ہوم » نیوز » معیشت

GIC-Reliance Deal: سنگاپور کی بڑی انویسٹمنٹ فرم جی آئی سی کرے گی ریلائنس ریٹیل میں 5512.50 کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری

ریلائنس انڈسٹریز کے ریٹیل وینچر ریلائنس ریٹیل میں جی آئی سی 1.22 فیصدی حصےداری کل 5512.50 کروڑ روپئے میں خریدے گی۔ اس سے پہلے ابو ظبی واقع ساورین فنڈ مبادلہ انویسٹمنٹ کمپنی نے بھی ریلائنس میں 6,247.5 کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا تھا۔ اس سرمایہ کاری سے وہ ریلائنس ریٹیل میں 1.4 فیصدی حصےداری حاصل کرے گی۔

  • Share this:
GIC-Reliance Deal: سنگاپور کی بڑی انویسٹمنٹ فرم جی آئی سی کرے گی ریلائنس ریٹیل میں 5512.50 کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری
ریلائنس انڈسٹریز کے چئیرمین مکیش امبانی کی فائل فوٹو

نئی دہلی۔ ریلائنس انڈسٹریز کے ریٹیل وینچر ریلائنس ریٹیل (Reliance Retail) میں جی آئی سی 1.22 فیصدی حصےداری کل 5512.50 کروڑ روپئے میں خریدے گی۔ اس سے پہلے ابو ظبی واقع ساورین فنڈ مبادلہ انویسٹمنٹ کمپنی نے بھی ریلائنس میں 6,247.5 کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا تھا۔ اس سرمایہ کاری سے وہ ریلائنس ریٹیل میں 1.4 فیصدی حصےداری حاصل کرے گی۔ ریلائنس ریٹیل میں کل سرمایہ کاری 32 ہزار کروڑ کے پار پہنچ گئی ہے۔ کمپنی نے 7.28 فیصدی حصےداری بیچ کر 32,197.50 کروڑ روپئے جٹا لئے ہیں۔ عالمی سطح کے اہم پرائیویٹ ایکویٹی فنڈ اس وقت ریلائنس انڈسٹریز پر بھروسہ جتا رہے ہیں۔ اس لئے ریلائنس کی دوسری کمپنیوں میں سرمایہ کاری کر رہے ہیں۔ ریلائنس ریٹیل وینچر کی فی الحال ویلیوشن 4.28 کروڑ روپئے ہے جس پر یہ کمپنیاں سرمایہ کاری کر رہی ہیں۔


GIC-Reliance Deal- ریلائنس انڈسٹریز کے چئیرمین اور مینیجنگ ڈائریکٹر مکیش امبانی (Mukesh Ambani, Chairman and Managing Director of Reliance Industries) نے کہا کہ' ریلائنس ریٹیل کنبے کو جی آئی سی کا خیرمقدم کرتے ہوئے بہت خوشی ہو رہی ہے۔ دنیا بھر میں طویل مدت کی کامیاب سرمایہ کاری کی چار دہائیوں کےقریب کے اپنے ٹریک ریکارڈ کو برقرار رکھنے والی جی آئی سی ریلائنس ریٹیل کے ساتھ ساجھےداری کر رہی ہے۔ اس بات کی مجھے بہت خوشی ہے'۔




ریلائنس ریٹیل کے بارے میں جانئے

ملک کے منظم ریٹیل کاروبار میں ریلائنس نے 2006 میں قدم رکھا تھا۔ سب سے پہلے اس کمپنی نے حیدرآباد میں ریلائنس فریش اسٹور کھولا تھا۔ کمپنی کا آئیڈیا تھا کہ وہ نزدیکی بازار سے گاہکوں کو گروسریز اور سبزیاں دستیاب کرائے۔ 25,000 کروڑ روپئے کی شروعات سے کمپنی نے کنزیومر ڈیوریبلس، فارمیسی اور لائف اسٹائل پروڈکٹس دستیاب کرانا شروع کیا۔ اس کے بعد کمپنی نے الیکٹرانکس، فیشن اور کیش اینڈ کیری کاروبار میں بھی قدم رکھا۔

الیکٹرانک ریٹیل چین کو کمپنی نے 2007 میں لانچ کیا تھا۔ اس کے بعد 2008 اور 2011 میں ریلائنس نے فیشن اور ہول سیل کاروبار میں ریلائنس ٹرینڈس اور ریلائنس مارکیٹ کے ذریعہ قدم رکھا۔ 2011 تک ریلائنس ریٹیل کی سیلس کے ذریعہ کمائی 1 ارب ڈالر کے پار پہنچ گئی تھی۔

(ڈسکلیمر: نیوز 18 اردو ڈاٹ کام ریلائنس انڈسٹریز کی کمپنی نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ کا حصہ ہے۔ نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ ریلائنس انڈسٹریز کی ملکیت ہے۔)


Published by: Nadeem Ahmad
First published: Oct 03, 2020 10:14 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading