورٹی فورسز نے ملی ٹنٹوں پر گھیرا تنگ کیا ، انھوں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کی اور جوابی فائرنگ میں دو ملی ٹنٹ مارے گئے۔ مارے گئے ملی ٹنٹوں کا تعلق جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع سے بتایا گیا ہے۔

    پولیس کے مطابق ایک ملی ٹنٹ کی پہچان رئیس احمد بٹ ولد عبدل حمید بٹ ساکنہ شاہ آباد ویری ساکنہ بجبہارہ کے طور ہوئی تھی جبکہ دوسرے ملی ٹنٹ کی پہچان ہلال احمد ولد سفیر احمد ساکنہ کٹھی پورہ بجبہارہ کے طور ہوئی ہے۔ دونوں سی کٹیگری کے ملی ٹنٹ بتائے گئے ہیں۔ رئیس احمد کے پاس سے ایک شناختی کارڈ ملا ہے جسمیں اسے صحافی بتایا گیا ہے۔

    یہ بھی پڑھیں: امریکہ نے ہندستان کا سفر کرنے والے اپنے شہریوں کیلئے جاری کیTravel Advisory، جموں۔کشمیر نہیں جانے کی صلاح

    Pakistan Blasphemy: توہین رسالت کے الزام میں مدرسے میں خواتین نے ساتھی ٹیچر کا کاٹ دیا گلا، جانئے پورا معاملہ

    دراصل رئیس ملی ٹینسی میں شامل ہونے سے پہلے اننت ناگ میں ایک ویب پورٹل چلاتا تھا۔ وہ بعد میں اگست 2021 میں ملی ٹنٹ صفوں میں شامل ہوا تھا۔ ہلال احمد نے اکتوبر میں ملی ٹینسی میں شمولیت کی تھی۔ مارے گئے ملی ٹنٹ کئی تخریبی کاروائیوں میں شامل بتائے جارہے ہیںکشمیر میں پچھلے کئی دنوں سے ملی ٹنٹ چھٹی پر گئے پہنچے سیکورٹی فورسز اور پولیس کے اہلکاروں کے ساتھ ساتھ کئی پنچایتی نمائیندوں اور کچھ عام لوگوں کو بھی نشانہ بناتے رہے ہیں

    یہ بھی پڑھیں: عمران خان کے گھر زندہ مرغے جلا رہی ہیں بیوی بشریٰ، کیا کالے جادو سے بچے گی حکومت؟ پاس ہیں دو جن!
    Published by:Sana Naeem
    First published: