اپنا ضلع منتخب کریں۔

    Adani Group: اڈانی گروپ 5G اسپیکٹرم کی لگائےگابولی، دیہی علاقوں میں ہوگی تعلیم پرخصوصی توجہ

    ہندوستان اس مہینے میگا 5G نیلامی شروع کرنے کے لیے تیار ہے۔

    ہندوستان اس مہینے میگا 5G نیلامی شروع کرنے کے لیے تیار ہے۔

    ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ اڈانی گروپ کا مقصد 5G نیٹ ورک کو اپنے ڈیٹا سینٹر کے ساتھ ساتھ اس سپر ایپ کے لیے استعمال کرنا ہے جسے وہ بجلی کی تقسیم سے لے کر ہوائی اڈوں تک گیس کی خوردہ فروشی سے بندرگاہوں تک ہر طرح کے کاروبار کی مدد کے لیے تیار کر رہا ہے۔

    • Share this:
      اڈانی گروپ (Adani Group) نے ہفتے کے روز اس بات کی تصدیق کی کہ 26 جولائی سے شروع ہونے والی آئندہ 5G سپیکٹرم نیلامیوں میں حصہ لینے کا منصوبہ ہے۔ جب کہ ہندوستان اس نیلامی کے ذریعے 5G سروس کی ’نیکسٹ جنریشن‘ کو متعارف کرانے کی تیاری کر رہا ہے۔ گروپ کا کہنا ہے کہ ہم اس میں حصہ لینے والی بہت سی درخواستوں میں سے ایک ہیں۔

      تاہم کمپنی نے واضح کیا کہ وہ صارفین کی نقل و حرکت کی جگہ میں داخل ہونے کا ارادہ نہیں رکھتی۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ہمارا ارادہ صارفین کی نقل و حرکت کی جگہ میں نہیں ہے۔ اپنے مستقبل کے منصوبے کے بارے میں بات کرتے ہوئے گروپ نے کہا کہ ہم 5G سپیکٹرم نیلامی میں حصہ لے رہے ہیں تاکہ ہوائی اڈے، بندرگاہوںیں، لاجسٹکس، پاور جنریشن، ٹرانسمیشن، ڈسٹری بیوشن اور مختلف مینوفیکچرنگ آپریشنز میں سائبر سیکیورٹی کے ساتھ ساتھ نجی نیٹ ورک کے حل فراہم کیے جا سکیں۔

      ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ اڈانی گروپ کا مقصد 5G نیٹ ورک کو اپنے ڈیٹا سینٹر کے ساتھ ساتھ اس سپر ایپ کے لیے استعمال کرنا ہے جسے وہ بجلی کی تقسیم سے لے کر ہوائی اڈوں تک گیس کی خوردہ فروشی سے بندرگاہوں تک ہر طرح کے کاروبار کی مدد کے لیے تیار کر رہا ہے۔

      ہندوستان اس مہینے میگا 5G نیلامی شروع کرنے کے لیے تیار ہے۔ ہندوستان اسپیکٹرم کی اب تک کی سب سے بڑی نیلامی کا مشاہدہ کرنے کے لئے تیار ہے کیونکہ حکومت 26 جولائی سے 72,000 میگا ہرٹز موبائل ایئر ویوز فروخت کے لیے پیش کر رہی ہے۔ نیلامی مختلف کم (600 میگاہرٹز، 700 میگاہرٹز، 800 میگاہرٹز، 900 میگاہرٹز، 900) میں اسپیکٹرم کے لیے منعقد کی جائے گی۔ میگاہرٹز، 1800 میگاہرٹز، 2100 میگاہرٹز، 2300 میگاہرٹز، درمیانی (3300 میگاہرٹز) اور ہائی (26 گیگاہرٹز) فریکوئنسی بینڈز۔ ریزرو قیمت پر میگا 5G نیلامیوں کی قیمت تقریباً 4.3 لاکھ کروڑ روپے ہوگی۔

      یہ بھی پڑھیں: Elon Musk نے Twitter ڈیل رد کرنے کا کیا اعلان، کمپنی کرے گی مسک پر مقدمہ

      اڈانی گروپ نے کہا کہ اگر ہمیں کھلی بولی میں 5G اسپیکٹرم دیا جاتا ہے، تو یہ دیہی علاقوں میں تعلیم، صحت کی دیکھ بھال اور مہارت کی ترقی میں اڈانی فاؤنڈیشن کی سرمایہ کاری کے لیے مدد ملے گی۔ ان تمام شعبوں میں 5G ٹیکنالوجی سے فائدہ اٹھایا جائے گا۔ یہ سب کچھ ہمارے ملک کی تعمیر کے فلسفے اور آتمانربھر بھارت کے مشن کے تحت پورا کیا جائے گا۔

      مزید پڑھیں: Eid-ul-Adha in India: آج ملک بھرمیں نہایت عقیدت واحترام کے ساتھ منائی جارہی ہےعیدالاضحیٰ

      گزشتہ ماہ مرکزی کابینہ نے ٹیلی کام ریگولیٹر ٹیلی کام ریگولیٹری اتھارٹی آف انڈیا (TRAI) کے ذریعہ تجویز کردہ ریزرو قیمتوں پر 5G نیلامیوں کو منظوری دی۔ ریگولیٹر نے موبائل سروسز کے لیے 5G سپیکٹرم کی فروخت کے لیے فلور پرائس میں تقریباً 39 فیصد کمی کی سفارش کی تھی۔ جس کے بعد سے اسپیکٹرم کے استعمال کے حق کی میعاد 20 سال ہوگی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: