உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ریلائنس جیو صارفین کیلئے بڑی خوشخبری! لاک ڈاؤن ختم ہونے تک ملے گی یہ خاص سہولت: تفصیل یہاں جانیں

    کے کے آر۔ جیو سودا: ایک مہینے میں ریلائنس جیو نے جٹائے 78,562 کروڑ روپئے

    کے کے آر۔ جیو سودا: ایک مہینے میں ریلائنس جیو نے جٹائے 78,562 کروڑ روپئے

    کورونا وائرس (Coronavirus) کی وجہ سے لاک ڈاؤن 2.0 (Lockdown-2.0 جیسے مشکل وقت میں ریلائنس جیو (Reliance Jio) ایک بار پھرصارفین کا سہارا بن کر سامنے آیا ہے۔

    • Share this:
      کورونا وائرس  (Coronavirus) کی وجہ سے   لاک ڈاؤن 2.0  (Lockdown-2.0 جیسے مشکل وقت میں  ریلائنس جیو (Reliance Jio) ایک بار پھرصارفین کا سہارا بن کر  سامنے آیا ہے۔ ریلائنس جیو نے بتایا کہ لاک ڈاؤن کے دوران اس کے صارفین کے پاس آنے والی کالنگ  (jio incoming calling کی سہولت ملتی رہے گی۔ اس سے نہ صرف کم آمدنی کرنے والوں کو فائدہ ہوگا بلکہ ان صارفین کے لئے بھی آسانی ہوگی جو گھر سے باہر جاکر لاک ڈاؤن کی وجہ سے ریچارج نہیں کرا پائے ہیں۔ یعنی  جو صارفین ریچارج نہیں کرسکے ہیں انہیں لاک ڈاؤن ختم ہونے تک آنے والی سہولت ملتی رہے گی۔ MyJio اور Jio.com ہمیشہ ہر Jio یوزر کو ایک دوسرے سے جڑے connect رکھنے میں مدد کرتا ہے۔
      Digital Recharges: جیو یہ یقینی کررہا ہے کہ ہر جیو یوزر اپنے ریچارج، سروس سوالات اور درخواستوں کے لئے MyJio ایپ اور Jio.com سے جڑے رہیں۔ جیو ڈاٹ کام (Jio.com) ویب سائٹ 24 * 7چالو رہے گی۔

      Physical Recharges: ملی اطلاع کے مطابق زیادہ سے زیادہ ریچارج آؤٹ لیٹ 20اپریل کے بعد کھل جائیں گے۔

      Third Party Recharges:جیوصارفین والیٹ اور ڈیجیٹل پارٹنر، جیسے فون پے، پے ٹی ایم، گوگل پے، امیزون پے، فری ریچارج جیسے پلیٹ فارمکا بھی استعمال کرسکتے ہیں۔

      جیو نے بڑھائی جیو فائبر نیٹ ورک کی صلاحیت
      کووڈ ۔19 بحران کی اس گھڑی میں ریلائنس جیو فائبر اپنے صارفین کو ہائی اسپیڈ براڈ بینڈ سروس فراہم کرنے کے لئے پرعزم ہے۔ صارفین کو بہتر سروس فراہم کرنے کے لئےجیو فائبر (JioFiber)مستقل کوششوں میں مصروف ہے۔ کمپنی نے اپنی کوریج کو مالی راجدھانی ممبئی کے بڑے علاقوں تک پہنچادیا ہے۔

      ڈسکلیمر : نیوز 18 اردو ریلائنس انڈسٹریز کی کمپنی نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ کا حصہ ہے ۔ نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ کی ملکیت ریلائنس انڈسٹڑیز کے پاس ہی ہے ۔
      Published by:sana Naeem
      First published: