ہوم » نیوز » عالمی منظر

روس اور سعودی عرب کے اس فیصلے سے بڑھ سکتی ہیں ہندستان کی مشکلیں، جانئے کیسے؟

اوپیک اور روس کی قیادت والے دیگر ساتھی ممالک سنیچر کو خام تیل (Crude Oil) کی پیداوا میں کمی کا فیصلہ کرسکتے ہیں۔ ساتھ ہی عراق اور نائیجیریا جیسے ممالک موجودہ کمیوں کی تعمیل کرنے کے لئے دباؤ بڑھا سکتے ہیں۔ نائیجیریا کے وزیر تیل نے امید ظاہر کی ہے کہ وہ آگے بھی کمی کو جاری رکھیں گے۔

  • Share this:
روس اور سعودی عرب کے اس فیصلے سے بڑھ سکتی ہیں ہندستان کی مشکلیں، جانئے کیسے؟
اوپیک اور روس کی قیادت والے دیگر ساتھی ممالک سنیچر کو خام تیل (Crude Oil) کی پیداوا میں کمی کا فیصلہ کرسکتے ہیں۔

اوپیک اور روس کی قیادت والے دیگر ساتھی ممالک سنیچر کو خام تیل (Crude Oil) کی پیداوا میں کمی کا فیصلہ کرسکتے ہیں۔ ساتھ ہی عراق اور نائیجیریا جیسے ممالک موجودہ کمیوں کی تعمیل کرنے کے لئے دباؤ بڑھا سکتے ہیں۔ نائیجیریا کے وزیر تیل نے امید ظاہر کی ہے کہ وہ آگے بھی کمی کو جاری رکھیں گے۔

نائیجیریا کے پیچھے سعودی عرب Saudi Arabia اور روس بھی ہیں۔ ان ممالک کے مابین یہ میٹنگ ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے ہوگی۔ پیداوار میں کمی کا اثر ہندوستان پر بھی پڑے گا کیونکہ یہ کٹوتی خام تیل کی قیمت بڑھانے کے لئے کی جارہی ہے۔

کوروناوائرس نے بگاڑا خام تیل کا کھیل

اس سے قبل اوپیک پلس (OPEC+) ممالک نے مئی ۔جون کے دوران خام تیل کی پیداوار میں ریکارڈ 97 لاکھ بیرل ہر روز کی کمی کا فیصلہ کیا تھا۔ کورونا وائرس وبا کی وجہ سے خام تیل کی قیمت میں ریکارڈ کمی دیکھنے کو ملی ہے۔

دسمبر تک پیداوار میں کٹوتی کے حق میںسعودی عرب

نیوز ایجنسی رائٹرز نے اوپیک + (OPEC+) ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ سعودی عربSaudi Arabia اور روس نے جولائی تک موجودہ کمی کو جاری رکھنے پر اتفاق کیا ہے۔ ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ سعودی عرب اگست اور ممکنہ طور پر تیار ہوگا۔
عالمی بینچ مارک برینٹ کروڈ کی قیمت اپریل میں 20 ڈالر فی بیرل کی سطح پر پھسل گئی تھی۔ جمعہ کو برینٹ کروڈ کی قیمت میں 6 فیصدی کی تیزی دیکھنے کو ملی جس کے بعد یہ 42 ڈالر فی بیرلکے ساتھ گزشتہ تین ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا ہے۔ تاہم 2019 کے مقابلے میں یہ اب بھی بہت کم ہے۔
یہ بھی پڑھیں: مصر میں کوروناوائرس ویکسین لگوانے کے نام پر بیہوش کرکے باپ نے بیٹیوں کے اعضائے مخصوصہ کٹوائے، متاثرہ لڑکیوں نے بتایا درد
نائیجیریا کے وزیر تیل ٹمپری سلوا نے کہا ، '12 اپریل کے فیصلے کے بارے میں باضابطہ اعلان کی امید ہے۔ اس اعلان کی توقع تو ایک یا دو ممبر ممالک کے اتفاق رائے کے بغیر بھی کی جا سکتی ہے۔ اوپیک ذرائع کے مطابق کٹوتی کو مزید جاری رکھنے کی ایک شرط یہ ہے کہ جن ممالک نے مئی اور جون میں اپنے مقررہ کوٹہ سے زیادہ پیداوار حاصل کی ہے اسے آنے والے مہینے میں اس کی بھرپائی کرنی پڑے گی۔
First published: Jun 07, 2020 08:58 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading