ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر : فوج کے جوانوں کا یہ ویڈیو دیکھ کر آپ بھی کریں گے سلام

برف سے ڈھکی ہوئی سڑکوں کے بیچ فوج کے جوانوں نے ایک حاملہ خاتون کو کندھے پر اٹھاکر اسپتال پہنچایا ۔ حالانکہ اس سے پہلے بھی ایسی کئی خبریں سامنے آچکی ہیں ، جس میں جوانوں نے آگے بڑھ کر عام لوگوں کی مدد کی ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر : فوج کے جوانوں کا یہ ویڈیو دیکھ کر آپ بھی کریں گے سلام
جموں و کشمیر : فوج کے جوانوں کا یہ ویڈیو دیکھ کر آپ بھی کریں گے سلام

سرحد پر ہتھیاروں سے لیس فوج کے جوان صرف دشمنوں کو منہ توڑ جواب دینے کیلئے نہیں ہوتے ہیں ، بلکہ وہ ملک کے عام شہریوں کا دکھ دور کرنے میں بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لیتے ہیں ۔ بہادر جوانوں کو کبھی کبھی بندوق چھوڑ کر دوسرے طریقوں سے بھی شہریوں کی مدد کرنی پڑتی ہے ۔ اس کی ایک مثال جمعہ کو دیکھنے کو ملی ، جب جموں و کشمیر کے کپواڑہ ضلع میں ایک حاملہ خاتون کو جوانوں نے اپنے کندھے پر اٹھاکر اسپتال پہنچایا ۔


نیوز ایجنسی اے این آئی نے جمعہ کو فوج کے جوانوں کا ایک ویڈیو شیئر کیا ہے ۔ ایجنسی کے مطابق ویڈیو جموں و کشمیر کے کپواڑہ ضلع کا ہے ۔ جانکاری کے مطاق برف سے ڈھکی ہوئی سڑکوں کے بیچ فوج کے جوانوں نے ایک حاملہ خاتون کو اپنے کندھوں پر اٹھاکر اسپتال تک پہنچایا ۔ ویڈیو میں واضح طور پر نظر آرہا ہے کہ جوان ایک کھاٹ کی مدد سے خاتون کو اٹھاکر برف کو کاٹتے ہوئے گزر رہے ہیں ۔




حالانکہ ایسا پہلی مرتبہ نہیں ہے جب جوان عام لوگوں کی مدد کیلئے آگے آئے ہیں ۔ کچھ دنوں پہلے فوجی جوان اننت ناگ ضلع میں سرچ آپریشن چلارہے تھے ۔ فوج کو علاقہ میں دہشت گردوں کے چھپے ہونے کی خبر ملی تھی ۔ اسی دوران فوج کو ایک گیارہ سال کی بچی کے بیمارے ہونے کی بات پتہ چلی ۔ نیوز ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق اس اطلاع کے بعد آپریشن کو درمیان میں ہی روک کر بچی کی مدد کی تیاری شروع کی گئی ۔ ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق بچی کی دیکھ ریکھ کیلئے فوجی جوانوں کے ساتھ ایک میڈیکل افسر کو بھیجا گیا ۔

راشٹریہ رائفلز کے ایک ریزیڈنٹ میڈیکل افسر کے مطابق ایک بچی فرش پر پڑی ہوئی تھی اور اس کے دانت اندر دھنسے ہوئے تھے اور نبص کی رفتار تیز تھی ، جو دورہ پڑنے کا اشارہ تھا ۔ شرما نے پی ٹی آئی کو بتایا کہ میں نے جانچ کی ، نبض کو چھوڑ کر سب نارمل تھا ۔ نبض تیز تھی ، اس کو دورہ پڑا تھا ۔ توجہ اس کی حالت کو مستحکم کرنے پر تھی ، جب ایسا ہوگیا تو اس کے والدین کو اس کو ضلع اسپتال لے جانے کیلئے کہا گیا تاکہ وہ وہاں ڈاکٹروں کو دکھا سکیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Mar 12, 2021 05:57 PM IST