ہوم » نیوز » معیشت

ایک اور بینک پر بحران کے بادل! آر بی آئی نے اس کو آپریٹیو بینک سے پیسہ نکالنے پر لگائی روک

رقم نکالنے پر یہ پابندی چھ ماہ کی مدت کیلئے ہوگی ۔ آر بی آئی نے کہا کہ بینک کی موجودہ کیش کی حالت کے پیش نظر ڈیپازیٹرس کو بچت یا چالو کھاتہ یا پھر کسی دیگر کھاتے سے بھی جمع رقم میں سے کوئی بھی رقم نکالنے کی اجازت نہیں ہوگی ۔

  • Share this:
ایک اور بینک پر بحران کے بادل! آر بی آئی نے اس کو آپریٹیو بینک سے پیسہ نکالنے پر لگائی روک
ایک اور بینک پر بحران کے بادل! آر بی آئی نے اس کو آپریٹیو بینک سے پیسہ نکالنے پر لگائی روک

ریزرو بینک آف انڈیا (Reserve Bank of India) نے مہاراشٹر کے ناسک میں واقع انڈیپینڈینس کوآپریٹیو بینک لمیٹیڈ (Independence Co-operative Bank) سے پیسہ نکالنے پر روک لگا دی ہے ۔ آر بی آئی نے بدھ کو ایک بیان میں کہا کہ حالانکہ بینک کے 99.88 فیصد ڈیپازیٹیرس پوری طرح سے ڈیپازٹ انشورینس اینڈ کریڈٹ گارنٹی کارپوریشن  (Deposit Insurance and Credit Guarantee Corporation) بیمہ اسکیم کے دائرے میں ہیں ۔


رقم نکالنے پر یہ پابندی چھ ماہ کی مدت کیلئے ہوگی ۔ آر بی آئی نے کہا کہ بینک کی موجودہ کیش کی حالت کے پیش نظر ڈیپازیٹرس کو بچت یا چالو کھاتہ یا پھر کسی دیگر کھاتے سے بھی جمع رقم میں سے کوئی بھی رقم نکالنے کی اجازت نہیں ہوگی ۔ صارفین جمع کے بدلہ میں قرض کا نمٹارہ کرسکتے ہیں جو کچھ شرائط پر منحصر ہوگا ۔


آر بی آئی نے بدھ کو کاروباری وقت ختم ہونے کے بعد مزید کچھ پابندیاں عائد کی ہیں ۔ اس کے تحت بینک کے چیف ایگزیکٹیو افسر آر بی آئی کی پیشگی منظوری کے بغیر کوئی بھی قرض نہیں دیں گے یا تجدید نہیں کریں گے ۔ علاوہ ازیں وہ کوئی سرمایہ کاری بھی نہیں کریں گے اور نہ ہی کوئی ادائیگی ادا کریں گے ۔


آر بی آئی کے مطابق بینک پابندیوں کے ساتھ اپنا بینکنگ کاروبار پہلے کی طرح ہی کرتا رہے گا ۔ یہ پابندی مالی حالت میں بہتری تک جاری رہے گی ۔ مرکزی بینک نے یہ بھی کہا کہ وہ حالات کے حساب سے گائیڈلائنس میں ترمیم کرسکتا ہے ۔

کیا ہے ڈی آئی سی جی سی

بینکوں میں پانچ لاکھ روپے تک کی جمع رقم محفوظ ہونے کی ضمانت ڈیپازٹ انشورینس اینڈ کریڈٹ گارنٹی کارپوریشن کی جانب سے ہوتی ہے ۔ ڈی آئی سی جی سی ، ریزرو بینک آف انڈیا کی ملکیت والی سبسیڈری ہے ، جو بینک جمع پر انشورینس کوور فراہم کراتی ہے ۔ پانچ لاکھ کے ڈیپازٹ بیمہ کے مطابق بینک کے دیوالہ ہونے یا اس کا لائسنس رد ہونے پر پانچ لاکھ روپے تک کی رقم کی ادائیگی جمع کنندگان کو کی جاتی ہے ۔ پھر خواہ بینک میں اس کا کتنا بھی پیسہ کیوں نہ ہو ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 11, 2021 08:22 AM IST