ہوم » نیوز » معیشت

وزیر خزانہ نرملا سیتارمن کا روزگار بڑھانے پر زور ، 'آتم نربھر بھارت روزگار یوجنا' کا اعلان

وزیر خزانہ نے سب سے پہلے خودکفیل ہندوستان اسکیم کے تحت کئے گئے اعلانات کی پیشرفت کے بارے میں جانکاری دی ۔ انہوں نے بتایا کہ شیئر بازار میں مسلسل تیزی دیکھنے کو مل رہی ہے ۔ بینکوں کے کریڈٹ گروتھ میں پانچ اعشاریہ ایک فیصدی کی تیزی دیکھنے کو ملی ہے ۔

  • Share this:
وزیر خزانہ نرملا سیتارمن کا روزگار بڑھانے پر زور ، 'آتم نربھر بھارت روزگار یوجنا' کا اعلان
وزیر خزانہ نرملا سیتارمن کا روزگار بڑھانے پر زور ، 'آتم نربھر بھارت روزگار یوجنا' کا اعلان

مرکزی وزیر خزانہ نرملا سیتارمن نے دیوالی سے ٹھیک پہلے میڈیا سے خطاب کیا ۔ انہوں نے کہا کہ معیشت میں بہتری دیکھنے کو مل رہی ہے ۔ موڈیز نے بھی کیلنڈر ائیر 2020 اور 2021 کیلئے ہندوستان کی جی ڈی پی شرح گروتھ کا تخمینہ بڑھا دیا ہے ۔ وزیر خزانہ نے سب سے پہلے خودکفیل ہندوستان اسکیم کے تحت کئے گئے اعلانات کی پیشرفت کے بارے میں جانکاری دی ۔ انہوں نے بتایا کہ شیئر بازار میں مسلسل تیزی دیکھنے کو مل رہی ہے ۔ بینکوں کے کریڈٹ گروتھ میں پانچ اعشاریہ ایک فیصدی کی تیزی دیکھنے کو ملی ہے ۔ انہوں نے بتایا معشیت کو لے کر آر بی آئی کا تخمینہ بھی تیسری سہ ماہی کیلئے پازیٹیو ہے ۔ اس موقع پر انہوں نے آتم نربھر بھارت روزگار یوجنا کا بھی اعلان کیا ۔


مودی حکومت نقل مکانی کرنے والے مزدوروں کیلئے خاص طرح کا ایک پورٹل لے کر آنے والی ہے ۔ اس کا مقصد نئے روزگار کی حوصلہ افزائی کرنا ہے ۔ اس کے تحت جو کمپنیاں نئے لوگوں کو روزگار دے رہی ہیں یعنی جو پہلے سے ای پی ایف او میں کوور نہیں تھے ، انہیں اس کا فائدہ ملے گا ۔ ماہانہ 15 ہزار روپے سے کم سیلری والوں یعنی یکم مارچ 2020 سے لے کر 31 ستمبر 2020 کے درمیان نوکری گنوانے والوں کو اس کا فائدہ ملے گا ۔ یہ اسکیم یکم اکتوبر سے لاگو ہے ۔



اس اسکیم کے تحت ملک میں تیزی سے نوکریوں کے مواقع بڑھیں گے ۔ راحت پیکج کے تحت آتم نربھر روزگار یوجنا کے تحت ملک کے منظم سیکٹر میں زیادہ روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے ۔ غیر منظم سیکٹر کو بھی منظم کرنے پر کام ہوگا ۔ خود کفیل ہندوستان 3.0 کے تحت 12 بندوبست کا اعلان کیا گیا ہے ۔


اس نئے پیکج کے تحت حکومت پردھان منتری روزگار پروتساہن یوجنا کو مزید توسیع دے سکتی ہے ۔ اس رقم کے تحت حکومت نئے ملازمین اور کمپنیوں کو پی ایف کنٹریبیوشن پر 10 فیصد سبسڈی دے سکتی ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 12, 2020 02:42 PM IST