چھیڑ چھاڑ کے الزام میں نابالغ لڑکی نے بھجوایا تھا جیل ، باہر آنے کے بعد طمنچہ کی نوک پر کی آبروریزی

متاثرہ کے مطابق وہ گھر پر اکیلی تھی ، ماں باہر دکان سے سامنے لینے کیلئے گئی تھی ، اسی دوران ملزم گھر میں داخل ہوگیا اور برتن دھو رہی 14 سالہ نابالغ لڑکی کی آبروریزی کی ۔ اس کے بعد جان سے مارنے کی دھمکی دیتے ہوئے فرار ہوگیا ۔

Sep 26, 2019 05:46 PM IST | Updated on: Sep 26, 2019 05:46 PM IST
چھیڑ چھاڑ کے الزام میں نابالغ لڑکی نے بھجوایا تھا جیل ، باہر آنے کے بعد طمنچہ کی نوک پر کی آبروریزی

چھیڑ چھاڑ کے الزام میں نابالغ لڑکی نے بھجوایا تھا جیل ، باہر آنے کے بعد اب کی آبروریزی

اترپردیش کے باندہ ضلع کے مٹوندھ تھانہ حلقہ میں ایک نابالغ لڑکی کے ساتھ طمنچہ کی نوک پر آبروریزی کا واقعہ سامنے آیا ہے ۔ نابالغ کا الزام ہے کہ ایک ماہ پہلے ملزم نے اس کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی تھی اور اس کی شکایت پر پولیس نے ملزم کو گرفتار کرکے جیل بھیج دیا تھا ۔ کچھ دنوں پہلے وہ جیل سے چھوٹ کر باہر آیا تھا ۔ الزام ہے کہ بدھ کو ملزم نابالغ لڑکی کے گھر میں گھس گیا اور طمنچہ کی نوک پر اس کی آبروریزی کی ۔ متاثرہ کی شکایت پر پولیس نے معاملہ درج کر کے جانچ شروع کردی ہے ۔ پولیس نے متاثرہ کو میڈیکل کیلئے ضلع اسپتال بھیج دیا ہے ۔

الزام ہے کہ نابالغ لڑکی جب اپنی فریاد لے کر تھانہ انچارج کے پاس پہنچی تو پولیس نے ٹال دیا ۔ تھانہ انچارج نے متاثرہ لڑکی کو دو گواہ لے کر آنے کے بعد مقدمہ درج کرنے کی بات کہی ۔ پولیس نے متاثرہ کا میڈیکل ٹیسٹ کرانا بھی ضروری نہیں سمجھا اور مبینہ طور پر تھانہ سے ہی بھگا دیا ۔

Loading...

متاثرہ کے مطابق وہ گھر پر اکیلی تھی ، ماں باہر دکان سے سامنے لینے کیلئے گئی تھی ، اسی دوران ملزم گھر میں داخل ہوگیا اور برتن دھو رہی 14 سالہ نابالغ لڑکی کی آبروریزی کی ۔ اس کے بعد جان سے مارنے کی دھمکی دیتے ہوئے فرار ہوگیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ ملزم نوجوان 15 دن پہلے ہی جیل سے چھوٹ کر آیا تھا اور اس نے نابالغ کو اپنی ہوس کا شکار بنالیا ۔ اترا کے سی او راجیو سنگھ نے بتایا کہ ایک 14 سال کی نابالغ لڑکی کی طرف سے آبروریزی کی تحریر دی گئی ہے ۔ اس معاملہ میں پولیس نے مقدمہ درج کرکے جانچ شروع کردی ہے ۔ جانچ کے بعد آگے کارروائی کی جائے گی ۔

Loading...