உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ایمیزون ویب سروسز نے حیدرآباد میں دوسرے کلاؤڈ انفراسٹرکچر ریجن کا کیا آغاز، سالانہ 48 ہزار ملازمتوں کا تیقن

    اس سرمایہ کاری کا تخمینہ بھی اس وقت کے دوران بیرونی کاروباروں میں سالانہ اوسطاً 48,000 سے زائد کل وقتی ملازمتوں سے متعلق ہوگا۔ یہ ملازمتیں ہندوستان میں ایمیزون ویب سروسز سپلائی چین کا حصہ ہوں گی، جس میں تعمیر، سہولت کی دیکھ بھال، انجینئرنگ، ٹیلی کمیونیکیشن اور ملک کی وسیع تر معیشت میں ملازمتیں شامل ہیں۔

    اس سرمایہ کاری کا تخمینہ بھی اس وقت کے دوران بیرونی کاروباروں میں سالانہ اوسطاً 48,000 سے زائد کل وقتی ملازمتوں سے متعلق ہوگا۔ یہ ملازمتیں ہندوستان میں ایمیزون ویب سروسز سپلائی چین کا حصہ ہوں گی، جس میں تعمیر، سہولت کی دیکھ بھال، انجینئرنگ، ٹیلی کمیونیکیشن اور ملک کی وسیع تر معیشت میں ملازمتیں شامل ہیں۔

    اس سرمایہ کاری کا تخمینہ بھی اس وقت کے دوران بیرونی کاروباروں میں سالانہ اوسطاً 48,000 سے زائد کل وقتی ملازمتوں سے متعلق ہوگا۔ یہ ملازمتیں ہندوستان میں ایمیزون ویب سروسز سپلائی چین کا حصہ ہوں گی، جس میں تعمیر، سہولت کی دیکھ بھال، انجینئرنگ، ٹیلی کمیونیکیشن اور ملک کی وسیع تر معیشت میں ملازمتیں شامل ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Mumbai | Jammu | Delhi | Hyderabad | Lucknow
    • Share this:
      ایمیزون ویب سروسز (Amazon Web Services) نے ہندوستان میں اپنے دوسرے ایمیزون ویب سروسز انفراسٹرکچر ریجن کے آغاز کا اعلان کیا جس کا نام ایمیزون ویب سروسز ایشیا پیسفک (حیدرآباد) ریجن ہے۔ ایمیزون ویب سروسز نئے ایمیزون ویب سروسز ایشیا پیسفک (حیدرآباد) ریجن کے ذریعے 2030 تک ہندوستان میں اندازاً 4.4 بلین ڈالر (تقریباً 36,300 کروڑ روپے) کی سرمایہ کاری کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے، جس میں ڈیٹا سینٹرز کی تعمیر، جاری یوٹیلیٹیز سے متعلق آپریشنل اخراجات اور دیگر اخراجات شامل ہیں۔ جس کے تحت علاقائی کاروباروں سے سامان اور خدمات کی خریداری ہوگا۔

      اس سرمایہ کاری کا تخمینہ بھی اس وقت کے دوران بیرونی کاروباروں میں سالانہ اوسطاً 48,000 سے زائد کل وقتی ملازمتوں سے متعلق ہوگا۔ یہ ملازمتیں ہندوستان میں ایمیزون ویب سروسز سپلائی چین کا حصہ ہوں گی، جس میں تعمیر، سہولت کی دیکھ بھال، انجینئرنگ، ٹیلی کمیونیکیشن اور ملک کی وسیع تر معیشت میں ملازمتیں شامل ہیں۔


      ایمیزون ویب سروسز ایشیا پیسفک (حیدرآباد) ریجن کی تعمیر اور آپریشن سے بھی 2030 تک ہندوستان کی مجموعی گھریلو پیداوار میں تقریباً 7.6 بلین ڈالر (تقریباً 63,600 کروڑ روپے) کا اضافہ ہونے کا اندازہ ہے۔ منگل سے شروع ہونے والے ڈویلپرز، اسٹارٹ اپس، کاروباری افراد اور کاروباری اداروں کے ساتھ ساتھ حکومت، تعلیم اور غیر منافع بخش تنظیموں کے پاس ہندوستان میں واقع ڈیٹا سینٹرز سے درخواستیں اور صارفین کی خدمت کا بھی آپشن فراہم ہوگا۔

      یہ بھی پڑھیں: 


      وہیں صارفین کو ڈیٹا اینالیٹکس، سیکیورٹی، مشین لرننگ اور مصنوعی ذہانت (AI) سمیت جدت طرازی کے لیے جدید ایمیزون ویب سروسز ٹیکنالوجیز تک رسائی حاصل ہوگی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: