உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Currency In Circulation:ڈیجیٹل بینکنگ مشن کو لگا جھٹکا، کورونا وبا کے دوران کرنسی سرکولیشن میں زبردست اچھال

    فائل فوٹو

    فائل فوٹو

    Currency In Circulation: آٹھ نومبر 2016 کو وزیر اعظم نریندر مودی( Prime MInister Narendra Modi) نے نوٹ بندی( Demonetisation) کا اعلان کیا تھا اور بینکنگ سسٹم سے پرانے 500 اور 1000 روپے کے نوٹ واپس لے لیے تھے، اس کا مقصد ڈیجیٹل بینکنگ کو فروغ دینا تھا۔

    • Share this:
      Currency In Circulation:نئی دہلی:8 نومبر 2016 کو وزیر اعظم نریندر مودی( Prime Minister Narendra Modi) نے نوٹ بندی( Demonetization) کا اعلان کیا تھا اور بینکنگ سسٹم سے پرانے 500 اور 1000 روپے کے نوٹ واپس لے لیے تھے، اس کا مقصد ڈیجیٹل بینکنگ کو فروغ دینا تھا۔ لوگوں کو ڈیبٹ کارڈ سے زیادہ آن لائن لین دین، والیٹ سے ادائیگی اور موبائل بینکنگ( Banking System) زیادہ کریں اور کیش پر انحصار کو کم کیا جائے لیکن کورونا وبا( Covid19 Pandemic) کے بعد حکومت کے اس مقصد پر پانی پھرتا نظر آرہا ہے کیونکہ ملک میں کرنسی کی گردش (Currency Circulation) میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ یہ باتیں آر بی آئی ( RBI) کی طرف سے جاری کردہ 2021-22 کی سالانہ رپورٹ میں سامنے آئی ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں:
      PM Kisanمیں اس ڈاکیومنٹ کے بغیر نہیں ہوگا رجسٹریشن، کرنا ہوگا پورٹل پر اپ لوڈ

      کرنسی سرکیولیشن میں زبردست اچھال
      آر بی آئی کی رپورٹ کے مطابق سال 2019-20 میں 24,20,875 کروڑ روپے گردش میں تھے۔ جو 2020-21 میں بڑھ کر 28,26,863 کروڑ ہو گئے اور 2021-2022 میں، کرنسی کی گردش بڑھ کر 31,05,721 کروڑ روپے ہوگئی ہے۔ یعنی کورونا وبا کے دوران 7 لاکھ کروڑ روپے کی کرنسی کا سرکولیشن بڑھ گیا ہے۔ آر بی آئی کے مطابق، 2021-22 میں مالیت کے لحاظ سے بینک نوٹوں کی گردش میں 9.9 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ اس کے ساتھ ہی نوٹوں کی تعداد کے لحاظ سے سرکولیشن میں 5 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ 2020-21 میں جہاں قدر کے لحاظ سے سرکولیشن میں 16.8 فیصد اضافہ ہوا، وہیں نوٹوں کی تعداد کے لحاظ سے گردش میں 7.2 فیصد اضافہ ہوا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Banking Sector Crisis:سیمی کنڈکٹر چپ نے پھنسائے لاکھوں ڈیبٹ کارڈ،چپ کی کمی،بینک سیکٹرمتاثر

      یہ بھی پڑھیں:
      Income Tax Rule: آج سے ہوگا PAN و آدھار لازمی، نقد رقم نکالنے، جمع کرانے کیلئے ہوگاضروری

      500روپے کے نوٹوں کا بڑھا سرکیولیشن
      2019-20 میں، جہاں صرف 14,72,373 کروڑ روپے کے برابر 500 روپے کا خالص سرکولیشن تھا، وہ 2021-22 میں بڑھ کر 22,77,340 کروڑ روپے ہو گیا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: