شرمناک ! 20 سالہ لڑکی کی پہلے کی آبروریزی ، پھر انسٹاگرام پر شیئر کردی فحش تصویریں

ملزم پیشہ سے باورچی ہے اور اس پر 20 سالہ لڑکی کی آبروریزی اور اس کی فحش تصویریں انٹرنیٹ پر وائرل کرنے کا الزام لگا ہے ۔

Oct 14, 2019 06:04 PM IST | Updated on: Oct 14, 2019 06:04 PM IST
شرمناک ! 20 سالہ لڑکی کی پہلے کی آبروریزی ، پھر انسٹاگرام پر شیئر کردی فحش تصویریں

شرمناک ! 20 سالہ لڑکی کی پہلے کی آبروریزی ، پھر انسٹاگرام پر شیئر کردی فحش تصویریں

مہاراشٹر کے تھانہ ضلع سے پولیس نے 22 سالہ آبروریزی کے ملزم کو گرفتار کیا ہے ۔ ملزم پیشہ سے باورچی ہے اور اس پر 20 سالہ لڑکی کی آبروریزی اور اس کی فحش تصویریں انٹرنیٹ پر وائرل کرنے کا الزام لگا ہے ۔ پولیس کے مطابق ملزم اترا کھنڈ کے ٹہری - گڑھوال ضلع کا رہنے والا ہے ۔ اس کا نام گروچرن پریتم ساہا ہے ۔ وہ تھانہ کے ایک ہوٹل میں باورچی کے طور پر کام کرتا تھا ۔

پولیس نے بتایا کہ کچھ وقت پہلے ملزم نے شہر میں انگریزی سکھانے والی کلاس میں داخلہ لیا تھا ، جہاں پر 20 سالہ لڑکی بھی آتی تھی ۔ نوپاڑا پولیس تھانہ کے سینئر افسر انل مانگلے کے مطابق اس سال اپریل میں ملزم لڑکی کو شادی کا جھانسہ دے کر ایک لاج میں لے گیا ، جہاں اس نے اس کی مبینہ طور پر آبروریزی کی اور کچھ قابل اعتراض تصاویر کھینچ لیں ۔

Loading...

ملزم نے یہ تصویریں لڑکی کے بھائی اور اس کے دوستوں کے انسٹاگرام اکاونٹ پر پوسٹ کردیں ۔ اس کے بعد لڑکی نے گزشتہ ہفتہ پولیس میں شکایت درج کروائی ۔ جانچ کے دوران پولیس نے ملزم کو ہفتہ کو اترا کھنڈ سے گرفتار کرلیا ۔ اس کے خلاف آئی پی سی کی مختلف دفعات کے تحت معاملہ درج کیا گیا ہے ۔

Loading...