உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    خوشخبری! ہفتے میں صرف 4 دن کرنی ہوگی نوکری، 3 دن ملے گی چھٹی: جانیں کیا ہوں گے قواعد

    نئے مسودہ قانون میں کام کے زیادہ سے زیادہ گھنٹوں کو بڑھاکر 12 گھنٹے کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے۔ تاہم مزدور تنظیمیں 12 گھنٹے کی نوکری کی مخالفت کر رہی ہیں۔

    نئے مسودہ قانون میں کام کے زیادہ سے زیادہ گھنٹوں کو بڑھاکر 12 گھنٹے کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے۔ تاہم مزدور تنظیمیں 12 گھنٹے کی نوکری کی مخالفت کر رہی ہیں۔

    نئے مسودہ قانون میں کام کے زیادہ سے زیادہ گھنٹوں کو بڑھاکر 12 گھنٹے کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے۔ تاہم مزدور تنظیمیں 12 گھنٹے کی نوکری کی مخالفت کر رہی ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: ملازمین کو اگلے مہینے بڑی خوشخبری مل سکتی ہے۔ مودی حکومت (Modi Government) لیبر کوڈ کے قوانین کو یکم اکتوبر سے نافذ کر سکتی ہے۔ لیبر کوڈ (New Wage Code) کے قوانین کے مطابق ملازمین کو ہفتے میں 3 دن چھٹی کا آپشن مل سکتا ہے۔ ہفتے میں پانچ یا چھ دن کے بجائے اب آپ کو صرف 4 دن کام کرنے کا فائدہ مل سکتا ہے۔ حالانکہ یہ آپ کے کام کے اوقات کو دن میں 9 سے 12 گھنٹے تک بڑھا سکتا ہے۔
      12 گھنٹے ہو سکتا ہے نوکری کا وقت
      نئے مسودہ قانون میں کام کے زیادہ سے زیادہ گھنٹوں کو بڑھاکر 12 گھنٹے کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے۔ تاہم مزدور تنظیمیں 12 گھنٹے کی نوکری کی مخالفت کر رہی ہیں۔ کوڈ کے ڈرافٹ قوانین میں 15 سے 30 منٹ کے بیچ زیادہ وقت کو بھی 30 منٹ گن کر اوور ٹائم میں شامل کرنے کی تجویز ہے۔ موجودہ اصول کے تحت 30 منٹ سے کم وقت کو اوور ٹائم نہیں مانا جاتا ہے۔ ڈرافٹ قوانین میں کسی بھی ملازم کو 5 گھنٹے سے زیادہ مسلسل کام کرانے کی مناہی ہے۔ ملازمین کو ہر پانچ گھنٹے کے بعد آدھے گھنٹے کا آرام دینا ہوگا۔
      ہفتے میں تین دن ملے گی چھٹی
      نئے لیبر کوڈ میں یہ آپشن قواعد میں بھی رکھا جائے گا جس پر کمپنی اور ملازمین باہمی رضامندی سے فیصلہ کر سکتے ہیں۔ نئے قواعد کے تحت کام کے اوقات کی زیادہ سے زیادہ حد ہفتے میں 48 گھنٹے رکھی گئی ہے۔ ایسے میں کام کے دن گھٹ کر 5 سے 4 تک ہو سکتے ہیں۔ ہفتے میں تین چھٹیاں ہوں گی۔

      ایک اکتوبر سے بدلیں گے تنخواہ کے قوانین
      حکومت نئے لیبر کوڈ میں قوانین کو یکم اپریل 2021 سے نافذ کرنا چاہتی تھی لیکن ریاستوں کی تیاری نہ ہونے اور HR پالیسی کو تبدیل کرنے کے لیے کمپنیوں کو زیادہ وقت دینے کی وجہ سے انہیں ملتوی کر دیا گیا۔ وزارت محنت (Labor Ministry) کے مطابق حکومت 1 جولائی سے لیبر کوڈ کے قواعد کو نوٹیفائی (notify) کرنا چاہتی تھی لیکن ریاستوں نے ان قوانین پر عمل درآمد کے لیے مزید وقت مانگا جس کی وجہ سے انہیں یکم اکتوبر تک ملتوی کر دیا گیا تھا۔ اب لیبر منسٹری اور مودی حکومت 1 اکتوبر تک لیبر کوڈ کے قوانین کو notify کرنا چاہتی ہے۔ پارلیمنٹ نے اگست 2019 کو تین لیبر کوڈز انڈسٹریل رلیشن (industrial relations)، کام کی سکیورٹی ( safety of work)، صحت اور کام کرنے کے حالات اور سوشل سکیورٹی health and working conditions and social security سے متعلق قوانین کو تبدیل کیا۔ یہ قوانین ستمبر 2020 کو منظور کیے گئے تھے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: