உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عالمی منڈی میں Crude oil کی قیمت میں 26 فیصد کمی، ملک میں 7 روز میں بڑھ چکے ہیں 4 روپے

    Petrol and Diesel:  تیل کمپنیوں نے گزشتہ سات دنوں میں پٹرول اور ڈیزل Petrol and diesel کی قیمتوں میں چھ بار اضافہ کیا ہے۔ پیر کو بھی پٹرول 30 پیسے اور ڈیزل 35 پیسے فی لیٹر مہنگا ہوا۔ اب ایک ہفتے کے دوران دونوں کی قیمتوں میں چار روپے فی لیٹر اضافہ ہوا ہے۔

    Petrol and Diesel: تیل کمپنیوں نے گزشتہ سات دنوں میں پٹرول اور ڈیزل Petrol and diesel کی قیمتوں میں چھ بار اضافہ کیا ہے۔ پیر کو بھی پٹرول 30 پیسے اور ڈیزل 35 پیسے فی لیٹر مہنگا ہوا۔ اب ایک ہفتے کے دوران دونوں کی قیمتوں میں چار روپے فی لیٹر اضافہ ہوا ہے۔

    Petrol and Diesel: تیل کمپنیوں نے گزشتہ سات دنوں میں پٹرول اور ڈیزل Petrol and diesel کی قیمتوں میں چھ بار اضافہ کیا ہے۔ پیر کو بھی پٹرول 30 پیسے اور ڈیزل 35 پیسے فی لیٹر مہنگا ہوا۔ اب ایک ہفتے کے دوران دونوں کی قیمتوں میں چار روپے فی لیٹر اضافہ ہوا ہے۔

    • Share this:
      Petrol and Diesel: بین الاقوامی مارکیٹ international market میں خام تیل Crude oil کی قیمت میں تقریباً 26.42 فیصد کی کمی ہوئی ہے۔ اس کے باوجود ملک میں پٹرول اور ڈیزل کی مہنگائی کی آگ مسلسل جل رہی ہے۔ تیل کمپنیوں نے گزشتہ سات دنوں میں پٹرول اور ڈیزل Petrol and diesel کی قیمتوں میں چھ بار اضافہ کیا ہے۔ پیر کو بھی پٹرول 30 پیسے اور ڈیزل 35 پیسے فی لیٹر مہنگا ہوا۔ اب ایک ہفتے کے دوران دونوں کی قیمتوں میں چار روپے فی لیٹر اضافہ ہوا ہے۔ نئی قیمتوں کے مطابق دہلی میں پٹرول 99.41 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 90.77 روپے فی لیٹر فروخت کیا جائے گا۔ ممبئی میں پٹرول 114.08 روپے اور ڈیزل 98.48 روپے فی لیٹر فروخت ہو گا۔

      فلائٹ چھوٹنے پر Airlines کو دینا پڑا 1 لاکھ روپئے کا ہرجانہ، جانیں کیا ہے معاملہ
      یہ بھی پڑھیں: مشکل میں عمران حکومت! Pakistan کے پاس بچا ہے صرف 5 دن کا تیل، بینکوں نے بھی دیا بڑا جھٹکا
      خام تیل سستا، لیکن یٹرول اور ڈیزل مہنگا
      خام تیل کی قیمتیں فروری کی بلند ترین سطح 140 ڈالر فی بیرل سے گر کر 103 ڈالر تک پہنچ گئی ہیں، اس کے باوجود گزشتہ چھ دنوں میں تیل کمپنیوں نے پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں پانچ بار اضافہ کیا ہے۔ تیل کمپنیوں کے رویے کو دیکھ کر یہ مانا جا رہا ہے کہ قیمتوں میں اضافے کا یہ سلسلہ اگلے 15 دنوں تک اسی طرح جاری رہ سکتا ہے۔

      موڈیز نے دعویٰ کیا تھا قیمتیں، دھیرے۔دھیرے بڑھیں گے۔
      حال ہی میں، موڈیز ریٹنگ ایجنسی نے ایک رپورٹ جاری کی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ ہندوستان کے ٹاپ فیول ریٹیلرس IOC، BPCL اور HPCL نے نومبر اور مارچ کے درمیان تقریباً 2.25 بلین ڈالر (19 ہزار کروڑ روپے) کے ریوینو کو نقصان ہوا ہے۔ ریٹنگ ایجنسی نے کہا، ہم توقع کرتے ہیں کہ حکومت نقصان سے بچنے کے لیے ریفائنری کو قیمتیں بڑھانے کی اجازت دے گی۔ لگاتار دو دن تک 80-80 پیسے اضافے کے بعد موڈیز نے کہا تھا کہ اس سے پتہ چلتا ہے کہ پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں ایک بار اضافہ نہیں بلکہ آہستہ آہستہ اضافہ کیا جائے گا۔

      اگر آپ بھی 15 منٹ پہلے اپنی تمام سرچ ہسٹری ڈیلیٹ کرنا چاہتے ہیں تو یہ فیچر آپ کے لیے بہت کارآمد ثابت ہوگا۔

      پٹرول، ڈیزل کو جی ایس ٹی  GST  کے دائرے میں لایا جائے: پی ایچ ڈی سی سی
      پی ایچ ڈی  PHDCC چیمبر آف کامرس کے صدر پردیپ ملتانی نے ایک انٹرویو کے دوران کہا کہ پیٹرولیم مصنوعات کو جی ایس ٹی کے دائرے میں لانے سے بہت مدد ملے گی۔ یہ معیشت کے لیے اچھا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح دن بدن قیمتیں بڑھ رہی ہیں اب پٹرول اور ڈیزل کو جی ایس ٹی کے دائرے میں لانا ہوگا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: