ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

شیئرمارکٹ میں کروڑوں روپئے کانقصان:12سال میں پہلی بارمارکٹ میں نفاذکیاگیالوور سرکٹ

آج مارکٹ کھولتے ہی سنسکس (SENSEX) میں 3000 پوائنٹس تک گراؤٹ دیکھی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ہی نفٹی بھی 8900 کے نیچے پہنچ گیا ہے۔ اس کی وجہ سے ، کچھ وقت کے لئے تجارت کو روکنا پڑا

  • UNI
  • Last Updated: Mar 13, 2020 10:57 AM IST
  • Share this:
شیئرمارکٹ میں کروڑوں روپئے کانقصان:12سال میں پہلی بارمارکٹ میں نفاذکیاگیالوور سرکٹ
مسلسل دوسرے دن اسٹاک مارکیٹوں میں کہرام جاری

کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں اسٹاک مارکیٹوں میں آئی سونامی کے سبب ملک میں بھی مسلسل دوسرے دن اسٹاک مارکیٹوں میں کہرام جاری رہا ۔ شروع کے چھ سات منٹ کے اندر اندر سینسیکس اور نفٹی دس فیصد کمزور ہو گئے جس کی وجہ سے کچھ دیر کے لئے کاروبار روک دیا گیا ہے ۔ بی ایس ای کا سنسیکس 1564 پوائنٹس کی کمی کے ساتھ 31214.13 پوائنٹس پر کھلا اور دیکھتے ہی دیکھتے 3200 پوائنٹس سے زیادہ کم ہو کر 29564.58 پوائنٹس تک گر گیا ۔




صبح 9 بج کر 22 منٹ پر مارکیٹ میں لوئر سرکٹ لگ جانے سے کاروبار روکنا پڑا ۔ اس وقت سینسیکس 9.43 فیصد کی کمی کے ساتھ 29687.52 پوائنٹس پر تھا ۔ نفٹی بھی 482.55 پوائنٹس کی کمی کے ساتھ 9107.60 پوائنٹس پر کھلا اور 9 بجکر 21 منٹ تک 10.07 پوائنٹس کی کمی کے ساتھ 8624.05 پوائنٹس تک گر گیا ۔ اس کے بعد نفٹی میں بھی کاروبار روک دینا پڑا ۔ کورونا وائرس کے بڑھنے سے اس ہفتے گھریلو مارکیٹ حصص تقریبا 25 فیصد کمزور ہو چکے ہیں ۔مارکٹ میں لوور سرکٹ کی تاریخ

مارکیٹ میں لوور سرکٹ کی تاریخ پر نظر ڈالے تو مارکٹ میں 12 سال میں پہلی بار (LOWER CIRCUIT) لگا ہے۔ اس سےپہلے ، 17 مئی 2004 کولوور سرکٹ کا نفاذ عمل میں آیا تھا۔اس کے علاوہ 22 جنوری 2008 کو ، عالمی منڈیوں میں سست روی کی وجہ سے ، مارکٹ میں زبردست نقصان ہواتھا۔


روپیہ کی قدر میں بھی کمی

روپئے کا آغاز آج نقصان سے  ہی ہوا۔ روپیہ آج ڈالر کے مقابلے میں 18 پیسے کی کمی کے ساتھ 74.40 کی سطح پر کھلا۔ اس کے ساتھ ہی گذشتہ کاروباری روز ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قیمت 59 پیسے کی کمی سے 74.22 پر بند ہوئی تھی۔
First published: Mar 13, 2020 10:22 AM IST