گھرخریداروں کےلئے سپریم کورٹ کا بڑا فیصلہ، اب جائیداد کی نیلامی میں ملےگا حصہ

گھرخریداروں کو بڑی راحت دیتے ہوئے سپریم کورٹ نے دیوالیہ اورقرض کی انسالوینسی ترمیمی قانون کوبرقراررکھا ہے۔ اس کا مطلب واضح ہے کہ اب اگرکوئی رئیل اسٹیٹ کمپنی ڈوبتی ہے یا دیوالیہ اعلان کی جاتی ہے تو اس کی جائیداد کی نیلامی میں گھرخریدارکا بھی حصہ ہوگا۔

Aug 09, 2019 04:55 PM IST | Updated on: Aug 09, 2019 04:59 PM IST
گھرخریداروں کےلئے سپریم کورٹ کا بڑا فیصلہ، اب جائیداد کی نیلامی میں ملےگا حصہ

سپریم کورٹ نے گھرخریداروں کے لئے بڑا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اب پراپرٹی کی نیلامی میں حصہ ملے گا۔ فائل فوٹو

گھرخریداروں کوبڑی راحت دیتے ہوئے سپریم کورٹ نے دیوالیہ اورقرض کی انسالوینسی ترمیمی قانون کوبرقراررکھا ہے۔ اس کا مطلب واضح ہےکہ اب اگرکوئی ریئل اسٹیٹ کمپنی ڈوبتی ہے یا دیوالیہ اعلان کی جاتی ہے، تواس کی جائیداد کی نیلامی میں گھرخریداروں کا بھی حصہ ہوگا۔ آپ کوبتا دیں کہ پارلیمنٹ میں قانون منظورہونےکے بعد کچھ ریئل اسٹیٹ کمپنیوں نےاس ترمیم کوسپریم کورٹ میں چیلنج دیا تھا۔ اس کےبعد اب سپریم کورٹ نےیہ فیصلہ دیا ہے۔

گھرخریدنے والوں کو اب ملے گی بڑی راحت

Loading...

ریئلٹی کمپنیوں کےڈوبنےکی صورت میں اب تک جائیداد کی نیلامی میں بینک کا ہی حصہ ہونےکی تجویزتھی، لیکن اب نیلامی میں ہوم بائرس (گھرخریدنے والوں) کا بھی حصہ ہوگا۔ گریٹرنوئیڈا سمیت کئی بڑے شہروں میں ریئل اسٹیٹ تعمیراتی کمپنیوں کےڈوبنے پر گھر خریدنے والےہزاروں لوگوں کا پیسہ پھنسا ہے۔

ایسے میں سپریم کورٹ کا یہ فیصلہ ان کے لئے بڑی راحت کا سامان لے کرآیا ہے۔ اس دائرے میں وہ تمام لوگ آئیں گے، جنہوں نے ریئلٹی کمپنیوں کا پیسہ ادا کیا ہے۔

ہوم بایرس کو سپریم کورٹ سے بڑی راحت ملی ہے۔ (فائل فوٹو)۔ ہوم بایرس کو سپریم کورٹ سے بڑی راحت ملی ہے۔ (فائل فوٹو)۔

گھرخریدنے والوں کے لئےدیوالیہ قانون یعنی انسالوینسی اینڈ بینکرپسی کوڈ میں تبدیلی کی  تجویزکوپارلیمنٹ سے منظوری مل چکی ہے۔ اب کسی بھی ڈیویلپرکےڈیفالٹ کرنے پرگھر خریدارکواس کی رقم مل سکےگی۔ اس سے ریفنڈ کا عمل بھی تیزہوگا، جوپہلےطویل وقت تک پھنسا رہتا تھا اورگھرخریدارڈیولپراورعدالت کے چکرکاٹتے رہ جاتےتھے۔

دیوالیہ ہونے پربلڈریا بلڈرکمپنی کی جائیداد کوفروخت کرنے پرجتنی رقم ملےگی، اس میں کتنا فیصدی گھرخریدارکودیا جائے، اس بات کا فیصلہ کئی پیمانے پرطےکیا جاسکتا ہے۔

اب کسی بھی ڈیویلپرکے ڈیفالٹ کرنے پرگھرخریدارکو اس کی رقم مل سکے گی۔ فائل فوٹو اب کسی بھی ڈیویلپرکے ڈیفالٹ کرنے پرگھرخریدارکو اس کی رقم مل سکے گی۔ فائل فوٹو

سب سے پہلے یہ دیکھا جائےکہ بلڈرپرکتنا پیسہ بقایا ہے۔ ساتھ ہی کتنےگھرخریداروں کو پزیشن نہیں ملا ہےاوران کی واجبات کتنی ہے۔ ساتھ ہی بلڈرپرکتنا قرض بقایا ہے۔ اس کےبعد جائیداد فروخت کرنے کے بعد اس سے حاصل رقم میں کتنا حصہ گھرخریداروں کودیا جاسکتا ہے۔ اس کےلئے بینکوں اوردیگرماہرین سےبات کرکے حتمی فیصلہ لیا جائے گا۔

Loading...