شادی کا جھانسہ دے کر تین سالوں تک لڑکی کے ساتھ کرتا رہا "گندی حرکت" اور پھر ... ۔

ملزم متاثرہ لڑکی کا رشتہ دار تھا اور گھر پر آتا جاتا تھا ، لہذا پہلے اس نے لڑکی کو پیار کے جال میں پھنسایا اور پھر شادی کا جھانسہ دے کر جسمانی تعلقات قائم کیا ۔

Oct 14, 2019 06:18 PM IST | Updated on: Oct 14, 2019 06:18 PM IST
شادی کا جھانسہ دے کر تین سالوں تک لڑکی کے ساتھ کرتا رہا

شادی کا جھانسہ دے کر تین سالوں تک لڑکی کے ساتھ کرتا رہا گندی حرکت ، کیس درج

اترپردیش کے کانپور دیہات میں ایک سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے ۔ یہاں ایک لڑکے نے شادی کا جھانسہ دے کر تین سالوں تک لڑکی کی آبروریزی کی ۔ ملزم متاثرہ لڑکی کا رشتہ دار تھا اور گھر پر آتا جاتا تھا ، لہذا پہلے اس نے لڑکی کو پیار کے جال میں پھنسایا اور پھر شادی کا جھانسہ دے کر جسمانی تعلقات قائم کیا ۔ لیکن جب لڑکے نے شادی سے انکار کردیا ، تو لڑکی اپنے اہل خانہ کے ساتھ تھانہ پہنچی اور شکایت درج کرائی ۔ اس معاملہ میں سکندرا تھانہ پولیس نے ملزم لڑکے کی تلاش شروع کردی ہے ۔

یہ معاملہ کانپور دیہات کے سکندرا تھانہ حلقہ کے جرولی گاوں میں پیش آیا ۔ متاثرہ لڑکی کے والد کے مطابق ان کی لڑکی کو ڈیرا پور کے روہت نے پہلے پیار کے جال میں پھنسایا اور پھر شادی کا جھانسہ دے کر اس کے ساتھ 2017 سے جسمانی تعلقات قائم کرتا رہا ۔ اب اس نے اس کی بیٹی سے شادی کرنے سے انکار کردیا ۔ ملزم لڑکے کے اہل خانہ کو بھی جب یہ بات بتائی گئی تو انہوں نے بھی شادی سے انکار کردیا ۔ متاثرہ کے والد کے مطابق پہلے میں نے سوچا تھا کہ کوئی کارروائی نہ ہو ، اس لئے ان لوگوں سے بات کرنے گیا تھا ، لیکن روہت اور اس کے کنبہ نے شادی سے انکار کردیا تو پولیس سے انصاف کی فریاد کی ہے ۔

Loading...

ادھر سکندرا کے سی او راجا رام چودھری کا کہنا ہے کہ لڑکا ڈیرا پور تھانہ حلقہ کا رہنے والا ہے ۔ لڑکا – لڑکی رشتہ دار ہیں اور وہیں دونوں کے درمیان محبت ہوگئی ۔ اس کے بعد لڑکا شادی کا جھانسہ دے کر لڑکی کے ساتھ تین سالوں تک جسمانی تعلقات قائم کرتا رہا ۔ اب متاثرہ نے تھانہ میں تحریری شکایت درج کرائی ہے اور اس کی بنیاد پر معاملہ درج کرلیا گیا ہے ۔ آگے کی کارروائی کی جارہی ہے ۔

Loading...