உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: ستمبر کے آخر میں جموں و کشمیر کا دورہ کرسکتے ہیں مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ

    J&K News: ستمبر کے آخر میں جموں و کشمیر کا دورہ کرسکتے ہیں مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ ۔ فائل فوٹو ۔

    J&K News: ستمبر کے آخر میں جموں و کشمیر کا دورہ کرسکتے ہیں مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ ۔ فائل فوٹو ۔

    Jammu and Kashmir : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ ستمبر کے آخر میں جموں و کشمیر کے دورے پر آسکتے ہیں۔ پارٹی ذرائع کے مطابق اپنے دورہ جموں و کشمیر کے دوران امت شاہ جموں و کشمیر کی سلامتی صورتحال کا جائزہ لینے کے علاوہ یوٹی میں جاری مختلف ترقیاتی کاموں کی پیش رفت کا بھی جائزہ لیں گے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir | Jammu | Srinagar
    • Share this:
      امباردار

      جموں : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ ستمبر کے آخر میں جموں و کشمیر کے دورے پر آسکتے ہیں۔ پارٹی ذرائع کے مطابق اپنے دورہ جموں و کشمیر کے دوران امت شاہ جموں و کشمیر کی سلامتی صورتحال کا جائزہ لینے کے علاوہ  یوٹی میں جاری مختلف ترقیاتی کاموں کی پیش رفت کا بھی جائزہ لیں گے۔ باور کیا جارہا ہے کہ امت شاہ اس دورے کے دوران جموں میں دو اور کشمیر میں ایک عوامی ریلی سے بھی خطاب کریں گے۔ اگرچہ ان کے اس دورے کے حتمی تاریخوں کا ابھی تک پتہ نہیں چل سکا ہے ۔ تاہم ان کا یہ دورہ اس لحاظ سے کافی اہمیت کا حامل مانا جارہا ہے کہ اس وقت جموں و کشمیر کی سیاست میں ایک نیا ماحول پیدا ہوا ہے۔

      سینئر کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد کے ذریعہ کانگریس پارٹی چھوڑنے کے بعد یوٹی میں ایک نئی سیاسی ہلچل پیدا ہوگئی ہے۔ اگرچہ یہاں کی مختلف علاقائی پارٹیاں غلام نبی آزاد کے ذریعہ نئی سیاسی پارٹی کے قیام سے ان پر کوئی اثر پڑنے سے صاف انکار کر رہے ہیں ۔ تاہم اندر ہی اندر یہ سبھی سیاسی جماعتیں پریشان ہیں کیونکہ یہ بات سچ ہے کہ غلام نبی آزاد کی قیادت والی نئی سیاسی پارٹی کے معرض وجود میں آنے سے ان پارٹیوں کے ووٹ بینک پر نمایاں اثر پڑے گا۔

       

      یہ بھی پڑھئے: پاکستان ہمارے نوجوانوں کو منصوبہ بند سازش کے تحت منشیات کی طرف دھکیل رہا: منوج سنہا


      گزشتہ دو چار روز سے جموں و کشمیر سے تعلق رکھنے والے کانگریس کے سینئر لیڈران اور ورکروں کی طرف سے کانگریس چھوڑ کر غلام نبی آزاد کو اپنی حمایت دینے کا سلسلہ بدستور جاری ہے اور خود غلام نبی آزاد تین ستمبر کو جموں میں اپنی پہلی ریلی کرنے جارہے ہیں ، جس دوران کہا جارہا ہے کہ وہ اپنی نئی سیاسی پارٹی کا اعلان کریں گے۔ ںہ صرف یوٹی کے کانگریس لیڈران بلکہ دیگر سیاسی جماعتوں کے لیڈران بھی اپنی اپنی پارٹیوں سے مستعفی ہوکر غلام نبی آزاد کی حمایت کا اعلان د کر چکے ہیں۔

       

      یہ بھی پڑھئے: سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پر سڑک حادثہ، دو کی موت، تین زخمی


      ایسے میں یوٹی کی مختلف سیاسی جماعتوں میں ہلچل پیدا ہوگئی ہے اور سبھی پارٹیاں اپنے کیڈر کو متحرک رکھنے کی تگ و دو میں لگی ہیں۔ غلام نبی آزاد کے ذریعہ نئی پارٹی کے قیام سے نہ صرف یہاں کی اپوزیش جماعتوں بلکہ اس کا سیدھا اثر بی جے پی پر بھی پڑ سکتا ہے۔ خاص کر جموں خطے میں غلام نبی آزاد بی جے پی کو کافی نقصان پہنچا سکتے ہیں، جو کہ بی جے پی کا گڑھ مانا جارہا ہے۔ جموں خطے کی چناب ویلی سے تعلق رکھنے والے غلام نبی آزاد دونوں جموں اور کشمیر میں لوگوں کا اعتماد رکھتے ہیں، کیونکہ بحثیت جموں و کشمیر وزیر اعلی غلام نبی آزاد نے ترقیاتی عمل کی شروعات کرکے لوگوں کے دل جیت لئے ہیں۔

      یہی وجہ ہے کہ امت شاہ کا دورہ جموں و کشمیر کافی اہمیت کا حامل ہے کیونکہ بی جے پی کی اعلی قیادت بھی اس فکر میں ہے کہ وہ کیسے اپنے ووٹروں کو اپنی طرف برقرار رکھیں۔ اس لئے امت شاہ جموں و کشمیر کے اپنے دورے کے دوران پردیش بی جے پی کے لیڈران سے صلاح مشورہ کریں گے اور پارٹی کو مضبوط رکھنے کے طور طریقوں پر غور و خوض کریں گے۔  اسی دوران پردیش بی جے پی نے بھی اپنی سیاسی سرگرمیوں مں تیزی لائی ہے اور پارٹی لیڈران مختلف عوامی میٹنگوں میں شرکت کرکے پارٹی کے کیڈر کو مزید سرگرم کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: