ہوم » نیوز » معیشت

ریلائنس جیو کا منافع 62 فیصد بڑھا ، تیسری سہ ماہی میں ہوا 1350 کروڑ روپے کا فائدہ

کمپنی کا ڈیٹا استعمال کرنے والے صارفین کی تعداد بھی بڑھی ہے ۔ کمپنی کا ریوینیو سال در سال 28.3 فیصدی بڑھ کر 13968 کروڑ روپے ہوگیا ہے ۔

  • Share this:
ریلائنس جیو کا منافع 62 فیصد بڑھا ، تیسری سہ ماہی میں ہوا 1350 کروڑ روپے کا فائدہ
ریلائنس جیو کا منافع 62 فیصد بڑھا ، تیسری سہ ماہی میں ہوا 1350 کروڑ روپے کا فائدہ

ریلائنس جیو انفو کام لمیٹڈ کو دسمبر کی سہ ماہی میں 1350 کروڑ روپے کا فائدہ ہوا ہے جو کہ گزشتہ سال کے مقابلہ میں 62.5 فیصدی زیادہ ہے ۔ اس دوران کمپنی کا ڈیٹا استعمال کرنے والے صارفین کی تعداد بھی بڑھی ہے ۔ کمپنی کا ریوینیو سال در سال 28.3 فیصدی بڑھ کر 13968 کروڑ روپے ہوگیا ہے ۔ وہیں ریلائنس انڈسٹریز کے خالص منافع کی بات کریں تو یہ 13.5 فیصدی بڑھ کر 11640 کروڑ روپے ہوگیا ہے ۔


بتادیں کہ چونکہ کمپنی نے دوسرے نیٹ ورک پر کال کرنے پر 6 پیسے فی منٹ کے حساب سے چارج کرنا شروع کردیا ہے ، اس لئے اس کا اوسط ریوینیو فی یوزر ( اے آر پی یو ) بڑھ گیا ہے ۔ دسمبر کے آخر تک اے آر پی یو 128.4 روپے رہا ۔ بتادیں کہ دسمبر 2017 میں اے آر پی یو 154 تھا ۔ جکہ 15.6 فیصد گر کر سال 2018 کی اسی سہ ماہی میں یہ 130 ہوگیا ۔ مارچ 2019 میں مزید کم ہو کر 126.2 ہوگیا تھا ۔


وہیں ائیر ٹیل کا اے آر پی یو بھی گر کر ستمبر کی سہ ماہی میں 128 روپے ہوگیا ہے جبکہ جون میں یہ 129 تھا ۔ وہیں ووڈا فون کا ستمبر کی سہ ماہی میں اے آر پی یو 107 روپے تھا ۔


بتادیں کہ ستمبر کی سہ ماہی کیلئے ووڈا فون – آئیڈیا کا خسارہ 50922 کروڑ روپے تھا جو کہ ہندوستان کے کارپوریٹ کی تاریخ میں سب سے زیادہ تھا ۔ ائیرٹیل کو بھی 23045 کروڑ روپے کا خسارہ ہوا جو کہ گزشتہ 14 سالوں میں سب سے زیادہ تھا ۔ بتادیں کہ چونکہ کمپنیوں کو حکومت کو پیسے دینے ہیں ، اس لئے کمپنیوں نے بڑی سطح پر خسارہ دکھایا ہے ۔
First published: Jan 17, 2020 10:25 PM IST