ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ہندوستان کے ساتھ جنگ بندی پر کیوں مجبور ہوا پاکستان ، سی ڈی ایس بپن راوت نے دیا یہ جواب

چیف آف ڈیفنس اسٹاف بپن راوت (CDS Gen Bipin Rawat) نے کہا کہ ایل او سی پر جنگ بندی لاگو ہے جو ایک مثبت بات ہے ، لیکن ٹھیک اسی وقت میں ہم ہتھیاروں کی دراندازی بھی دیکھ رہے ہیں ۔ یہ دراندازی ڈرون کا استعمال کرکے کی جارہی ہے ۔ یہ دونوں ممالک کے درمیان امن کیلئے صحیح نہیں ہے ، کیونکہ اس سے امن عمل متاثر ہوتا ہے ۔

  • Share this:
ہندوستان کے ساتھ جنگ بندی پر کیوں مجبور ہوا پاکستان ، سی ڈی ایس بپن راوت نے دیا یہ جواب
ہندوستان کے ساتھ جنگ بندی پر کیوں مجبور ہوا پاکستان ، سی ڈی ایس بپن راوت نے دیا یہ جواب ۔ فائل فوٹو ۔

نئی دہلی : ہندوستان اور پاکستان کے درمیان ایل او سی پر گزشتہ کئی ماہ سے جنگ بندی لاگو ہے ۔ جنگ بندی کا یہ فیصلہ باہمی اتفاق سے کیا گیا ، لیکن اس کے باوجود ہندوستان کے اندر ہتھیار بھیجنے کی ناپاک کوششیں جاری ہیں ۔ چیف آف ڈیفنس اسٹاف بپن راوت نے کہا کہ ایل او سی پر جنگ بندی لاگو ہے جو ایک مثبت بات ہے ، لیکن ٹھیک اسی وقت میں ہم ہتھیاروں کی دراندازی بھی دیکھ رہے ہیں ۔ یہ دراندازی ڈرون کا استعمال کرکے کی جارہی ہے ۔ یہ دونوں ممالک کے درمیان امن کیلئے صحیح نہیں ہے ، کیونکہ اس سے امن عمل متاثر ہوتا ہے ۔


بپن راوت نے کہا کہ اگر امن متاثر ہوتا ہے تو ہم پھر یہ نہیں کہہ پائیں گے کہ جنگ بند صحیح طریقہ سے کام کررہا ہے ۔ جنگ بندی کا مطلب یہ نہیں ہے کہ سرحد پر امن قائم رہے ، لیکن داخلی حصوں میں حالات خراب کرنے کی کوشش کی جائے ، ہم چاہتے ہیں کہ پورے جموں و کشمیر خطہ میں امن برقرار رہے ۔


جنگ بندی کیلئے کیوں مانا پاکستان


اس کے علاوہ سی ڈی ایس بپن راوت نے اس بات کا بھی جواب دیا کہ پاکستانی فوج جنگ بندی کیلئے کیوں راضی ہوئی ؟ انہوں نے کہا کہ اس کی کئی وجوہات ہوسکتی ہیں ۔ گزشتہ کچھ سالوں میں بڑی تعداد میں جنگ بندی کی خلاف ورزی کے معاملات ہوئے ہیں ۔ ان واقعات میں چھوٹے ہتھیار نہیں بلکہ ہائی کیلیبر ہتھیاروں کا بھی استعمال ہوا ، جس کی وجہ سے پاکستانی فوج کے ڈیفنس انفراسٹرکچر کو بڑا نقصان ہوا اور ان کے فوجیوں کی موت بھی ہوئی ۔

چونکہ پاکستانی فوج گاوں میں عام لوگوں کے درمیان سے بھی آپریٹ کرتی ہے ، تو ایسے میں عام لوگوں اور ان کے پالتو جانور بھی اس سے متاثر ہوئے ۔ جب ایسا ہوتا ہے تو عام لوگوں کی طرف سے دباو بڑھتا ہے ۔ یہ بھی ایک وجہ ہوسکتی ہے ۔

سی ڈی ایس راوت نے کہا کہ اگر آپ ان معاملات کی طرف دیکھیں گے جو پاکستان کو مشکل میں ڈال رہے ہیں تو سمجھ میں آئے گا کہ ان کی وجہ سے پاکستان کو لگتا ہے کہ ہندوستان کے ساتھ امن عمل سب سے بہتر ہے ۔ اگر وہ امن چاہتے ہیں تو یہ اچھی بات ہے ، کیونکہ یہ دونوں ہی فریق کیلئے بہتر ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jun 22, 2021 11:51 PM IST