ہوم » نیوز » معیشت

ہوشیار ! بند ہورہی ہے گوگل کی یہ سروس ، فورا محفوظ کرلیں تصاویر اور ویڈیوز ، اٹھانا پڑسکتا ہے یہ نقصان

گوگل نے اپنے سوشل نیٹ ورک گوگل +(گوگل پلس ) کو گزشتہ سال اکتوبر 2018 میں بند کرنے کا اعلان کیا تھا ۔ گوگل سپورٹ پیج پر اپ ڈیٹ کی گئی جانکاری سے پتہ چلا ہے کہ دو اپریل 2019 کو گوگل پلس کا کنزیومر ورزن بند کردیا جائے گا ۔

  • Share this:
ہوشیار ! بند ہورہی ہے گوگل کی یہ سروس ، فورا محفوظ کرلیں تصاویر اور ویڈیوز ، اٹھانا پڑسکتا ہے یہ نقصان
گوگل نے اپنے سوشل نیٹ ورک گوگل +(گوگل پلس ) کو گزشتہ سال اکتوبر 2018 میں بند کرنے کا اعلان کیا تھا ۔ گوگل سپورٹ پیج پر اپ ڈیٹ کی گئی جانکاری سے پتہ چلا ہے کہ دو اپریل 2019 کو گوگل پلس کا کنزیومر ورزن بند کردیا جائے گا ۔

گوگل نے اپنے سوشل نیٹ ورک گوگل +(گوگل پلس ) کو گزشتہ سال اکتوبر 2018 میں بند کرنے کا اعلان کیا تھا ۔ گوگل سپورٹ پیج پر اپ ڈیٹ کی گئی جانکاری سے پتہ چلا ہے کہ دو اپریل 2019 کو گوگل پلس کا کنزیومر ورزن بند کردیا جائے گا ۔

دراصل کمپنی نے گوگل پلس کو بند کرنے کا فیصلہ پانچ کروڑ سے بھی زیادہ صارفین کے ڈیٹا کے تحفظ میں سیندھ لگنے کے بعد کیا تھا ۔ ایک آفیشیل پوسٹ میں کمپنی نے کہا کہ دو اپریل کو آپ کا گوگل اکاونٹ اور گوگل پلس کا کوئی بھی پیج جو آپ نے بنایا ہوا ، بند ہوجائے گا ۔ ہم صارفین کے گوگل پلس اکاونٹ کے مواد کو ڈیلیٹ کرنا شروع کردیں گے ۔

گوگل پلس کے ایلبم آرکائیو سے بھی صارفین کی تصاویر اور ویڈیو ز ڈیلیٹ کردی جائیں گی ۔ معلومات کے مطابق اگر صارفین نے کسی فوٹو یا ویڈیو کا بیک اپ لیا ہوا ہے ، تو اس کو ڈیلیٹ نہیں کیا جائے گا ۔

اس کے علاوہ اگر صارفین اپنی فائل ، فوٹو ، یا ڈیٹا بچانا چاہتے ہیں ، تو اپریل سے پہلے اپنے مواد کو ڈاون لوڈ کرکے محفوظ کرسکتے ہیں ۔ گوگل نے بتایا کہ چار فروری سے صارفین اس پلیٹ فارم پر نیا گوگل پلس اکاونٹ نہیں بنا پائیں گے ۔ گوگل پلس کے سائن ان بٹن کو گوگل سائن ان بٹن سے بدل دیا جائے گا۔



خیال رہے کہ گوگل پلس کو 2011 میں لانچ کیا گیا تھا۔ یہ گوگل کی سوشل نیٹ ورکنگ سروس تھی ، جس نے گوگل بز کی جگہ لی تھی ۔ شروعات میں اس کے صارفین 450 ملین تک پہنچ گئے تھے ، لیکن پھر کم ہونے شروع ہوگئے۔ 2015 میں اس کے 111ملین یعنی 11 کروڑ فعال صارفین تھے ۔
First published: Feb 02, 2019 02:48 PM IST