خوش خبری! آئندہ سال دنیا بھر میں سب سے زیادہ ملے گی ہندوستانیوں کو تنخواہ

سروے میں کہا گیا ہے کہ اگلے سال تنخواہ میں 9.2 فیصدی کے اضافہ کے بعد ہندوستانی ملازمین کوحقیقی طور پر 5 فیصدی کے ہی اضافہ کا فائدہ مل سکے گا۔

Dec 02, 2019 06:53 PM IST | Updated on: Dec 02, 2019 06:53 PM IST
خوش خبری! آئندہ سال دنیا بھر میں سب سے زیادہ ملے گی ہندوستانیوں کو تنخواہ

آئندہ سال دنیا بھر میں سب سے زیادہ ملے گی ہندوستانیوں کو تنخواہ

نئی دہلی۔ ایک حالیہ تخمینہ سے پتہ چلا ہے کہ اگلے سال ہندوستان میں ملازمین کی تنخواہوں میں 9.2 فیصدی تک کا اضافہ ہو سکتا ہے۔ سبھی ایشیائی ملکوں کے مقابلے ہندوستان میں یہ اضافہ سب سے زیادہ ہے۔ حالانکہ، بڑھتی مہنگائی اس خوشی کو کم کرنے کا کام کر سکتی ہے۔ کارن فیری گلوبل نے تنخواہوں سے متعلق اپنی پیشین گوئی میں یہ بات کہی ہے۔

اس سروے میں کہا گیا ہے کہ اگلے سال تنخواہ میں 9.2 فیصدی کے اضافہ کے بعد ہندوستانی ملازمین کوحقیقی طور پر 5 فیصدی کے ہی اضافہ کا فائدہ مل سکے گا۔ دراصل، اس اضافہ میں مہنگائی کی شرح ایڈجسٹ کرنے کے بعد ہی اضافہ کا فائدہ مل سکے گا۔

Loading...

کارن فیری گلوبل کےسروے کے مطابق، اگلے سال ہندوستان میں ملازمین کی تنخواہ اوسطا 9.2 فیصدی تک بڑھ سکتی ہے۔ لیکن بڑھتی مہنگائی کے حساب سے دیکھیں تو یہ اضافہ تقریبا نصف ہی رہ جائے گا۔ ساتھ ہی اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سبھی ایشیائی ملکوں میں ہندوستان سب سے زیادہ تنخواہوں میں اضافہ والے ملک کے طور پر ابھرا ہے۔

Loading...