உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    گوگل پے کے بعد اب ایمیزون پے کے یوزرس کو کو ملے گی ایف ڈی کرنے کی سہولت، کمپنی نے Kuvera سے کیا معاہدہ

    ایمیزون پے انڈیا (Amazon Pay India) اپنے صارفین کے لیے ایک نئی سہولت لے کر آیا ہے جس کی مدد سے صارفین فکسڈ ڈپازٹس (Fixed Deposits) کھول سکیں گے۔

    ایمیزون پے انڈیا (Amazon Pay India) اپنے صارفین کے لیے ایک نئی سہولت لے کر آیا ہے جس کی مدد سے صارفین فکسڈ ڈپازٹس (Fixed Deposits) کھول سکیں گے۔

    ایمیزون پے انڈیا (Amazon Pay India) اپنے صارفین کے لیے ایک نئی سہولت لے کر آیا ہے جس کی مدد سے صارفین فکسڈ ڈپازٹس (Fixed Deposits) کھول سکیں گے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      ممبئی۔ کورونا وبا کے درمیان ، ملک میں ڈیجیٹل ادائیگی کا استعمال بڑھ رہا ہے۔ اس کے ساتھ ہی ای کامرس کمپنی ایمیزون کا ایک یونٹ ایمیزون پے انڈیا (Amazon Pay India) اپنے صارفین کے لیے ایک نئی سہولت لے کر آیا ہے جس کی مدد سے صارفین فکسڈ ڈپازٹس (Fixed Deposits) کھول سکیں گے۔ دراصل ایمیزون پے نے انڈیا میں اپنے صارفین کو ویلتھ مینجمنٹ سروسز فراہم کرنے کے لیے سرمایہ کاری کے پلیٹ فارم کوویرا (Kuvera) کے ساتھ معاہدہ کیا ہے۔

      حالانکہ ایمیزون پے کی حریف Rival ڈیجیٹل ادائیگی ایپ گوگل پے (Google Pay) کے ذریعے شروع کی گئی اسی طرح کی سروس ریگولیٹر آر بی آئی کی نگرانی میں ہے۔

      ایمیزون پے انڈیا نے بدھ کو ایک بیان میں کہا ہے کہ اس سے اس کے کسٹمرس میوچل فنڈ اور فکسڈ ڈپازٹس میں سرمایہ کاری کر سکیں گے۔ حلانکہ ابھی تک یہ معلوم نہیں ہوسکا ہے کہ ایمیزون پے صارفین کی ڈپازٹ کن بینکوں میں جمع کی جائے گی۔ ابتدائی طور پر کویورا میوچل فنڈز اور ایف ڈی کی سپولت پیش کرے گا۔ دیگر پروڈکٹس کو وقت کے ساتھ جوڑا جائے گا۔

      کسٹمرس میوچل فنڈ اور فکسڈ ڈپازٹس میں سرمایہ کاری کر سکیں گے۔
      یوروپی یونین ڈیٹا پرائیویسی کی خلاف ورزی کرنے پر امیزن پر لگا 886 ملین ڈالر کا جرمانہ


      آر بی آئی کی نگرانی میں ہے گوگل پے کی ایف ڈی سروس
      گوگل پے (Google Pay) نے اپنے کسٹمرس کو ایف ڈی (FD)کی سہولت فراہم کرنے کے لیے سیٹو کے ساتھ معاہدہ کیا ہے۔ ابتدائی طور پر ایکویٹاس اسمال فنانس بینک کی ایف ڈی کی سہولت گوگل پے پر دستیاب ہے۔ یہ قابل ذکر ہے کہ گوگل پے کے اسی طرح کے اعلان کے بعد ایسی اطلاعات آئی ہیں کہ ریزرو بینک بڑی ٹیکنالوجی کمپنی اور بینک کے درمیان معاہدے پر نظر رکھے ہوئے ہے کیونکہ اس کا اثر بڑے فائنینشیل سینیریو financial scenario پر پڑ سکتا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: