உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia-Ukraine War: ایمیزون نےروس میں نئےAWSسائن اپس کوکیامسترد، مائیکروسافٹ خدمات بھی معطل

    ایمیزان

    ایمیزان

    روس میں AWS استعمال کرنے والے ہمارے سب سے بڑے صارفین وہ کمپنیاں ہیں جن کا صدر دفتر ملک سے باہر ہے اور وہاں کچھ ترقیاتی ٹیمیں ہیں۔ مائیکروسافٹ، جو حریف Azure کلاؤڈ کمپیوٹنگ پلیٹ فارم چلاتا ہے، اس نے حال ہی میں کہا ہے کہ وہ مائیکروسافٹ کی مصنوعات اور خدمات کی تمام نئی فروخت کو روس میں معطل کر رہا ہے۔

    • Share this:
      ایمیزون (Amazon) کے کلاؤڈ کمپیوٹنگ یونٹ ایمیزون ویب سرویز (Amazon Web Services) نے اعلان کیا ہے کہ روس کے یوکرین پر حملے کے بعد اب وہ روس یا بیلاروس میں مقیم نئے صارفین کو قبول نہیں کر رہا ہے۔ ایمیزون نے کہا کہ AWS کا روس میں کوئی ڈیٹا سینٹر یا انفراسٹرکچر نہیں ہے۔ وہیں اب روسی حکومت کے ساتھ کاروبار نہ کرنے کی کوئی پالیسی نہیں ہے۔

      ایمیزون نے ایک پوسٹ میں کہا کہ دیگر امریکی ٹیکنالوجی فراہم کنندگان کے برعکس AWS کا روس میں کوئی ڈیٹا سینٹر، انفراسٹرکچر، یا دفاتر نہیں ہے اور ہماری روسی حکومت کے ساتھ کاروبار نہ کرنے کی دیرینہ پالیسی ہے۔ اس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ہم نے روس اور بیلاروس میں AWS کے لیے نئے سائن اپ کی اجازت دینا بھی بند کر دی ہے۔

      روس میں AWS استعمال کرنے والے ہمارے سب سے بڑے صارفین وہ کمپنیاں ہیں جن کا صدر دفتر ملک سے باہر ہے اور وہاں کچھ ترقیاتی ٹیمیں ہیں۔ مائیکروسافٹ، جو حریف Azure کلاؤڈ کمپیوٹنگ پلیٹ فارم چلاتا ہے، اس نے حال ہی میں کہا ہے کہ وہ مائیکروسافٹ کی مصنوعات اور خدمات کی تمام نئی فروخت کو روس میں معطل کر رہا ہے۔

      مزید پڑھیں: Russia - Ukraine War: بین الاقوامی عدالتِ انصاف جلد کرے گا روس۔یوکرین جنگ سے متعلق فیصلہ، پوری دنیا منتظر

      مائیکروسافٹ کے صدر، چار بڑی مشاورتی فرموں ڈیلوئٹ، کے پی ایم جی، ای وائی اور پی ڈبلیو سی کے ذمہ در بریڈ سمتھ (Brad Smith) کا کہنا ہے کہ اس کے علاوہ ہم امریکہ، یورپی یونین اور برطانیہ کی حکومتوں کے ساتھ قریبی رابطہ قائم کر رہے ہیں اور لاک سٹیپ میں کام کر رہے ہیں۔ ہم حکومتی پابندیوں کے فیصلوں کی تعمیل میں روس میں اپنے کاروبار کے بہت سے پہلوؤں کو روک رہے ہیں۔

      انھوں نے اعلان کیا ہے کہ وہ یوکرین پر ماسکو کے حملے پر روس اور بیلاروس میں آپریشن بند کر رہے ہیں۔ کے پی ایم جی انٹرنیشنل کے ترجمان نے کہا کہ یوکرین پر روسی حکومت کے جاری فوجی حملے کا جواب دینا دیگر عالمی کاروباروں کے ساتھ ساتھ ان کی ذمہ داری ہے۔

      اس سے قبل فنٹیک اور ڈیجیٹل ادائیگیوں کی کمپنیاں جیسے ماسٹر کارڈ، ویزا اور پے پال نے خطے سے باہر نکلنے کے منصوبوں کا اعلان کیا ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: