உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Donkey Milk Farming: انجینئر نے نوکری چھوڑ کر کھولی گدھی کے دودھ کی ڈیری، لاکھوں کی ہو رہی ہے کمائی

    کرناٹک کے سری نواساگوڑا نے سافٹ ویئر انجینئر کی نوکری چھوڑ کر گدھب کے دودھ کی فارمنگ شروع کر دی ہے۔ سری نواس کا کہنا ہے کہ گدھب کے دودھ کی بہت مانگ ہے۔ انہیں اب تک 17 لاکھ روپے کے آرڈر مل چکے ہیں۔

    کرناٹک کے سری نواساگوڑا نے سافٹ ویئر انجینئر کی نوکری چھوڑ کر گدھب کے دودھ کی فارمنگ شروع کر دی ہے۔ سری نواس کا کہنا ہے کہ گدھب کے دودھ کی بہت مانگ ہے۔ انہیں اب تک 17 لاکھ روپے کے آرڈر مل چکے ہیں۔

    کرناٹک کے سری نواساگوڑا نے سافٹ ویئر انجینئر کی نوکری چھوڑ کر گدھب کے دودھ کی فارمنگ شروع کر دی ہے۔ سری نواس کا کہنا ہے کہ گدھب کے دودھ کی بہت مانگ ہے۔ انہیں اب تک 17 لاکھ روپے کے آرڈر مل چکے ہیں۔

    • Share this:
      Donkey Milk Farming Business Idea: جب گدھے کا ذکر آتا ہے تو آنکھوں کے سامنے ایک بے بس اور لاچار جانور کی تصویر آجاتی ہے۔ لیکن یہ جانور بھی آپ کو کروڑ پتی بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ اگر آپ مادہ گدھوں کو دودھ کے لیے پالتے ہیں تو آپ کچھ ہی وقت میں امیر بن سکتے ہیں۔ بھارت میں بھی اب گدھے کے دودھ کی مانگ بڑھ رہی ہے۔ اور ہاں یہ دودھ 50 یا 100 روپے فی لیٹر میں نہیں بکتا۔ اس کی قیمت 5000 روپے فی لیٹر تک فروخت ہوتم ہے۔

      کرناٹک کے سری نواساگوڑا نے سافٹ ویئر انجینئر کی نوکری چھوڑ کر گدھب کے دودھ کی فارمنگ شروع کر دی ہے۔ سری نواس کا کہنا ہے کہ گدھب کے دودھ کی بہت مانگ ہے۔ انہیں اب تک 17 لاکھ روپے کے آرڈر مل چکے ہیں۔ وہ گدھی کا دودھ پیک کر کے بیچیں گے۔ انہوں نے 30 ملی لیٹر کے پیک کی قیمت 150 روپے رکھی ہے۔ سری نواس گوڑا کا دعویٰ ہے کہ گدھی کے دودھ کے یہ پیکٹ مال، دکانوں اور سپر مارکیٹوں میں فروخت کیے جائیں گے۔

      Moneycontrol.com کی ایک رپورٹ کے مطابق، سری نواس گوڈا کرناٹک کے جنوبی کنڑ ضلع کے ایرا گاؤں میں رہتے ہیں۔ 2020 تک اس نے سافٹ ویئر انجینئر کے طور پر کام کیا۔ اس کے بعد وہ گاؤں آیا اور اس نے اپنے گاؤں میں 2.3 ایکڑ پر خرگوش اور کدکناتھ مرغیوں کا ایک بریڈنگ فارم کھولا۔ سری نواس کا کہنا ہے کہ گدھیوں کی کچھ انواع کی کم ہوتی ہوئی تعداد نے انہیں ڈنکی ملک فارمنگ کرنے کا خیال دیا۔ ان کا کہنا ہے کہ جب انہوں نے اپنا پلان دوسروں کے ساتھ شیئر کیا تو اسے ڈنکی فارمز کا آئیڈیا پسند نہیں آیا۔ لیکن لوگوں کی پرواہ کیے بغیر انہوں س نے 20 گدھویں کے ساتھ کام شروع کر دیا۔

      Jet fuel Price Hike : ہوائی ایندھن میں 16.3 کا اضافہ، ریکارڈ سطح پر پہنچی قیمت



      گوڑا کا کہنا ہے کہ گدھےیکا دودھ نہ صرف لذیذ ہوتا ہے بلکہ اس میں دواؤں کی خوبیاں بھی ہوتی ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ اس کے دودھ کی قیمت بہت زیادہ ہے۔ گوڑا کا کہنا ہے کہ وہ گدھی کا دودھ پیکٹوں میں بیچیں گے۔ 30 ملی لیٹر دودھ والے پیکٹ کی قیمت 150 روپے ہے۔ گوڑا کا دعویٰ ہے کہ انہیں اب تک 17 لاکھ روپے کے آرڈر ملے ہیں۔ دکانوں، مالز اور سپر مارکیٹوں میں ڈنکی دودھ کی بہت مانگ ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: