உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عام آدمی کو بڑا جھٹکا، رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت میں پھر اضافہ، یہاں جانئے اپنے شہر کے نئے دام

    Youtube Video

    تیل کمپنیوں نے بغیر سبسڈی والے علی 14.2 کلو گرام والے سلنڈر کے دام میں 15 روپے کا اضافہ کیا ہے۔ وہیں پٹنہ میں اب ایل پی جی سلنڈر کے لیے ایک ہزار میں سے صرف دو روپے کم چکانے پڑھیں گے۔

    • Share this:
      عام آدمی کو آج پھر بڑا جھٹکا لگا ہے۔ سرکار نے ایل پی جی گیس سلنڈر LPG Cylinder کی قیمت میں ایک بار پھر اضافہ کردیا ہے۔ تیل کمپنیوں نے بغیر سبسڈی والے علی 14.2 کلو گرام والے سلنڈر کے دام میں 15 روپے کا اضافہ کیا ہے۔ وہیں اس میں بڑھوتری کے بعد ملک کی راجدھانی دہلی میں رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت 899.50 روپے فی سلینڈر ہوگئی ہے۔ وہیں پٹنہ میں اب ایل پی جی سلنڈر کے لیے ایک ہزار میں سے صرف دو روپے کم چکانے پڑھیں گے۔
      بتادیں کہ مہینے کے پہلے دن حکومت نے 19 کلو کے کامرشیل سلنڈر سر کی قیمت 43 روپے بڑھائی تھی۔ جس کے بعد ایک اکتوبر سے دہلی میں 19 کلو والا کامرشیل ایل پی جی سلنڈر کی قیمت 1693 روپے سے بڑھ کر 1736۔50 روپے ہوگئی تھی۔



      جانے اپنے شہر میں رسوئی گیس کی قیمتیں۔۔

      دہلی بغیر سبسڈی والے 14.2 کلو گرام سلینڈر کی کی قیمت بڑھ کر 899.50 روپے ہوگئی ہے۔

      کولکاتہ میں رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت 911 روپے سے بڑھ کر 926 روپے ہو گئی ہے۔

      ممبئی میں 844.50 روپے سے 899.50 روپے ہو گئی ہے۔

      چینی میں 900.50 روپے سے بڑھ کر 915.50 روپے ہوگئی۔

       

      یکم اکتوبر کو  25 روپے بڑھی سلینڈر  کی قیمت
      آپ کو بتاتے چلیں کہ اکتوبر کے آغاز میں ہی سرکاری تیل کمپنیوں نے ایک بار پھر گھریلو ایل پی جی سلینڈر  کی قیمت میں اضافہ کیا۔ یکم اکتوبر کو بغیر سبسڈی والے ایل پی جی سلینڈر کی قیمت میں 25 روپے کا اضافہ کیا گیا ہے۔ دہلی میں 14.2 کلو ایل پی جی سلینڈر کی قیمت بڑھ کر 884.50 روپے ہو گئی ہے۔ پچھلے 15 دنوں میں غیر سبسڈی والا ایل پی جی سلینڈر  50 روپے مہنگا ہو گیا ہے۔

      جانیں اپنے شہر میں رسوئی گیس کی قیمت:
      ممبئی میں 14.2 کلو ایل پی جی سلینڈر کی قیمت 884.5 روپے ہے۔
      چنئی میں آپ کو ایل پی جی سلینڈر 900.50 روپے میں ملے گا۔
      لکھنؤ میں سلینڈر کی قیمت 897.5 روپے ہے۔

       1000 روپے ہوسکتی ہے سلینڈر کی قیمت
      میڈیا رپورٹس کے مطابق حکومت کی اندرونی تشخیص (Internal Assessment) سے اشارہ ملا تھا کہ صارفین کو ایل پی جی سلینڈر کے لیے فی سلینڈر 1000 روپے ادا کرنے پڑ سکتے ہیں۔ حالانکہ یہ مکمل طور پر واضح نہیں ہے کہ حکومت کا اس بارے میں کیا خیال ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: